"کارگل جنگ" کے نسخوں کے درمیان فرق

م
خودکار: خودکار درستی املا ← وزیر اعظم، کیے، سے، سے، امریکا، کر لیا، تنازع، دیے، کی بجائے، صورت حال
(درستی املا)
م (خودکار: خودکار درستی املا ← وزیر اعظم، کیے، سے، سے، امریکا، کر لیا، تنازع، دیے، کی بجائے، صورت حال)
 
=== واجپائی کا بیان ===
ایک بار اس وقت کے بھارتی وزیراعظموزیر اعظم [[اٹل بہاری واجپائی|واجپائی]] پاکستانی دورے پر آئے اور [[لاہور]] میں انہوں نے پاکستانی وزیراعظموزیر اعظم [[نواز شریف]] سے گلہ کیا کہ ہم آپکی میزبانی سے مستفید ہو رہے ہیں مگر آپ کی فوج نے کارگل پر قبضہ کرلیاہے۔ وزیراعظموزیر اعظم کی صدارت میں27 مئی 1998 کو پاکستان میں ہنگامی دفاعی اجلاس منعقد ہوا جس میں بحری، بری اور فضائی افواج کے سربراہان شامل تھے۔ بری اور فضائی سربراہان نے نواز شریف کو بتایا کہ ہمیں اس مہم جوئی کی بھنک تک معلوم ہے۔ <ref>[http://www.khabrain.net/frmNewsDetail.aspx?KBR_ID=6600&Cat=CAT-002 روزنامہ خبریں]</ref>
 
== نواز شریف کا بیان ==
 
=== بھارتی جنرل کش پال کا اعتراف ===
بھارتی فوج کے سابق جنرل [[کشن پال]] نے اعتراف کیا ہے کہ کارگل جنگ حقیقت میں بھارت نے نہیں جیتی۔ [[نئی دہلی]] میں بھارتی ٹی وی کو دئیےدیے گئے انٹرویو میں کارگل جنگ میں فارمیشن کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ کشن پال کا کہنا تھا کہ 1999 میں کارگل جنگ میں527 فوجیوں کی جانیں ضائع ہوئیں اور بھارت نے علاقہ واپس حاصل کرلیاکر لیا تھا۔ انہوں نے کہا ”میرے خیال میں جنگ میں اتنی جانیں ضائع ہونے کو کامیابی نہیں کہا جاسکتا“۔ کشن پال نے کہاکہ جنگ میں بھارت نہ صرف میدان جنگ میں بلکہ سفارتی محاذ پر بھی ناکام رہا۔<ref>[http://newsurdu.net/2010/05/30/india-60/ نیوز اردو کا موقع]</ref>
 
=== بھارتی فوجی ٹریبونل کا کارگل جنگ کی تاریخ دوبارہ لکھنے کا حکم ===
 
=== پرویز مشرف کا متنازع کردار ===
سابق پاکستانی جنرل و صدر [[پرویز مشرف]] کا کردار کارگل جنگ کے حوالے سے منتازعہ رہا ہے۔ پرویز مشرف نے بھارت کے ایک ٹیلی ویژن چینل کو دیے گئے انٹرویو میں کہا کہ کارگل کو ایک بڑی کامیابی قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس جنگ کے سبب ہی کشمیر کے مسئلے پر بھارت پاکستان سے مذاکرات کے لیے رضامند ہوا تھا۔ انہوں نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ اس کی وجہ سے نئی دہلی کے روئیے میں تبدیلی آئی تھی اور وہ مذاکرات کے ذریعے [[کشمیر]] کے تنازعے کے حل کے لیے تیار ہوا تھا۔ <ref>[http://web.archive.org/web/20120206010617/http://www.voanews.com/urdu/news/musharraf-kargil-24july2009-51572872.html وائس آف امریکہامریکا]</ref>
 
بھارتی فوج کے سابق سربراہ [[وی پی ملک]] نے کہا کہ پاکستان کے سابق صدر پرویز مشرف نے کارگل جنگ کے بارے میں جھوٹ بولا۔ انھوں نے کہا کہ کارگل جنگ کے بارے میں پرویز مشرف نے مسلسل اپنے بیانات تبدیل کئے۔کیے۔ انھوں نے کہا کہ پہلے مشرف نے کہا تھا کہ کارگل میں فوج کےکی بجائے مجاہدین لڑ رہے ہیں، اس کے بعد مشرف نے تسلیم کیا کہ کارگل جنگ فوج نے لڑی۔ کارگل کے ذریعے کشمیر کے مسئلے کو عالمی سطح پر دوبارہ اجاگر کرنے کے پرویز مشرف کے بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ کارگل میں پاکستانی فوجیوں کی ہلاکتوں کو پاکستان نے تسلیم نہیں کیا اور ان کی لاشیں وصول کرنے سے انکار کر دیا۔ [http://www.urdupoint.com/muusharraf_in_sprim_cort/News43-10-99-103680.html اردو پوائنٹ]
 
=== کارگل جنگ میں اسرائیل کا کردار ===
10فروری 2008 کو نئی دہلی میں [[اسرائیل]] کے سفیر [[مارک سوفر]] نے ایک چونکا دینے والا انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ ان کے ملک نے 1999ء میں پاکستان کے ساتھ کارگل کی جنگ کا رخ بدلنے میں بھارت کی مدد کی تھی۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق ایک ہفت روزہ "آﺅٹ لک" کو انٹرویو میں اسرائیلی سفیر نے بتایا کہ کس طرح کارگل کے بعد دونوں ملکوں کے دفاعی تعلقات کو فروغ حاصل ہوا جب اسرائیل نے ایک نازک مرحلے پر زمینی صورتحالصورت حال بدلنے میں بھارت کو بچایا۔ سفیر نے کہا:
{{اقتباس|میرا خیال ہے ہم نے بھارت کو ثابت کیا کہ وہ ہم پر بھروسہ کر سکتا ہے اور ہمارے پاس اسکے لیے وسائل موجود ہیں۔ ضرورت کے وقت ایک دوست ہی حقیقی دوست ہوتا ہے۔}}
اسرائیلی سفیر نے یہ بھی انکشاف کیا کہ بھارت اسرائیلی تعلقات اسلحے کی خرید و فروخت سے آگے بڑھیں گے۔ اس نے مزید کہا:
* [http://www.india-today.com/kargil/ کارگل سٹوری] - [[انڈیا ٹوڈے]]
* [http://news.bbc.co.uk/1/hi/world/south_asia/401931.stm تنازعات کے عام شہریوں پر اثرات] - [[برطانوی نشریاتی ادارہ|بی بی سی]]
* [http://yaleglobal.yale.edu/display.article?id=4506 جس دن ایک جوہری تنازعہتنازع ٹل گیا – ییل گلوبل آن لائن]
* [http://www.satribune.antisystemic.org/www.satribune.com/archives/august04/P1_rauf.htm کارگل جنگ: مشرف کا ایٹم بم پھٹنے کا منتظر ہے]
* [http://www.csis.org/media/csis/pubs/sam12.pdf کارگل جنگ کا مختصر تجزیہ اسٹریٹجک اور بین الاقوامی مطالعہ کا مرکز (PDF)]
111,622

ترامیم