"یوکابد" کے نسخوں کے درمیان فرق

18 بائٹ کا اضافہ ،  5 سال پہلے
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
(ویکائی، دوہرا مواد حذف)
(ٹیگ: القاب ترمیم از موبائل موبائل ویب ترمیم)
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
(ٹیگ: القاب ترمیم از موبائل موبائل ویب ترمیم)
[[موسیٰ (مذہبی شخصیت)|موسیٰ]] کی والدہ کا نام [[یوخابذ]] آتا ہے اردو میں اس کو [[یوکابد]] لکھتے ہیں<ref>تفسیر ذخیرۃ الجنان:سرفراز خان صفدر</ref><br />
موسیٰ کی ماں کا نام یوخابذ تھا۔ <ref>الکامل: دارالکتاب العربی بیروت </ref> امام عبدالرحمان بن علی الجوزی نے لکھا ہے کہ ان ماں کا نام یوخابذ تھا۔ <ref>المنتظم‘ مطبوعہ دارالفکر بیروت </ref>
*علامہ سید محمود آلوسی لکھتے ہیں <br />
ایک قول ہے کہ ان کا نام محیانۃ بنت یصھر بن لاوی ہے ‘ ایک قول ہے ان کا نام یوخابذ ہے ایک قول یارخا ہے ایک قول یارخت ہے ‘ اور ان کے علاوہ بھی اقوال ہیں۔ <ref>روح المعانی جز ٠2 ص 86‘ مطبوعہ دارالفکر بیروت </ref><ref>تفسیر تبیان القرآن ،غلام رسول سعیدی، القصص، 7</ref>
 
'''یوخابذ''' یا یوکابد کا قرآن میں ام موسی کے الفاظ سے دو مرتبہ استعمال ہوا
* *{{قرآن-سورہ 28 آیت 7}}
* *{{قرآن-سورہ 28 آیت 10}}
ان کے نام میں بہت اختلاف ہے
* علامہ قرطبی نے لکھا ہے کہ امام سہیلی نے کہا کہ حضرت موسیٰ کی ماں کا نام ایارخا تھا اور ایک قول ایارخت ہے‘ اور علامہ ثعلبی نے کہا ان کا نام لوحابنت ھاندبن لاوی بن یعقوب تھا۔ (<ref>الجامع لاحکام القرآن جز 31 ص 232‘ مطبوعہ دارالفکر بیروت)</ref>
* امام بغوی نے لکھا ہے‘ ان کا نام یوحانذبنت لاوی بن یعقوب تھا۔ (<ref>معالم التنزیل ج 3 ص 425‘ داراحیاء التراث العربی بیروت)</ref>
* امام ابو جعفر محمد بن جریر طبری نے لکھا ہے کہ حضرت موسیٰ کی ماں کا نام اناحیدتھااناحید تھا<ref>تاریخ طبری ج 1 ص 173‘ مطبوعہ مؤسسۃ العلمی اللمطبوعات بیروت</ref> امام ابو الکر محمد ابن الاثیر الجزری نے لکھا ہے حضرت موسیٰ کی ماں کا نام یوخابذ تھا۔<ref>الکامل جلد 1ص 59‘ دارالکتاب العربی بیروت</ref>
 
== حوالہ جات ==
92,370

ترامیم