"واقعہ کربلا کے اعداد و شمار" کے نسخوں کے درمیان فرق

== اسراء اور زندہ بچ جانے والے ==
=== مرد ===
قمقام اور جلا العیون میں ہے کہ کربلا میں امام زین العابدین، امام محمد باقر، حسن مثنی، مرقع ابن قمامہ اسدی اور عقبہ ابن سمعان غلام جناب بی بی رباب کے علاہ کوئی مرد باقی نہ رہا تھا۔ لیکن تاریخ کے قدیم مآخذ کی ورق گردانی سے ظاہر ہوتا ہے کہ [[واقعہ کربلا|واقعہ عاشورہ]] کے پسماندگان (زندہ بچ جانے والوں) میں کئی دیگر مرد بھی تھے جو حسب ذیل 1719 افراد ہیں: (البتہ امام کی اجازت سے راوی وقائع کربلا [[ضحاک بن عبد اللہ مشرقی]] چھپ کر بھاگ گئے تھے۔)
{{ستون آ|2}}
# [[امام زین العابدین|امام سجاد]]،
# [[محمد باقر| امام باقر]]،
# [[حسن مثنیٰ]]
# [[عمیربن حسین]]، <ref>دینوری، الاخبار الطوال، ص259۔</ref><ref>و ابن کثیر، وہی مآخذ، ج8، ص212۔</ref>
# [[محمد بن حسین بن علی]](علیہما السلام)، <ref name="بلاذری، وہی مآخذ، ج3، ص411۔">بلاذری، وہی مآخذ، ج3، ص411۔</ref><ref>ابن عبد ربہ‌اندلسی، العقد الفرید، ج4، ص360۔</ref>
# [[امام علی ابن ابی طالب|امام علی امیرالمؤمنین]] کا غلام [[مسلم بن رباح]]<ref>ابن عساکر، تاریخ مدینۃ دمشق، ج14، ص223۔</ref>
# [[علی بن عثمان مغربی]]۔<ref>شیخ صدوق، کمال الدین و تمام النعمہ، ص546۔</ref>
# [[ضحاک بن عبد اللہ مشرقی]]{{ستون خ}}
 
=== خواتین ===
22,177

ترامیم