"مدینہ منورہ" کے نسخوں کے درمیان فرق

درستی املا
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
(ٹیگ: ترمیم از موبائل موبائل ویب ترمیم)
(درستی املا)
622ء میں حضرت محمد {{درود}} اور ان کےساتھیوں نےمکہ کےکفار کےمظالم سےتنگ آکر مدینہ ہجرت کی۔ نبی آخر الزماں کی آمد پر اس کا نام مدینۃ النبی پڑگیا اور یہ شہر اولین اسلامی ریاست کا دارالخلافہ بنا۔ حضور صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی آمد پر تاریخی میثاق مدینہ طےپایا اس کےعلاوہ مواخات کےتحت تمام مسلمان مہاجرین اور انصار کو بھائی بھائی بنادیا گیا۔
 
بدر، احد اور احزاب کےغزوات کےبعد فتح مکہ کا تاریخی واقعہ رونما ہوا تاہم نبی کریم {{درود}} اپنی جائے پیدائش مکہ میں رہنے کے بجائے دوبارہ مدینہ واپس آئے۔ خلافت راشدہ کے بعد حضرت امیر معاویہ رضی اللہ عنہ نےدارالحکومت دمشق منتقل کردیاکر دیا گیا۔
 
==نام==
{{مدینہ منورہ کے نام}}
{{شہر (سعودی عرب)}}
 
 
[[زمرہ:تاریخی یہودی اسماج]]
[[زمرہ:مقدس مقامات]]
[[زمرہ:اسلامی مقدس مقامات]]
 
[[زمرہ:سعودی عرب کے شہر]]
[[زمرہ:مدینہ]]
43,445

ترامیم