"مل پور" کے نسخوں کے درمیان فرق

1 بائٹ کا ازالہ ،  1 مہینہ پہلے
کوئی ترمیمی خلاصہ نہیں
'''مل پور ''' {{دیگر نام|انگریزی= Malpur}} [[پاکستان]] کا ایک [[پاکستان کی یونین کونسلیں]] جو [[اسلام آباد]] میں واقع ہے۔
== مل پور اور قائد اعظم ==
26 جولائی 1944ءقائداعظم سری نگر کا دورہ مکمل کرنے کے بعد مری کے راستے راولپنڈی آ رہے ہیں، حسبِ معمول فاطمہ جناح ان کے ہمراہ ہیں۔ہیں۔جب مل پور (موجودہ قائداعظم یونیورسٹی کے ساتھ ملحقہ گاؤں) میں رکتے ہیں اور راولپنڈی سے جانے والے استقبالی جلوس سے خطاب کرتے ہیں تو وہیں اعلان فرما دیتے ہیں کہ پاکستان کا بننے والا دارالحکومت اس سبزہ زار میں ہو گا جو مارگلہ کی پہاڑیوں سے پنڈی شہر تک پھیلا ہوا ہے۔ <ref>اسلام آباد منزلِ مراد، صفحہ 60،مصنف مولانا اسماعیل ذبیح بیان از پروفیسر کرم حیدری</ref>۔
جب مل پور (موجودہ قائداعظم یونیورسٹی کے ساتھ ملحقہ گاؤں) میں رکتے ہیں اور راولپنڈی سے جانے والے استقبالی جلوس سے خطاب کرتے ہیں تو وہیں اعلان فرما دیتے ہیں کہ پاکستان کا بننے والا دارالحکومت اس سبزہ زار میں ہو گا جو مارگلہ کی پہاڑیوں سے پنڈی شہر تک پھیلا ہوا ہے۔ <ref>اسلام آباد منزلِ مراد، صفحہ 60،مصنف مولانا اسماعیل ذبیح بیان از پروفیسر کرم حیدری</ref>۔
اس میں جبی، شاہدرہ، بھارہ کہو، میرا، جھنگ بگیال اور منڈالہ شامل ہیں<ref>https://www.politicpk.com/islamabad-union-council-list/</ref>
اسلام آباد سے بہارہ کہو جاتے ہوئے مری روڈ پر مل پور کی قدیم بستی واقع ہے۔ یہ گاوں بھی ابتدا میں قطب شاہی اعوانوں کا تھا اور راول ڈیم کی حدود کے اندر واقع تھا۔بعد ازاں اسےنیو مل پور کے نام سے بسایا گیا۔ یہ گاوں سردار بدھن خان اعوان نے پہلے پہل آباد کیا تھا بعد میں یہ گکھڑوں کی ملکیت میں آ گیا یہاں کمیال، گکھڑ، شیخ اور ملیار بھی آباد تھے 1976ء میں وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو مرحوم نے اسے ماڈل ویلج کا درجہ دیا تھا۔