"ترجمہ (حیاتیات)" کے نسخوں کے درمیان فرق

م
درستی املا بمطابق فہرست املا پڑتالگر + ویکائی
م (خودکار درستی+صفائی (9.7))
م (درستی املا بمطابق فہرست املا پڑتالگر + ویکائی)
{{دیگر|ترجمہ}}
علم [[حیاتیات]] میں '''ترجمہ''' (translation) اصل میں [[لحمیات|لحمیات (proteins)]] کی تیاری کا دوسرا مرحلہ ہوتا ہے کہ جس میں [[پیامبر آر این اے|mRNA]] پر لکھے گئے [[وراثی رموز|رموز (codons)]] میں لکھی گئی [[وراثہ|وراثہ (gene)]] یا [[ڈی این اے|DNA]] کی ہدایات یا تحریر کو پڑھ کر اسکااس کا ترجمہ [[امائنو ترشہ|امائنو ترشوں (amino acids)]] کی زبان میں کر دیا جاتا ہے اور امائنو ترشے اصل میں لحمیات بنانے والے یوں سمجھ لیجیۓلیجیئے کہ حروف ہیں جو حرف ابجد کی طرح ایک متعین زنجیر یا ترتیب میں لگ کر بامعنی اور فعالی لحمیات بنا دیتے ہیں۔ اس طرح ہم یوں کہ سکتے ہیں کہ DNA میں موجود [[مرثالثہ|نیوکلیوٹائڈ]] یا [[وراثی رموز|وراثوں کے رموز]] کا ترجمہ لحمیات کی زبان میں کر کہ لحمیات تیار کرنے کا عمل ہی [[حیاتیات]] میں ترجمہ کہلاتا ہے۔
 
جیسا کہ رموز کے مضمون میں ذکر آیا ہے کہ وراثی رموز اصل میں تین تین نیوکلیوٹائڈوں کا گروہ ہوتا ہے جو بذات خود تعداد میں کل چار ہوتی ہیں ([[رائبو مرکزی ترشہ|RNA]] کو شامل کر لیا جائے تو 5 عدد) اور وہ A G C T اور U ہیں۔ نیچے اس عمل کی ایک مختصر سی مثال پیش کی جارہیجا رہی ہے جو اس بات کو واضع کرتی ہے کہ کس ترجمہ کے عمل میں کیا تبدیلیاں رونما ہوتی ہیں۔
 
<div dir="ltr">
اس طرح تین عدد [[وراثی رموز|codons]] سے (جو کل 9 عدد نیوکلیوٹائڈوں پر مشتمل ہوتے ہیں) ایک [[لحمیات|لحمیہ]] بن جاتا ہے جس میں تین عدد [[امائنوترشے]] پائے جاتے ہیں۔
 
== مزید دیکھیۓدیکھیئے ==** [[زمرہ:تعبیر وراثہ]]
**[[زمرہ:تعبیر وراثہ]]
[[زمرہ:سالماتی حیاتیات]]
[[زمرہ:وراثیات]]