"سعود بن عبدالعزیز آل سعود" کے نسخوں کے درمیان فرق

←‏top: درستی املا
م (←‏top: روڈ آئلینڈ + خودکار درستی املا using AWB)
(←‏top: درستی املا)
مکمل انتظامی اختیارات سنبھالنے کے بعد شہزادہ فیصل نے جو اصلاحات کیں ان سے ان کی انتظامی صلاحیت کا واضح ثبوت ملتا ہے۔ انہوں نے شاہی خاندان کے اخراجات پر پابندی عائد کی اور دوسری معاشی اصلاحات کیں جن کی وجہ سے سعودی عرب کی اقتصادی و مالی حالت مستحکم ہو گئی۔
 
اسی زمانے میں شہزادہ فیصل نے غلامی کی رسم کو جو اب تک سعودی عرب میں رائج تھی، ختم کردیا۔کر دیا۔ شہزادہ فیصل کے بڑھتے ہوئے اثرات سے شاہ سعود نے اپنے لیے خطرہ محسوس کیا اور اپنے بھائی کی اصلاحات کی راہ میں رکاوٹیں ڈالنا شروع کردیں۔ آخر ایک مجلس نے جو شاہی خاندان کے ایک سو افراد اور ستر علماء پر مشتمل تھی، 29 اکتوبر 1964ء کو شاہ سعود کو تخت سے اتار دیا اور امیر فیصل کو ان کی جگہ بادشاہ نامزد کردیا۔کر دیا۔
 
اس کے بعد شاہ سعود نے یورپی ممالک میں زندگی گذاری جن میں سب سے پہلے انہوں نے [[جنیوا]]، [[سویٹزرلینڈ|سوئٹزرلینڈ]] کا انتخاب کیا تاہم نے انہوں نے دیگر شہروں میں بھی قیام کیا اور 23 فروری 1969ء کو 67 سال کی عمر میں [[ایتھنز]]، [[یونان]] میں انتقال کر گئے۔
43,445

ترامیم