"نناوت" کے نسخوں کے درمیان فرق

37 بائٹ کا اضافہ ،  12 سال پہلے
م
robot Adding: th:นูนาวุต; cosmetic changes
م (روبالہ - بین الوکی روابط کو ترتیب دیا)
م (robot Adding: th:นูนาวุต; cosmetic changes)
[[Imageتصویر:Nunavut, Canada.svg|thumb|نناوٹ]]
[[Imageتصویر:Flag_of_Nunavut.svg.png|300px|left|thumb|نُنا وُت کا پرچم]]
 
نُنا وُت کینیڈا کی سب سے نئی اور سب سے بڑی ریاست ہے۔ اس کو شمال مغربی ریاست سے یکم اپریل 1999 کو بذریعہ نُنا وُت ایکٹ اور نُنا وُت لینڈ کلیمز ایگریمنٹ الگ کیا گیا تھا۔ اس کی سرحدوں کا تعین 1993 میں کیا جا چکا تھا۔ نُنا وُت کا قیام عمل میں آنے سے کینیڈا کے نقشے پر 1949 میں نیو فاؤنڈ لینڈ اور لیبرے ڈار کے قیام کے بعد ایک بڑی تبدیلی واقع ہوئی۔
 
اس کا دارلخلافہ ایکالوئٹ ہے جو مشرق میں بافن کے جزیرے پر واقع ہے۔ دوسرے اہم علاقوں میں رینکن ان لٹ اورخلیج کیمبرج ہیں۔ نُناوُت میں ایلیسمیری کا جزیرہ بھی شامل ہے جو شمال میں واقع ہے۔ وکٹوریہ جزیرے کے جنوبی اور مشرقی حصے بھی اس میں شامل ہیں۔ نُنا وُت رقبے کے لحاظ سے کینیڈا کی سب سے بڑی اور آبادی کے لحاظ سے سب سے چھوٹی ریاست ہے۔ اس کی کل آبادی 29474 افراد ہے جو تقریباً مشرقی یورپ کے برابر علاقے پر پھیلی ہوئی ہے۔ اگر نُنا وُت ایک آزاد ملک ہوتا تو یہ دنیا کا سب سے کم گنجان آباد ملک ہوتا۔ مثلاً گرین لینڈ کا رقبہ نُنا وُت کے تقریباً برابر لیکن آبادی نُنا وُت سے دو گنی زیادہ ہے۔
 
نُنا وُت کا مطلب ہے "ہماری زمین"۔ یہ انوکتی تُت زبان کا لفظ ہے۔ اس کے باشندے نُنا وُمیوت کہلاتے ہیں۔ ایک باشندہ نُنا وُمیوک کہلائے گا۔
اس ریاست کا کل رقبہ 19 لاکھ مربع کلومیٹر ہے جس میں زمین اور پانی دونوں شامل ہیں۔ اس میں شمالی کینیڈا کا حصہ جس میں زمین، آرکٹک کا حصہ، خلیج ہڈسن، خلیج جیمز اور خلیج انگاوا کے تمام جزائر شامل ہیں۔ اس طرح یہ دنیا کا پانچویں بڑی ریاست ہے۔ اگر نُنا وُت آزاد ملک ہوتا تو یہ دنیا کا تیرہواں بڑا ملک ہوتا۔ نُنا وُت کی سرحدیں شمال مغربی ریاست، اونٹاریو کے ساتھ اور نیو فاؤنڈ لینڈ اور لیبرے ڈار کے ساتھ ملتی ہیں۔ اس کی آبی سرحدیں کیوبیک اور اونٹاریو کے علاوہ مینی ٹوبہ اور گرین لینڈ سے بھی ملتی ہیں۔
 
نُنا وُت کے بننے سے کینیڈا میں واحد جگہ ایسی بنی جہاں چار مختلف ریاستیں یا صوبے ملتے ہیں۔ یہ جگہ نُنا وُت، شمال مغربی ریسست، مینی ٹوبہ اور ساسکچیوان کی سرحدیں ملتی ہیں۔ یہ جگہ کافی شمال میں ہے اس لئے یہاں عموماً سیاح نہیں آتے۔ نُنا وُت کا سب سے بلند مقام باربیاؤ کی چوٹی ہے۔
 
نُنا وُت کی انتہائی کم آبادی کی وجہ سے اسے صوبے کا درجہ شاید کبھی نہ مل پائے۔ تاہم اگر یوکون کو جو کہ آبادی میں نُنا وُت سے ذرا سی زیادہ ہے، کو صوبے کا درجہ مل جائے تو نُنا وُت کو بھی صوبہ بنایا جا سکتا ہے۔
[[tl:Nunavut]]
[[ta:நுனாவுட்]]
[[th:นูนาวุต]]
[[tr:Nunavut]]
[[uk:Нунавут]]
57,444

ترامیم