عبد الحق محدث دہلوی

(عبدالحق محدث دہلوی سے رجوع مکرر)

عبد الحق محدث دہلوی (پیدائش: جنوری 1551ء– وفات: 19 جون 1642ء ) جن کا پورا نام شیخ ابو المجد عبد الحق بن سیف الدین دہلوی بخاری ہے، مغلیہ دور میں متحدہ ہندوستان کے مایہ ناز عالم دین اور محدث تھے۔ ہندوستان میں علم حدیث کی ترویج و اشاعت میں آپ کا کردار ناقابل فراموش ہے۔

عبد الحق
معلومات شخصیت
پیدائش 1551ء
دہلی
وفات 1642ء
دہلی
عملی زندگی
پیشہ محدث  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان فارسی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

ولادتترميم

شیخ محقق شیخ عبد الحق محدث دہلوی دہلی میں پیدا ہوئے۔ بیس بائیس سال کی عمر میں علوم دینیہ عقلیہ ونقلیہ مروجہ کی تحصیل سے فارغ ہو گئے۔

سفر حرمینترميم

996ھ / 1588ء میں حجاز کا رخ کیا اور کئی سال تک حرمین شریفین کے اولیاء کبار اور علما زمانہ سے استفادہ کیا۔ بالخصوص شیخ عبد الوہاب متقی خلیفہ شیخ علی متقی کی صحبت میں علم حدیث کی تکمیل کی۔

بیعت و خلافتترميم

پہلے اپنے والد محترم سے بیعت ہوئے اور پھر ان کے ایما پر سلسلہ قادریہ میں موسیٰ پاک شہید ملتان کے دست اقدس پر بیعت ہوئے۔ مکہ مکرمہ میں شیخ عبد الوہاب متقی سے بھی شرف بیعت تھا اور وہاں سے چار سلسلوں چشتیہ، قادریہ، شاذلیہ اور مدینہ منورہ میں اجازت حاصل تھی۔

جب حرمین سے واپس آئے سلسلہ نقشبندیہ میں خواجہ باقی باللہ سے بھی بیعت کی اور یہ شیخ عبد القادر جیلانی کے روحانی اشارے سے کی تھی۔[1] 50 سال تک دہلی میں مصروف تدریس و تالیف رہے۔

تصنیفاتترميم

حوالہ جاتترميم

  1. تکمیل الایمان، عبد الحق محدث دہلوی، صفحہ 18، سبزواری پبلشر کراچی
  2. مدارج النبوۃ عبد الحق محدث دہلوی صفحہ 9 تا 11 شبیر برادرز لاہور
  3. تکمیل الایمان، عبد الحق محدث دہلوی، صفحہ 14 تا 20، سبزواری پبلشر کراچی

مطالعہ کیجیےترميم

اخبار الاخيار فی اسرار الابرار، به تصحیح: علیم‌اشرف خان، انجمن آثار و مفاخر فرهنگی، تهران، 1383ش۔/2004م۔

مروری بر احوال شيخ عبد الحق محدّث دهلوی و اثرِ وی «اخبار الاخيار فی اسرار الابرار»، علیم اشرف خان، فصلنامۀ نقد و تحقیق، مدیر و سردبیر: سید نقی‌عباس «کیفی»، جلد 1، شماره 4، صص 47-32، اکتبر تا دسامبر 2015م۔، دهلی‌نو