"قیامت مسیح" کے نسخوں کے درمیان فرق

1,340 بائٹ کا اضافہ ،  5 سال پہلے
م
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
مکوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
(ٹیگ: ترمیم از موبائل موبائل ویب ترمیم)
مکوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
(ٹیگ: ترمیم از موبائل موبائل ویب ترمیم)
مسیحی عقائد کے مطابق [[یسوع]] ([[عیسیٰ علیہ السلام]]) اپنے مصلوب ہونے کے تیسرے دن دوبارہ جی اٹھے۔ [[متی]] کی [[انجیل]] کے مطابق اگلے روز جو تیاری کا دوسرا دن تھا گزر جانے کے بعد تمام سردار کاہن فریسی پیلاطس سے ملے۔ اور کہا کہ وہ دھوکہ باز جب [[مریمزندہ مگدلینی]]تھا۔ اور '[[دوسریکہا مریم]]'تھا، آپ“تین کیدن بعد میں دوبارہ جی اٹھونگا یہ بات اب تک ہمیں یاد ہے۔ اس لئے تین دن تک اس قبر پرکی خوشبوئیںسختی لےسے کرنگرانی آئیںکا توحکم پتھردو اس لیے کہ اس کے شاگرد اس کی لاش کو لڑھکاچرا ہواکر پایالے جائیں۔ اور لوگوں سے یہ کہیں گے کہ وہ زندہ ہو کر قبر کوسے خالیاٹھ پایا۔گیا یوںہے۔ آپاور چالیسیہ روزپچھلا تکدھو اپنےکہ شاگردوںپہلے سے بھی برا ہو گا۔” تب پیلاطس نے حکم دیا، “تم چند سپاہیوں کو دکھائیساتھ دیتےلے رہےجاؤ اور جس کےطرح بعدچاہتے آپہو آسمانوںقبر پر تشریفپوری لےچوکسی گئے۔کے جبکہساتھ مسلمانوںنگرانی کرو۔” وہ گئے اور قبر کے مطابقمنھ انپتھّر کوسے زندہمہر کرکے سپاہیوں کی نگرانی میں آسمانوہاں پر اٹھاسخت لیاپہرہ گیابٹھا اوردیئے۔<ref>بائبل، انعہد کانامہ ظہورجدید، [[قیامت]]متّی کےباب 27 ورس 61 نزدیکسے ہوگا۔66۔</ref>
 
جب سبت کادن گزر گیا۔ یہ ہفتے کے پہلے دن کا سویرا تھا تو [[مریم مگدلینی]] اور '[[دوسری مریم]]' آپ کی قبر پر خوشبوئیں لے کر آئیں تو پتھر کو لڑھکا ہوا پایا اور قبر کو خالی پایا۔ یوں آپ چالیس روز تک اپنے شاگردوں کو دکھائی دیتے رہے جس کے بعد آپ آسمانوں پر تشریف لے گئے۔<ref>بائبل، عہد نامہ جدید، متّی باب 28 ورس 1 تا 3</ref>جبکہ مسلمانوں کے مطابق ان کو زندہ آسمان پر اٹھا لیا گیا اور ان کا ظہور [[قیامت]] کے نزدیک ہوگا۔
 
== حوالہ جات ==
92,407

ترامیم