"شیخ رحمکار" کے نسخوں کے درمیان فرق

559 بائٹ کا اضافہ ،  1 سال پہلے
کوئی ترمیمی خلاصہ نہیں
{{معتقدانہ|date=فروری 2019}}
'''شیخ المشائخ شیخ رحمکار''' المعروف '''[[کاکا صاحب]]''' صوبہ [[خیبر]] [[پختونخوا]] کی معروف شخصیت ہے۔
 
 
== نام و نسب ==
آپ کا اسم گرامی رحمکار،سید کستیر(پشتو میںسیاہی مائل زرد رنگ کے عنبر فشاں پھول کو کہتے ہیں) لقب رحمکار(حد درجہ شفیق) اور معروف کاکا صاحب(پشتون معمر اور بزرگ کو کاکا کہتے ہیں) ہے، والد کا نام شیخ بہادر المعروف ابک بابا ، دادا کا نام مست بابا (انکا مزار شیخ رحمکارکے مزار سے سات میل دور ہے۔ آپ کی زیارت مرجع خلائق ہے)اور پردادا کا نام غالب بابا (انکا مزار چراٹ کے پہاڑ کے نیچے واقع ہے بڑا دشوار گزار علاقہ ہے مگر لوگ زیارت کرتے ہیں)تھا۔ آپ تمام صوبہ سرحد اور اکناف و اطراف میں کاکاصاحب کے نام سے مشہور ہیں۔ آپ کا لقب ’’ شیخ المشائخ‘‘ تھا۔تھا۔آپ حسینی سید ہیں جو 23 واسطوں سے امام حسین تک پہنچتا ہے ان کی اولاد عرفی نام کی نسبت سے کاکا خیل کہلاتی ہے<ref>مقامات قطبیہ مقالات قدسیہ،حلیم گل بابا،دار العلوم فیض القرآن پیر سباق نوشہرہ</ref>
 
== سیرت و کردار ==
== خلفاء ==
آپ کے بہت خلفاء ہیں ان میں یہ خلفاء بہت مشہور ہیں جو صاحبان علم وفقر اور صاحب کرامات تھے۔
غازی خان، عزیز شیخ، عبد الرحیم مشہور، شیخ رحیم خٹک، علی گل و ملی گل (یہ دونوں آپ کے خاص خادم بھی تھے، ان دونوں کی قبریں بھی آپ کے روضہ میں ہیں)۔ فقیر صاحب شگی، شیخ جمیل (جمال خان خٹک),، یہ [[خوشحال خان خٹک]] جو مشہور شاعر ہے اس کا بھائی ہے اور آپ کے مرید ہونے کے بعد [[فقیر جمیل بیگ]] اور '''فقیر بابا''' کے نام سے مشہور ہے۔ یہ خٹک قوم کا امیر تھا۔ میرزا گل یہ ولی کامل تھے۔ شیخ بابر، دریاخاں چمکنی، شیخ فتح گل، شیخ اوین، شیخ کمال، شیخ حیات، پیرمیاں حاجی، حسن بیگ، آخوند ہلال یہ قلندر تھے۔ آخوند اسماعیل ۔
 
== وفات ==
24رجب [[1063ھ]] جمعہ کے دن [[نماز جمعہ]] کے لیے جب امام منبر پر خطبہ پڑھنے کے لیے نکلا۔ آپ کی روح قفس عنصری سے پرواز کر گئی۔ آپ کی عمر اسی برس تھی۔<ref>تذکرہ علما و مشائخ سرحد جلد اوّل، صفحہ 39 تا 45،محمد امیر شاہ قادری ،مکتبہ الحسن کوچہ آقہ پیر جان یکہ توت پشاور</ref>
 
== حوالہ جات ==
{{حوالہ جات}}