"لثیر غس" کے نسخوں کے درمیان فرق

3 بائٹ کا اضافہ ،  1 مہینہ پہلے
م
کوئی ترمیمی خلاصہ نہیں
م
م
[[حکیم خواجہ رضوان احمد]] کے نزدیک جرجانی کا یہ قول کئی وجوہ سے قابلِ اعتراض ہے:-
 
ایک وجہ تو یہ ہے کہ مجاری دماغ ایسے خالی مسالک (راستے) نہیں ہیں کہ جن میں صرف ارواح ہی نفوذ کر سکتی ہیں۔ بلکہ مجاری دماغ وہ باریک باریک رگیں ہیں جو مغز (بھیجد) میں نفوذ کئے ہوئے ہیں اور ان میں سے بعض رگیں تو وہ ہیں جن کے ذریعہ دماغ کو غذا پہونچتی ہے اور وہ وریدیں ہیں اور بعض وہ ہیں جن کے ذریعہ روح قلبی پہونچتی ہیں۔ وہ شریانیں ہیں۔ چناچہ یہ وریدیں اور شریانیں نہ تو خالی ہوتی ہیں اور نہ یہ صرف دماغی روح کے نفوذ کرنے کا مسالک ہیں۔ بلکہ ان میں روح کا نفوذ اسی طرح ہوتا ہے جس طرح کہ بدن کی دوسری وریدوں اور شریانوں میں ہوتا ہے۔ لیکن دماغ کی خالی تجاویف (جوف یا وسعتیں) جن میں روح نفوذ کرتی ہے ان کا نام بطون ہے۔<ref>ترجمہ شرح اسباب مع حاشیہ شریف خاں و معمولات مطب (از حکیم خواجہ رضوان احمد) جلد اول صفحہ 63 طبع 1935</ref>
932

ترامیم