"ہدایت الانسان الی سبیل العرفان" کے نسخوں کے درمیان فرق

کوئی ترمیمی خلاصہ نہیں
 
'''ہدایت الانسان الی سبیل العرفان''' [[حافظ محمد عبد الکریم|خواجہ حافظ محمد عبد الکریم]] سجادہ نشین عید گاہ راولپنڈی کی تصوف پر تصنیف ہے
* [[قرآن مجید]] [[احادیث]] اور کتب [[تصوف]] سے اخذکر کے مرتب کی گئی ایسی بے بہا تصنیف ہے اس کے متعلق بلامبالغہ کہا جاسکتا ہے کہ واقعی [[شریعت]] طریقت حقیقت اور معرفت کی ہادی اور تیرہ دلوں اور گمراہوں کے لئے رہبر اور حقیقی رہنما ہے کتاب ایسی موثرمؤثر اور دلپزیر ہے کہ جس نے ایک مرتبہ پڑھی اس کا کام بن گیا اور اس کے دل میں گھر کرگئی اور اپنے پڑھنے والے کو ایسا ثابت قدم کر دیا کہ تا دم واپسی سیدھے راستے سے پائے استقلال و ثبات نے لغزش نہ کھائی چو نکہ کتاب روحانی ذوق و شوق اور جذبہ و حال کی حالت میں تصنیف کی گئی اور اس کی شہرت مقصود نہ تھی بلکہ محض اصلاحقلوباصلاح قلوب کہ جس سے تعلق مع اللہ تقوی اور اخلاص و صدق اور محبت و رضا اوراوصاف حمیدہ پیدا کرنے کیلئے محض لوجہ اللہ تھااور خالق کون و مکاں کی رضا و خوشنودی مقصود تھی تھی اس وجہ سے یہ کتاب نہایت مفید سود مند ثابت ہوئی اور اس کی مقبولیت کا اندازہ اس سے ہو سکتا ہے کہ کئی بار طبع ہوئیںہوئی <ref>کنز القدیم فی آثار الکریم، قاضی عالم الدین، ،ویری ناگ پبلشر میرپور آزاد کشمیر</ref>
* یہ کتاب اہل سلسلہ عالیہ [[نقشبندیہ]] کے لیے بالخصوص اور دوسرے حضرات کے لیے بالعموم ایک نعمت غیر مترقبہ ہے ابتدا سے انتہا تک سالک کو جن مقامات سے گزرنا پڑتا ہے انہیں نمایاں طور پر روشناس کرانے اور راستے کے نشیب و فراز سے آگاہ کرنے میں یہ تالیف رہنمائی کا کام دیتی ہے ظاہری محاسن اور باطنی خوبیوں میں یہ کتاب عجیب شان میں جلوہ گر ہے<ref>ہدایت الانسان الی سبیل العرفان، حافظ عبد الکریم صاحبزادہ جمیل الرحمان آستانہ عالیہ عیدگاہ راولپنڈی</ref>
== حوالہ جات ==