سوار محمد حسین

پاک فوج کے جوان فوجی جو سوار کے رتبے پر فائز تھے، 10 دسمبر 1971ء کو پاک بھات جنگ میں شہید ہوئے اور بعد از شہادت حکومت پاکستان نے نشان حیدر سے سرفراز کیا۔

سوار محمد حسین جنجوعہ شہید 18 جون 1949ء کو ضلع راولپنڈی کی تحصیل گوجر خان کے ایک گاؤں ڈھوک پیر بخش (جو اب ان کے نام کی مناسبت سے ڈھوک محمد حسین جنجوعہ اور ڈھوک نشان حیدرکے نام سے موسوم کی جا چکی ہے) میں پیدا ہوئے۔ انہوں نے 3 ستمبر 1966ء کو محض سترہ سال کی کم عمری میں پاک فوج میں بطور ڈرائیور شمولیت اختیار کی اور ڈرائیور ہونے کے باوجود عملی جنگ میں بھر پور حصہ لیا۔

سوار محمد حسین
Sawar Muhammad Hussain Shaheed Nishan e Haider - The Tomb (7833450064).jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 18 جون 1949  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ڈھوک نشان حیدر،  ضلع اٹک،  تحصیل پنڈی گھیب،  پنجاب  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 10 دسمبر 1971 (22 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ظفروال شکرگڑھ سیکٹر،  شکر گڑھ،  پنجاب  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجہ وفات لڑائی میں مارا گیا  ویکی ڈیٹا پر (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ فوجی افسر  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
شاخ پاک فوج،  20 لانسرز  ویکی ڈیٹا پر (P241) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عہدہ سوار (1966–1971)  ویکی ڈیٹا پر (P410) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
لڑائیاں اور جنگیں پاک بھارت جنگ 1971ء  ویکی ڈیٹا پر (P607) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

مرتبۂ شہادتترميم

انہوں نے پاک بھارت جنگ میں حصہ لیا اور 10 دسمبر 1971 کو شام 4 بجے بھارتی فوج کی مشین گن سے نکلی گولیاں ان کے سینے پر لگیں اور وہ وہیں خالق حقیقی سے جا ملے۔ ان کی اسی بہادری کے اعتراف میں پاک فوج نے انہیں اعلی ترین فوجی اعزاز نشان حیدر سے نوازا۔

مزید دیکھیےترميم

بیرونی روابطترميم