"کعب بن عمرو" کے نسخوں کے درمیان فرق

969 بائٹ کا اضافہ ،  10 مہینے پہلے
مضمون میں اضافہ کیا ہے
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
(مضمون میں اضافہ کیا ہے)
=== اخلاق وعادات ===
نہایت رحیم اور نرم دل تھے ،بنو حرام کے ایک شخص پر قرض آتا تھا اس کے مکان پر جا کر آوازدی، معلوم ہوا موجود نہیں، اتنے میں اس کا چھوٹا لڑکا باہر آیا پوچھا تمہارے باپ کہاں ہیں، بولا اماں کی چار پائی کے نیچے چھپے ہیں،انہوں نے پکارا کہ اب نکل آؤ تم جہاں پر ہو مجھے معلوم ہے وہ باہر آیا اوراپنی فقر کی داستان سنائی ابو الیسر کا دل بھر آیا اور کاغذ منگا کر تمام حروف کو مٹادیا اورکہا اگر مقدرت ہوتو ادا کرنا ورنہ میں معاف کرتا ہوں۔<ref>مسلم:2/450</ref><ref>اسد الغابہ جلد 2 صفحہ 877حصہ ہشتم مؤلف: ابو الحسن عز الدين ابن الاثير ،ناشر: المیزان ناشران و تاجران کتب لاہور</ref><ref>اصحاب بدر،صفحہ 189،قاضی محمد سلیمان منصور پوری، مکتبہ اسلامیہ اردو بازار لاہور</ref>
 
غلاموں کے ساتھ برابری کا برتاؤ رکھتے تھے،ایک مرتبہ عبادہ بن ولید ان سے حدیث سننے کیلئے آئے دیکھا تو ان کے غلام کے پاس کتابوں کا ایک پشتارہ ہے خود ایک چادر اورایک معافر کی بنی ہوئی لنگی پہنے ہیں، غلام کا بھی یہی لباس ہے،عبادہؓ نے کہا ،عم محترم بہتر ہو کہ ایک جوڑا مکمل کر لیجئے یا تو آپ ان کی معافری لے لیجئے اوراپنی چادر ان کو دیدیجئے یا اپنی معافری دیدیجئے اوران سے چادر لیجئے ،حضرت ابو الیسرؓ نے ان کے سرپر ہاتھ پھیر ا اور دعا دی اور فرمایا کہ آنحضرتﷺ کا حکم یہ ہے کہ جو تم پہنو غلاموں کو پہناؤ اور جو تم کھاؤ ان کو کھلاؤ۔
<ref>(مسلم:۲/۴۵۰)</ref>
 
== حوالہ جات ==