"وزیر اعظم بھارت" کے نسخوں کے درمیان فرق

اضافہ مواد
(اضافہ مواد)
(اضافہ مواد)
== رہائش اور سفر ==
نئی دہلی میں '''7، لوک کلیان مارگ''' وزیر اعظم کی سرکاری رہائش گاہ ہے، اس جگہ کو پہلے 7، ریس کورس روڈ کہا جاتا تھا۔ زمینی سفر کے لئے وزیر اعظم [[رینج روور]] کی یتھیار سے لیس انتہائی ماڈرن گاڑی استعمال کرتے ہیں <ref>{{Cite news|url=http://www.thehindu.com/news/national/pm-ditches-bmw-opts-for-a-range-rover/article19498141.ece|title=Modi ditches BMW, opts for a Range Rover|date=15 اگست 2017|work=[[دی ہندو]]|access-date=10 اپریل 2018|publisher=[[The Hindu Group]]|others=Special Correspondent|publication-place=[[نئی دہلی]]|issn=0971-751X|oclc=13119119}}</ref> جبکہ ہوائی سفر کے لئے [[بوئنگ 777-300 ای آر]] کا استعمال کرتے ہیں جسے [[ایئر انڈیا ون]] نے نامزد کیا ہے اور [[بھارتی فضائہ]] دیکھ ریکھ کرتی ہے۔ <ref>{{Cite news|url=https://timesofindia.indiatimes.com/business/india-business/new-vvip-planes-replacements-for-aged-air-india-one-to-arrive-this-month/articleshow/62417728.cms|title=New VVIP planes: Replacements for aged Air India One to arrive this month – Times of India|last=Sinha|first=Saurabh|date=8 جنوری 2018|work=[[دی ٹائمز آف انڈیا]]|access-date=10 اپریل 2018|publisher=[[The Times Group]]|publication-place=[[نئی دہلی]]|oclc=23379369}}</ref><ref>{{Cite web|url=http://archive.indianexpress.com/news/air-india-one-seat-no-59g/687970/1|title=Air India One, Seat No 59G – Indian Express|last=Nayyar|first=Dhiraj|date=26 ستمبر 2010|website=[[The Indian Express]]|publisher=[[Indian Express Group]]|oclc=70274541|access-date=10 اپریل 2018}}</ref> [[اسپیشل پروٹیکشن گروپ]] ( ایس پی جی) وزیر اعظم اور اس کے خاندان کے حفاظت کے مامور ہے۔ <ref>{{Cite web|url=https://www.indiatoday.in/india/north/story/independence-day-security-cover-narendra-modi-pm-spg-204259-2014-08-16|title=The men who protect PM Narendra Modi|date=16 اگست 2014|website=[[انڈیا ٹوڈے]]|publisher=[[Aroon Purie]]|publication-place=[[نئی دہلی]]|issn=0254-8399|access-date=10 اپریل 2018|agency=Mail Today Bureau}}</ref><ref>{{Cite news|url=http://www.thehindu.com/news/cities/puducherry/spg-takes-over-security-arrangements-for-modi/article22828615.ece|title=SPG takes over security arrangements for Modi|last=Prasad|first=S.|date=22 فروری 2018|work=[[دی ہندو]]|access-date=10 اپریل 2018|publisher=[[N. Ram]]|publication-place=[[پدوچیری]]|issn=0971-751X|oclc=13119119}}</ref>
 
=== دفتر ===
[[وزیر اعظم کا دفتر]] (پی ایم او) وزیر اعظم بحارت کو سرکاری جائے عمل ہے۔ یہ دفتر ساؤتھ بلاک پر واقع ہے اور 20 کمروں پر مشتمل ہے۔ اس میں [[کیبینیٹ سکرٹیریٹ]]، [[وزارت دفاع ، حکومت ہند]] اور [[وزارت خارجی امور، حکومت ہند]] اس کے پڑوس میں واقع ہیں۔ یہ دفتر [[وزیر اعظم بھارت کا پرنسپل سکریٹری]] کی زیر نگرانی کام کرتا ہے۔ عام طور پر سابق سول سروینٹ ہی اس عہدہ پر فائز ہوتا ہت۔
 
=== پنشن اور دیگر بعد از استعفی منافع ===
سابق وزیر اعظم کو ایک بنگلہ ملتا ہے، <ref name=":7">{{Cite web|url=https://www.indiatoday.in/magazine/cover-story/story/20040607-former-presidents-prime-ministers-enjoy-benefits-at-taxpayers-expense-789819-2004-06-07|title=Former presidents, prime ministers enjoy benefits at taxpayers expense|last=Sahgal|first=Priya|date=7 جون 2004|website=[[انڈیا ٹوڈے]]|publisher=[[Aroon Purie]]|issn=0254-8399|access-date=9 اپریل 2018}}</ref><ref name=":8">{{Cite news|url=http://www.thehindu.com/opinion/editorial/perks-for-life/article3371380.ece|title=Perks for life|date=1 مئی 2012|work=[[دی ہندو]]|access-date=9 اپریل 2018|publisher=[[The Hindu Group]]|issn=0971-751X|oclc=13119119}}</ref> ان کو کابینہ کے وزرا جیسی سہولیات ملتی ہیں <ref name=":7" /> جیسے پانچ سال کی مدت کے لئے 14 ارکان پر مشتمل سکریٹری اسٹاف،دفتر کے اخراجات کی ادائیگی، سالانہ 6 [[ایگزیکیوٹیو کلاس]] ٹکٹ، اور [[اسپیشل پروٹیکشن گروپ]] کا تحفظ۔ <ref name=":7" /><ref name=":8" /> اس کے علاوہ [[بھارت کی ترتیب ترتیب]] میں اس کا پانچواں مقام ہے۔ یہ مقام صوبہ کے وزراء اعلیٰ اور کابینہ کے وزراء کا بھی ہے۔ <ref name="rajyasabha">{{cite web|url=http://rajyasabha.nic.in/rsnew/guidline_govt_mp/chap11.pdf|title=Order of Precedence|last=|first=|date=26 جولائی 1979|work=[[راجیہ سبھا]]|publisher=President's Secretariat|accessdate=24 ستمبر 2017}}</ref><ref>{{Cite web|url=http://mha.nic.in/sites/upload_files/mha/files/table_of_precedence.pdf|title=Table of Precedence|last=|first=|date=26 جولائی 1979|website=[[وزارت داخلی امور، حکومت ہند]]، [[حکومت ہند]]|publisher=President's Secretariat|archive-url=https://web.archive.org/web/20140527155701/http://mha.nic.in/sites/upload_files/mha/files/table_of_precedence.pdf|archive-date=27 مئی 2014|dead-url=yes|access-date=24 ستمبر 2017}}</ref><ref>{{Cite web|url=http://mha.nic.in/hindi/top|title=Table of Precedence|last=|first=|date=|website=[[وزارت داخلی امور، حکومت ہند]]، [[حکومت ہند]]|publisher=President's Secretariat|archive-url=https://web.archive.org/web/20140428030937/http://mha.nic.in/hindi/top|archive-date=28 اپریل 2014|dead-url=yes|access-date=24 ستمبر 2017}}</ref> پارلیمان کے سابق رکن ہونے کی حیثیت سے اس کو 20,000 [[بھارتی روپیہ]] پاہانہ ملتا ہے اور اس کے ساتھ اگر اس نے بطور ایم پی پانچ سال خدمت کی ہے تو 15000 [[بھارتی روپیہ]] ہر سال کے لئے ملتا ہے۔