"مرتضی بھٹو" کے نسخوں کے درمیان فرق

4 بائٹ کا ازالہ ،  1 سال پہلے
'''میر غلام مرتضی بھٹو''' ایک [[پاکستانی]] سیاست دان تھا۔<ref>[http://www.najamsethi.com/murtaza-bhuttos-dilemma/ Sethi, Najam: The Dilemma of Murtaza Bhutto, The Friday Times, (1993)]</ref><ref>[http://www.waterstones.com/waterstonesweb/products/raja+anwar/the+terrorist+prince/5493636/ Anwar, Raja: The Terrorist Prince]</ref> وہ سابقہ [[وزیر اعظم پاکستان]] [[ذوالفقار علی بھٹو]] اور [[نصرت بھٹو]] کا بیٹا تھا۔ وہ دہشت گرد تنظیم [[الذوالفقار]] کا بانی بھی تھا جو [[محمد ضیاء الحق]] کے دور میں اس کے والد کی سزائے موت کے رد عمل میں بنائی گئی تھی۔<ref>[http://www.historyofpia.com/hijackings.htm History of PIA: Hijackings]</ref><ref>[http://blog.dawn.com/2010/04/09/al-zulfikar-the-unsaid-history/ al-Zufikar, the Unsaid History, DAWN 2010]</ref> وہ ایک مفرور کے طور پر [[افغانستان]] منتقل ہو گیا، فوجی ٹربیونل نے اس کی غیر حاضری میں اسے سزائے موت کا حکم جاری کیا۔جمعرات، 20 ستمبر 1996ء کی شام کو مرتضی بھٹو اور دیگر چھ پارٹی کارکنوں کو اس کی رہائش گاہ کے قریب ایک پولیس مقابلے میں ہلاک کر دیا گیا۔
 
=== کہانی کا ٓا گازکاآغاز کیسے؟ ===
 
===== ایک بار پھر ایک چھوٹا ہیلی کاپٹر لاڑکانہ پہنچا، پہلا ہیلی کاپٹر چار اپریل 1979 کو ملک کے منتخب وزیراعظم ذوالفقارعلی بھٹو کی میت لے کر پہنچا تھا۔ دوسرا جولائی 1985 میں بھٹو کے چھوٹے بیٹے شاہنواز کی میت لے کر آیا اور تیسری مرتبہ ہیلی کاپٹر بھٹو کے بڑے بیٹے میر مرتضٰی بھٹو کی میت لے کر پہنچا تھا۔ گڑھی خدا بخش میں ہیلی کاپٹر کا اترنا خیر کی خبر نہیں سمجھا جاتا۔پورا سندھ سوگ، غم وغصے میں ڈوب گیا کیونکہ رات کو مرتضٰی بھٹو کو مبینہ پولیس مقابلے میں مار دیا گیا تھا۔ =====