ابراہیم عادل شاہ ثانی

ابراہیم عادل شاہ ثانی (1556 – 12 ستمبر 1627) بیجاپور سلطنت عادل شاہی سلطنت کے ایک سلطان تھے۔

ابراہیم عادل شاہ ثانی
Ibrahim Adil Shah II Sultan of Bijapur.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1570  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بیجاپور سلطنت  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 12 ستمبر 1627 (56–57 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بیجاپور  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت بیجاپور سلطنت  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد محمد عادل شاہ  ویکی ڈیٹا پر (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والد علی عادل شاہ  ویکی ڈیٹا پر (P22) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مناصب
سلطان بیجاپور   ویکی ڈیٹا پر (P39) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
برسر عہدہ
1580  – 12 ستمبر 1627 
Fleche-defaut-droite-gris-32.png علی عادل شاہ 
محمد عادل شاہ  Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
عملی زندگی
پیشہ شاعر  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

سلطان بیجاپور سلطنت علی عادل شاہ اور چاند بی بی کا بیٹا۔ باپ کے قتل کے بعد دس سال کی عمر میں تخت پر بیٹھا۔ نہایت منتظم اور روشن خیال فرماں رواں تھا۔ صوبوں کا نظم و نسق اعلٰی پیمانے پر کیا اور ارضیات کے بندوبست کی خاطر رجسٹر مرتب کروائے۔ تعمیرات کا بہت شوق تھا۔ شعر و سخن کا دلدادہ اور موسیقی کا رسیا تھا۔ موسیقی کی مشہور تصنیف (نورس) ہے، جس میں مختلف راگنیوں کے لیے گیت لکھے ہیں۔ اس نے فارسی کی بجائے اردو کو ملک کی دفتری زبان قرار دیا۔ فارسی کا مشہور شاعر ظہوری اس کے دربار سے وابستہ تھا۔

نگار خانہترميم

حوالہ جاتترميم

  • A Visit to Bijapur by H. S. Kaujalagi
  • "Avalokana" a souvenir published by the Government of Karnataka
  • Centenary souvenir published by the Bijapur Municipal Corporation