نرگس فخری

امریکی فیشن ماڈل اور اداکارہ

نرگس فخری (پیدائش 20 اکتوبر 1979ء) [4][5] ایک امریکی فیشن ماڈل اور اداکارہ ہیں۔ وہ زیادہ تر ہندوستانی اور انگریزی فلموں میں دکھائی دیتی ہیں [6] [7]۔ راک اسٹار فلم کے لیے انھیں فلم فیئر ایوارڈ برائے بہتریں نووارد دیا گیا، مدراس۔ کیفے ، میں تیرا ہیرو ، ہاؤس فل 3 ان کی مشہور فلمیں ہیں، ہالی وڈ میں اسپائی ان کی پہلی قابل ذکر پرفارمنس ہے [8] [9]۔

نرگس فخری
(انگریزی میں: Nargis Fakhri ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
 

معلومات شخصیت
پیدائش 20 اکتوبر 1979ء (45 سال)[1]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کوئینز [1]  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت ریاستہائے متحدہ امریکا   ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
قد
عملی زندگی
پیشہ ادکارہ [2]،  ماڈل [3]،  فلم اداکارہ   ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مادری زبان انگریزی   ویکی ڈیٹا پر (P103) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان ہندی ،  انگریزی   ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات
ایفا اعزاز برائے مشہور جوڑی (برائے:Rockstar ) (2012)  ویکی ڈیٹا پر (P166) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں


ذاتی زندگی

ترمیم

نرگس کوینز، نیو یارک میں ایک چیک ماں، میری فخری (پولیس افسر) [10] اور ایک پاکستانی باپ، محمد فخری کے گھر پیدا ہوئیں۔ [11][12] جب وہ سات سال کی تھیں ان کے والدین نے ایک دوسرے کو طلاق دے دی ، والد چند سال بعد وفات پا گئے [13] ۔[14] نرگس ایک امریکی شہری ہیں۔[14] جبکہ ایک دہائی پہلے ان کے والد وفات پا چکے ہیں، ان کی ماں کینسر میں مبتلا خاتون ہیں اور یہی ان کی امریکی پولیس فورس سے سبکدوشی کی وجہ ہے۔ نرگس کے مشاغل میں کھانا پکانا، سوچ بچار اور یوگا شامل ہیں۔[15] اپنی پاکستانی چیک نسل اور امریکی شہریت کے باعث وہ خود کو گلوبل شہری کہتی ہیں [16][10] [13]۔

پیشہ ورانہ زندگی

ترمیم
 
نرگس فخری خواتین کی صحت کی افتتاحی تقریب میں

2004ء میں نرگس ایک امریکی ٹی وی سیریل امریکاز نیکسٹ ٹاپ ماڈل سائیکل 2 اور 3 میں نمودار ہوئیں۔[17] وہ 2009ء میں کنگفشر کیلنڈر میں تیراکی کے لباس میں ظاہر ہوئیں۔[17] انھوں نے 2011ء میں اپنی پہلی بالی ووڈ فلم، راكسٹار اداکار رنبیر کپور کے ساتھ کی جو 11 نومبر 2011ء کو جاری کی گئی۔[18][19] نرگس نے فی الحال اکشے کمار کی ہری اوم پروڈکشنز کے ساتھ تین فلموں کے معاہدے پر دستخط کیے ہیں۔[20]

ماڈلنگ

ترمیم

نرگس نے ماڈلنگ کا آغاز 16 سال کی عمر سے کیا۔ نرگس کی شہرت تب بڑھی جب وہ انڈین کنگ فشر کیلنڈر 2009 کی پرنٹ مہم میں نمودار ہوئیں [16]۔ کنگ فشر کیلنڈر میں حصہ لینے سے وہ انڈین فلم ہدایت کار امتیاز علی [21] [22] کی نظروں میں آ گئیں جنھوں نے اسے فلم راک اسٹار میں مرکزی کردار کے لیے منتخب کر لیا [23] [24]۔ نرگس کا کہنا تھا اس نے انڈیا میں کام کرنے کے لیے اس لیے ہامی بھری تاکہ وہ اپنی جڑوں اور ثقافت سے قریب ہو سکیں کیونکہ انڈیا اور پاکستان کی تقافت ملتی جلتی ہے [9] [10] [13]۔

اداکاری کیریئر (2011-2015)

ترمیم

نرگس فخری نے فلمی اداکاری کا آغاز امیتاز علی کی رومانوی موسیقی فلم راک اسٹار سے 2011 میں کیا جس میں ایک موسیقار کی زندگی کا سفر عاجزانہ پس منظر سے اپنی محبت کی موت سے بین الاقوامی ستارہ بننے تک دکھا گیا [25] ۔ راک اسٹار پہلی فلم تھی جس میں کشمیری پنڈت کی شادی دکھائی گئی اور نرگس کو ایک آزار امیر کشمیری پنڈت پس منظر والی لڑکی دکھا گیا [26] [27] ۔ ہندی اچھی نہ ہونے کی وجہ سے وائس فنکار مونا گھوش شیٹی نے نرگس کی آواز میں ڈبنگ کروائی [28] ۔ فلم کو نقادوں کی طرف سے بہت زیادہ توجہ ملی مگر ان کی رائے ملی جلی تھی ، زیادہ تر نے نرگس کی خوبصورتی کی تعریف کی [29] [30] ۔ فلم نقاد ترن ادرش نے لکھا "نرگس کی ادائیں اور خوبصورتی مسحورکن ہے مگر المیہ لمحات میں وہ متاثرکن نہیں"، البتہ اس نے رنبیر اور نرگس کی اسکرین پر جوڑی کی تعریف کی [31] ۔ ریڈف کے راجا سین نے نوٹ کیا "وہ اتنی خوبصورت اور دلکش ہے کہ ہم اس کی کبھی کبھار کی غلطیوں کو نظر انداز کر دیتے ہیں [32]"۔ نکھت کاظمی نے اس کی کارکردگی کی تعریف کی [33]۔ ایک ارب ہندوستانی روپے (15 ملین ڈالر) سے زائد ریونیو کے ساتھ راک اسٹار اس سال کی بہترین ہندی فلموں میں شمار ہوئی [34]۔ نرگس کی کارکردگی سے اسے اس فلم کے لیے فلم فیئر ایوارڈ بھی ملا۔ اگلی فلم جان ابراہم کے ساتھ مدراس کیفے (2013) تھی جس میں وزیر اعظم راجیو گاندھی کا قتل اور سری لنکا کی سول جنگ میں انڈین دخل اندازی دکھائی گئی [35]۔ نرگس کا کردار سری لنکا میں برطانوی جنگی صحافی کا کردار ادا کیا جو انیتا پراتاپ سے متاثر ہو کر لکھا گیا [36]۔ اس فلم میں نرگس نے اپنی آواز میں ڈائیلاگ ڈب کروائے کیونکہ یہ رول ایسا تھا جس میں ایسی انڈین لڑکی چاہیے تھی جس کا لہجہ انگریزی ہو [37] ۔ مدراس کیفے کو نقادوں نے سراہا اور مرکزی کرداوں کی بھی تعریف کی گئی [38] ۔ سیبل چٹرجی نے نرگس فخری کے بارے میں لکھا کہ "صحیح سر پکڑے" [39] جبکہ راجیو مسند نے اسے خوشگوار حد تک لائق کہا [40]۔ دی ہندو کے انوج کمار نے فلم کی کافی تعریف کی اور کہا کہ نرگس نے خود کو محض خوبرو چہرے سے زیادہ ثابت کیا ہے [41] [42]۔ اسی سال فلم "پھٹا پوسٹر نکلا ہیرو" میں ایک آئٹم نمبر "دھتنگ ناچ" میں شاہد کپور [43] کے ساتھ کام کیا جو مقبول ہوا۔ اسی سال ورن دھون کے ساتھ فلم "میں تیرا ہیرو" کی جس کی ہدایت کاری ڈیوڈ دھون [44] نے کی۔ فلم میں نرگس نے عائشہ کا کردار ادا کیا جو بینگ کاک میں ایک ڈان کی بیٹی ہے [45] ۔ فلم کامیاب رہی مگر نقادوں کی طرف سے ملا جلا رد عمل آیا [46] [47] ۔ روہت کھلنانی کے مطابق نرگس کی کارکردگی بری نہیں رہی اور وہ مصالحہ کامیڈی میں بہترین فٹ ہوئی اور مایوس نہیں کیا [48] [49] ۔ ترن ادرش کو نرگس خوبصورت تو دکھائی دی مگر ادکاری بہتر کرنے کا مشورہ دیا [50] ۔ اس کے بعد ایک مشہور آئٹم نمبر "یار نہ ملے" فلم کک [51] میں ادا کیا ، گانے کی تعریف ہوئی اور نقادوں کے ساتھ ساتھ عوام میں بہت مقبول ہوا [52] [53] ۔

ہالی ووڈ پروڈکشن

ترمیم

پال فائیگ کی ایکشن کامیڈی فلم اسپائی نرگس کا پہلا ہالی ووڈ پراجیکٹ بنا ، اس میں سی آئی اے کی تجزیہ کار سوس کوپر کا کردار ادا کیا جو بلیک مارکیٹ میں جوہری سوٹ کیس بیچنے کے عمل کو سبوتاژ کرتی ہے [54]۔ فلم اور نرگس کی کارکردگی کو نقادوں نے سراہا [55]۔ انٹرٹینمنٹ ٹونائٹ کے جان بون نے نوٹ کیا کہ وہ فلم کے چند خاموش سین میں بہترین نظر آئی [56] [57] ۔ نرگس کی کارکردگی پر اسے ایم ٹی وی موی ایوارڈ برائے بہتر لڑائی کے لیے نامزد کیا گیا [58] ۔ اسپائی اس سال کی بہترین کمانے والی کمانے والی فلم ثابت ہوئی جس نے 235 ملین ڈالر سے زیادہ کی کمائی کی [59] [60] ۔ ہالی ووڈ پروڈکشن کی دوسری فلم پانچ شادیاں (5 Weddings) میں راجکمار راؤ کے مقابل 2018 میں کردار ادا کیا [61] ۔ دا ٹائمز آف انڈیا کے رضا نورانی کو نرگس فخری اور راؤ کے درمیاں کیمسٹری پسند نہیں آئی اور ان کے بقول نرگس نے کچھ خاص کام نہیں کیا [62] ۔

اداکاری کیریئر (2016 سے تا حال)

ترمیم

2016 میں نرگس نے تامل فلم ساگاسم میں ایک آئٹم نمبر "دیسی گرل" فلم کے مرکزی اداکار پراشانتھ کے ساتھ کیا [63] [64] [65]۔ گانے کی کوریو گرافی راجو سندرم نے کی اور اس میں 100 کے قریب ایکسٹرا شامل تھے [66] [67] ۔ نرگس فخری کی اگلی فلم اظہر تھی جس میں وہ عمران ہاشمی اور پراچی دیسائی کے ساتھ دکھائی دیں [68] ۔ فلم میں سنگیتا بجلانی کا کردار ادا کیا جو اداکارہ اور محمد اظہر الدین کی دوسری بیوی ہیں [69] ۔ مڈ ڈے کو انٹرویو دیتے ہوئے اظہر الدین نے بتایا کہ فلم خدا، شادی اعر میچ فکسنگ کے بارے میں ہے [70] ۔ سی بی آئی کے ایک افسر نے دعوی کءا کہ ان کے پاس اظہر الدین کی میچ فکسنگ میں شمولیت کے اعتراف کی ویڈیو ہے مگر وہ اسے ثابت نہ کر سکے [71] ۔ ناقدین نے فلم کی تعریف کی مگر نرگس کی کارکردگی پر وہ ایک رائے نہیں رکھتے [72] ۔ نمرتا جوشی کے مطابق وہ پسند کیے جانے لائق ہے مگر فلم فیئر کے دیوش شرما کے مطابق انھوں نے فلم میں "مصنوعی پلاسٹک تاثرات" پیش کیے [73] ۔ فلم کمرشل پیمانے پر کامیاب رہی [74] ۔ اس کے بعد نرگس نے ہاؤس فل فلم سیریز کی تیسری فلم میں کام کیا [75] جس میں نرگس نے ایک امیرزادی کا کردار ادا کیا جو ایک فریبی انسان (ابھیشک بچن) [76] کے ساتھ محبت میں گرفتار ہو جاتی ہے۔ فلم اور نرگس کی کارکردگی پر زیادہ تر رائے منفی رہی [77] ۔ فرسٹ پوسٹ کے سبھاش جھا نے نرگس فخری پر تنقید کرتے لکھا کہ وہ فلم میں فقط دیکھنے کی چیز کے طور پر پیش کی گئی اور کچھ بھی نہیں [78] ۔ فلم کمرشل سطہ پر کافی کامیاب رہی اور دنیا بھر میں ایک ارب 88 کروڑ ہندوستانی روپے (26 ملین ڈالر) کا بزنس کیا [79] [80] ۔ اس کے بعد نرگس نے کامیڈی فلم ڈیشوم میں چھوٹا سا کردار کیا [81] جس میں اس کا کردار ثاقب سلیم کی دوست کا تھا [82] ۔ 2016 میں نرگس کا آخری رول کرسٹینا کا تھا جو ایک امریکی شہری ہے اور سازندے کی تلاش میں جو روی جھادیو کی فلم بنجو میں بنجو بجا سکے [83] [84] ۔ رتیش دیش مکھ کے ساتھ اس فلم کو ممبی کی کچی آبادی کی بہترین تصویر کشی قرار دیا گیا [85] ۔ ریلیز ہونے پر اس فلم کو ملا جلا رد عمل ملا اور باکس آفس پر اس نے بہتر کارکردگی نہ دکھائی [86] [87] ۔ ٹائمز آف انڈیا سے رینوکا نے لکھا کہ "نرگس کا امریکی لہجہ کھلتا ہے مگر پھر عادت ہو جاتی ہے [88]"۔ کوئیموئی نے لکھا "کوئی اپنے پیسے کیوں ضائع کرے گا نرگس کی اداکاری اور رتیش کے کردار کو دیکھنے کے لیے" [89]۔ این ڈی ٹی وی کے سیبل چٹرجی نے اس فلم کو بہت ہی بیکار لکھا [90] ۔ اکتوبر 2017 میں نرگس فخری کو "ون ینگ ورلڈ کاؤںسلر" کے طور پر کوفی عنان ، ڈوزن اور چیر کے ساتھ منتخب کر لیا گیا [91] [92] ۔ نرگس فخری نے 2019 میں بھوشن پٹیل کی خوفناک تھرلر فلم اماوس میں کام کیا مگر فلم باکس آفس پر ناکام رہی [93] [94]۔ 2019 میں ہی نرگس نے سنجے دت کے ساتھ فلم تورباز میں کام کیا [95] [96] ۔

ذاتی زندگی

ترمیم

2014 میں نرگس اداکار ادے چوپڑا کے ساتھ نظر آئیں ، ان کے افیئر کو میڈیا میں بہت کوریج ملی اور یہ خیال بھی کیا جا رہا تھا کہ شاید دونوں شادی کر لیں [97] مگر ان کی جوڑی 2017 کے آخر میں ٹوٹ گئی [98] ۔ مئی 2018 میں نرگس نے انسٹاگرام پر اعلان کیا کہ وہ فلم بنانے والے میٹ الونزو کے ساتھ رشتہ میں منسلک ہیں [99] [100] ۔

ڈسکو گرافی

ترمیم

2017 میں گانے "Habitaan Vigaad Di" پر پریچے بطور فیچر آرٹس [101] [102] 2017 میں گانے "ووفر" سنوپ ڈاگ بطور فیچر آرٹسٹ [103] [104]

میوزک ویڈیو

ترمیم

2017 میں للی سنگھ کے گانے "If My Indian Dad Was A Rapper" میں جلوہ گر ہوئیں [105] 2017 میں پریچے گائیک کے گانے "Habitaan Vigaad Di" میں جلوہ گر ہوئیں [101] 2017 میں سنوپ ڈاگ کے گانے "ووفر" میں جلوہ گر ہوئیں [103] 2018 میں ستندر سرتاج کے گانے "تیرے واسطے" میں جلوہ گر ہوئیں [106]

ایوارڈ اور نامزدگیاں

ترمیم
سال فلم ایوارڈ قسم/درجہ نتیجہ
2012 راک اسٹار فلم آئیفا ایوارڈ Hottest Pair (shared with رنبیر کپور) فاتح[107]
فلم فیئر ایوارڈ فلم فیئر اعزاز برائے بہترین نئی اداکارہ نامزد[108]
اسٹار ڈسٹ ایوارڈز Superstar of Tomorrow – Female نامزد[107]
زی سنے ایوارڈ Best Female Debut نامزد[108]
2014 مدراس کیفے بگ اسٹار انٹرٹینمنٹ ایوارڈ Most Entertaining Actor in a Social/Drama Film – Female نامزد[109]
2015 میں تیرا ہیرو اسٹار ڈسٹ ایوارڈز Breakthrough Supporting Performance – Female نامزد[110]
لائف اوکے Best Supporting Actor – Female فاتح[111]
بالی ووڈلائف ایوارڈز Most Motivational Celeb on Social Media فاتح[112]
فلم فیئر گلیمر اور اسٹائل ایوارڈز Ciroc Not The Usual Award فاتح[113]
2016 اسپائی ایم ٹی وی ایوارڈز Best Fight (with Melissa McCarthy) نامزد[114]
2017 ہاؤس فل 3 بگ زی اینٹرٹینمنٹ ایوارڈ بہترین اینٹرٹینگ اداکارہ ایوارڈ نامزد[115]

راک اسٹار فلم

ترمیم

آئیفا ایوارڈ جیتا [116] فلم فیئر ایوارڈ میں بہترین نئی اداکارہ ایوارڈ کے لیے نامزد ہوئیں [117] اسٹار ڈسٹ ایوارڈز میں کل کی سپر اسٹار اداکارہ کے لیے نامزد ہوئیں [116] زی سنے ایوارڈ میں بہترین نئی اداکارہ ایوارڈ کے لیے نامزد ہوئیں [117]

مدراس کیفے فلم

ترمیم

2014 میں بگ اسٹار اینٹرٹینمنٹ ایوارڈ میں بہترین اینٹرٹینگ اداکارہ ایوارڈ کے لیے نامزد ہوئیں [118]

میں تیرا ہیرو

ترمیم

2015 میں اسٹار ڈسٹ ایوارڈز میں بہترین معاون اداکارہ پرفارمنس کے لیے نامزد ہوئیں [119] 2015 میں لائف اوکے ناؤ ایوارڈز میں بہترین معاون اداکارہ کا ایوارڈ جیتا [120] 2015 میں بالی ووڈلائف ایوارڈز میں بہترین متحرک اداکارہ کا ایوارڈ جیتا [121] 2015 میں فلم فیئر گلیمر اور اسٹائل ایوارڈز میں سیروک غیر عمومی ایوارڈ جیتا [122]

اسپائی فلم

ترمیم

2016 میں ایم ٹی وی ایوارڈز میں بہترین فائٹ کے لیے نامزدگی [123]

ہاؤس فل 3 فلم

ترمیم

2017 میں بگ زی اینٹرٹینمنٹ ایوارڈ میں بہترین اینٹرٹینگ اداکارہ ایوارڈ کے لیے نامزد ہوئیں [124]

فلم سازی

ترمیم
سال عنوان کردار ملاحظات
2011 راكسٹار ہیر کول تیرھویں ایفا ایوارڈز "سال کی مشہور جوڑی" مع رنبیر کپور
2013 مدراس کیفے قبل از تعمیر

نگارخانہ

ترمیم

حوالہ جات

ترمیم
  1. ^ ا ب http://movies.ndtv.com/photos/happy-birthday-nargis-fakhri-rockstar-37-23090#photo-288069
  2. http://m.timesofindia.com/entertainment/hindi/bollywood/news/nargis-fakhri-acting-is-not-my-life/articleshow/58143130.cms
  3. http://m.timesofindia.com/entertainment/hindi/bollywood/nargis-fakhri-sizzles-in-these-steamy-pics/photostory/58374807.cms
  4. "Ranbir's birthday surprise for Nargis in air"۔ بھارت آج کل۔ 2011-10-21۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2011 
  5. "Nargis Fakhri, Ranbir Says, Nargis Fakhri in Rockstar, Added Advantage, Actress Nargis Fakhri, Rockstar | Mumbai"۔ YReach.com۔ 2011-09-21۔ 31 مارچ 2012 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2011 
  6. "5 Indian celebrities who holds foreign passport"۔ Eastern Eye (بزبان انگریزی)۔ January 15, 2018۔ February 27, 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ February 26, 2018 
  7. "Nargis Fakhri India is as Close as I can get to my Roots"۔ Digital Spy۔ August 7, 2012۔ اخذ شدہ بتاریخ March 25, 2013 
  8. IANS (October 14, 2013)۔ "Varun, Nargis enjoy Bangkok leg of 'Main Tera Hero' – Times of India"۔ Articles.timesofindia.indiatimes.com۔ January 30, 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ January 31, 2014 
  9. ^ ا ب Umer Qazi (March 12, 2014)۔ "Nargis Fakhri to appear in Hollywood film featuring Jason Statham"۔ brecorder.com۔ March 14, 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ April 3, 2014 
  10. ^ ا ب پ "I would love to go to Pakistan on a food journey: Nargis Fakhri"۔ The Express Tribune۔ June 2, 2015 
  11. ""Rock Star" To Decide Career Nargis Fakhri"۔ ukbbcnews.com۔ 2011-10-04۔ 08 فروری 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2011 
  12. "Nargis Fakhri | Pakistani actresses in Bollywood"۔ ہندوستان ٹائمز۔ 2011-11-07۔ 06 جنوری 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2011 
  13. ^ ا ب پ "Nargis Fakhri | Pakistani actresses in Bollywood"۔ ہندوستان ٹائمز۔ November 7, 2011۔ September 25, 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 14, 2011 
  14. ^ ا ب "The Film Street Journal – Where's Nargis Fakhri?(Article)"۔ 19 ستمبر 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 04 جنوری 2013 
  15. "Yahoo Lifestyle, Globetrotter – Nargis Fakhri"۔ 14 اپریل 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 04 جنوری 2013 
  16. ^ ا ب "Nargis Fakhri Rocks at 34"۔ NDTVMovies.com۔ اخذ شدہ بتاریخ December 22, 2015 
  17. ^ ا ب "Nargis Fakhri - | Photos | | India Today |"۔ بھارت آج کل۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 نومبر 2011 
  18. "Nargis Fakhri says Ranbir Kapoor is just a good old buddy : Bollywood: News India Today"۔ بھارت آج کل۔ 2011-09-07۔ 26 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 03 نومبر 2011 
  19. "Ranbir's busy shooting in Delhi"۔ ٹائمز آف انڈیا۔ 30 Dec 2010۔ 20 ستمبر 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 19 مارچ 2011 
  20. "Khiladi 786 is a comedy: Nargis Fakhri"۔ ہندوستان ٹائمز۔ 2012-05-02۔ 09 جنوری 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 اگست 2012 
  21. لوا خطا ماڈیول:Citation/CS1/Utilities میں 38 سطر پر: bad argument #1 to 'ipairs' (table expected, got nil)۔
  22. IANS۔ "Nargis' Hindi improves, not blocking offers"۔ zee news۔ اخذ شدہ بتاریخ April 4, 2014 
  23. ""Rock Star" To Decide Career Nargis Fakhri"۔ ukbbcnews.com۔ October 4, 2011۔ February 8, 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 14, 2011 
  24. لوا خطا ماڈیول:Citation/CS1/Utilities میں 38 سطر پر: bad argument #1 to 'ipairs' (table expected, got nil)۔
  25. Aniruddha Guha (November 11, 2011)۔ "Review: Rockstar brings music back to our films"۔ Daily News and Analysis۔ اخذ شدہ بتاریخ July 12, 2013 
  26. "Nargis Fakri turns into Kashmiri Bride for Rockstar"۔ October 18, 2011۔ اخذ شدہ بتاریخ October 19, 2011 
  27. IANS (October 15, 2011)۔ "Imtiaz Ali Brings Kashmiri Visuals on Screen"۔ NDTV۔ October 17, 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ October 19, 2011 
  28. "Imtiaz wanted Kareena Kapoor for Ranbir's Rockstar"۔ Oneindia.in۔ November 4, 2011۔ October 2, 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 6, 2011 
  29. Raja Sen (November 11, 2011)۔ "A Rockstar worth rooting for"۔ ریڈف ڈاٹ کوم۔ اخذ شدہ بتاریخ November 12, 2011 
  30. Aniruddha Guha (November 11, 2011)۔ "Review: Rockstar is as fulfilling as an effective crescendo"۔ DNA۔ اخذ شدہ بتاریخ November 11, 2011 
  31. Taran Adarsh۔ "Rockstar"۔ Bollywood Hungama۔ اخذ شدہ بتاریخ July 22, 2014 
  32. Raja Sen (November 11, 2011)۔ "A Rockstar worth rooting for"۔ ریڈف ڈاٹ کوم۔ November 13, 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 12, 2011 
  33. Nikhat Kazmi (November 10, 2011)۔ "Rockstar review"۔ The Times of India۔ November 25, 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 12, 2011 
  34. "Top All Time Worldwide Grossers Updated 11/5/2012"۔ Box Office India۔ May 11, 2012۔ November 5, 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ October 13, 2013 
  35. "Rajiv Gandhi lookalike from 'Madras Cafe' creates ripples"۔ The Times of India۔ May 21, 1991۔ اخذ شدہ بتاریخ August 18, 2013 
  36. Anuj Kumar (July 28, 2013)۔ "Raw appeal"۔ The Hindu۔ اخذ شدہ بتاریخ August 18, 2013 
  37. "Finally, Nargis Fakhri speaks in her own voice in Madras Cafe"۔ NDTV۔ July 26, 2013۔ 13 اکتوبر 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ July 27, 2013 
  38. "Critics review: Madras Cafe is a must watch"۔ Hindustan Times۔ August 23, 2013۔ 24 اگست 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ August 25, 2013 
  39. Saibal Chatterjee (August 22, 2013)۔ "Madras Cafe movie review"۔ NDTV Movies۔ 03 مارچ 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ August 18, 2014 
  40. Rajeev Masand۔ "'Madras Cafe' review: The film meshes fact and fiction competently"۔ CNN-IBN۔ 11 مئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ August 18, 2014 
  41. Anuj Kumar (August 25, 2013)۔ "Madras Café does not serve the usual Bollywood brew"۔ The Hindu۔ اخذ شدہ بتاریخ August 25, 2013 
  42. Baradwaj Rangan (October 4, 2013)۔ "A truce between fiction and fact"۔ The Hindu۔ اخذ شدہ بتاریخ November 27, 2013 
  43. "What's cooking Nargis and Shahid?" 
  44. "Ileana D'Cruz and nargis Fakhri snapped during Main Tera Hero film shooting | Main Tera Hero | Picture 366802 – Oneindia Gallery – Oneindia Gallery"۔ Gallery.oneindia.in۔ February 2, 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ January 31, 2014 
  45. IANS (October 14, 2013)۔ "Varun, Nargis enjoy Bangkok leg of 'Main Tera Hero' – Times of India"۔ Articles.timesofindia.indiatimes.com۔ January 30, 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ January 31, 2014 
  46. "Box Office: Bhoothnath Returns gets a decent opening"۔ Rediff.com۔ April 14, 2014۔ اخذ شدہ بتاریخ November 17, 2014 
  47. Ankita Mehta (April 4, 2014)۔ "'Main Tera Hero' Reviews Roundup: Mindless but Entertaining"۔ International Business Times۔ اخذ شدہ بتاریخ November 17, 2014 
  48. Main Tera Hero Movie Review | Varun Dhawan, Ileana DCruz, Nargis Fakhri. Koimoi.com (April 4, 2014). Retrieved on January 17, 2016.
  49. لوا خطا ماڈیول:Citation/CS1/Utilities میں 38 سطر پر: bad argument #1 to 'ipairs' (table expected, got nil)۔
  50. Taran Adarsh (April 4, 2014)۔ "Main Tera Hero"۔ Bollywood Hungama۔ اخذ شدہ بتاریخ August 18, 2014 
  51. Subhash K. Jha (July 25, 2014)۔ "Subhash K Jha speaks about Kick"۔ Bollywood Hungama۔ اخذ شدہ بتاریخ July 30, 2014 
  52. "Film Review: Kick is non-stop entertainment and Salman Khan at his best"۔ Daily News & Analysis۔ July 25, 2014۔ اخذ شدہ بتاریخ July 30, 2014 
  53. Subhash Jha (December 10, 2009)۔ "For the first time, Deepika Padukone will star opposite Salman Khan in Kick directed by A R Murugadoss"۔ epaper.timesofindia.com۔ Ahmedabad Mirror۔ July 14, 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ June 10, 2014 
  54. "'Spy' - Movie Review"۔ اخذ شدہ بتاریخ June 19, 2015 
  55. "Spy"۔ Rotten Tomatoes۔ اخذ شدہ بتاریخ 02 ستمبر 2015 
  56. "'Spy' – Movie Review"۔ اخذ شدہ بتاریخ June 19, 2015 
  57. Peter Travers۔ "Spy Review"۔ 12 دسمبر 2017 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ February 9, 2016 
  58. "2016 MTV Movie Award Winners: See The Full List"۔ MTV (MTV News)۔ 20 مئی 2016 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ April 11, 2016 
  59. Anthony D'Alessandro (June 5, 2015)۔ "'Insidious: Chapter 3′, 'Spy' Get The Busy Frame Started With Previews – Box Office"۔ Deadline Hollywood۔ (Penske Media Corporation)۔ اخذ شدہ بتاریخ June 5, 2015 
  60. Keith Simanton (June 7, 2015)۔ "Weekend Report – 'Spy' Eyes $30M Weekend"۔ باکس آفس موجو۔ (ایمیزون (کمپنی))۔ اخذ شدہ بتاریخ June 9, 2015 
  61. "Nargis Fakhri, Rajkummar Rao Are Co-Stars of This New Hollywood Film"۔ NDTV۔ اخذ شدہ بتاریخ August 29, 2016 
  62. "5 Weddings Movie Review"۔ Times Of India۔ اخذ شدہ بتاریخ October 27, 2018 
  63. "Fakhri-to-shake-a-leg-in-Prashanths-comeback-film/articleshow/35633149.cms "Nargis Fakhri to shake a leg in Prashanth's comeback film"۔ The Times of India۔ اخذ شدہ بتاریخ August 2, 2016 
  64. "Nargis Fakhri shoots item song for 'Saahasam'"۔ Sify۔ 13 اگست 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 04 دسمبر 2020 
  65. "Actor Prashanth convinced Nargis Fakhri to make south debut"۔ Deccan Chronicle 
  66. "Remya Nambeesan Sings for Saahasam"۔ Silverscreen.in 
  67. Sharanya CR (August 1, 2014)۔ "Nargis Fakhri doesn't mind to debut with item song"۔ The Times of India۔ اخذ شدہ بتاریخ November 13, 2014 
  68. "Ekta Kapoor plans to make film on Azharuddin's life"۔ دی ٹائمز آف انڈیا۔ June 15, 2013۔ اخذ شدہ بتاریخ May 25, 2015 
  69. لوا خطا ماڈیول:Citation/CS1/Utilities میں 38 سطر پر: bad argument #1 to 'ipairs' (table expected, got nil)۔
  70. Mayur Kamat (May 22, 2015)۔ "'Azhar' is about my God, my marriage & match-fixing: Azharuddin on biopic"۔ میڈ ڈے۔ اخذ شدہ بتاریخ May 25, 2015 
  71. "Is reel close to real? Ex-CBI official to keep an eye on Azhar the movie"۔ Hindustan Times۔ اخذ شدہ بتاریخ May 11, 2016 
  72. Rajani Chandel (April 8, 2016)۔ "'Azhar' song 'Bol do na zara' – Emraan Hashmi and Nagris Fakhri's sizzling chemistry leaves us breathless!"۔ The Times of India۔ اخذ شدہ بتاریخ April 11, 2016 
  73. Its a box office disaster "Emraan Hashmi turns Azharuddin on 'Azhar' poster"
  74. "Azhar – Movie – Box Office India"۔ boxofficeindia.com۔ اخذ شدہ بتاریخ August 15, 2016 
  75. "Housefull 3 trailer: Expect a laugh riot from this Akshay Kumar starrer, watch"۔ The Indian Express۔ April 24, 2016 
  76. "Housefull 3 song Pyaar Ki: Akshay, Jacqueline, Nargis, Abhishek, Riteish and Lisa's love track is absolutely fabulous!"۔ Bollywood Life۔ April 25, 2016۔ اخذ شدہ بتاریخ May 2, 2016 
  77. "'Housefull 3' promises to be more fun". The Times of India (April 22, 2016)
  78. Anna MM Vetticad (June 3, 2016)۔ "'Housefull 3' review: A lazily written, flat ensemble film – Firstpost"۔ Firstpost۔ اخذ شدہ بتاریخ August 11, 2016 
  79. "Housefull 3 box office collections: Akshay Kumar's movie grosses Rs. 100 crore worldwide in mere three days"۔ The Indian Express۔ June 4, 2016۔ اخذ شدہ بتاریخ June 6, 2016 
  80. "Special Features: Box Office: Worldwide Collections and Day wise breakup of Housefull 3 – Box Office, Bollywood Hungama"۔ Bollywood Hungama۔ August 11, 2016 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ August 11, 2016 
  81. "Nargis Fakhri to do cameo in 'Dishoom'"۔ The Times of India 
  82. "Nargis Fakhri to do cameo in John Abraham's 'Dishoom'"۔ The Indian Express۔ October 25, 2015 
  83. "Riteish Deshmukh and Nargis Fakhri's 'Banjo' goes on floors"۔ دکن کرانیکل۔ January 29, 2016۔ اخذ شدہ بتاریخ January 30, 2016 
  84. Ruchi Kaushal (August 9, 2016)۔ "'Banjo' Trailer: Riteish Deshmukh enthrals and Nargis Fakhri adds oomph"۔ The Times of India۔ اخذ شدہ بتاریخ August 16, 2016 
  85. "Riteish, Nargis start shooting 'Banjo'"۔ Business Standard۔ January 29, 2016۔ اخذ شدہ بتاریخ January 30, 2016 
  86. Parismita Goswami (September 23, 2016)۔ "Banjo review round-up: Here is what critics have to say about Riteish Deshmukh film"۔ International Business Times, India Edition 
  87. "Box Office: Worldwide Collections and Day wise breakup of Banjo"۔ بالی وڈ ہنگامہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 3, 2016 
  88. "Banjo Movie Review {3.5/5}: Critic Review of Banjo by Times of India" – timesofindia.indiatimes.com سے 
  89. "Banjo Review"۔ September 23, 2016 
  90. "Banjo Movie Review: Riteish Deshmukh's Film is a Pale Shadow of Rock On - NDTV Movies"۔ NDTVMovies.com [مردہ ربط]
  91. Kofi Annan (April 4, 2018)۔ "Kofi Annan on Facing The Future"۔ New York New York Times۔ New York۔ اخذ شدہ بتاریخ 07 اپریل 2018 
  92. لوا خطا ماڈیول:Citation/CS1/Utilities میں 38 سطر پر: bad argument #1 to 'ipairs' (table expected, got nil)۔
  93. Bollywood Hungama (February 16, 2018)۔ "REVEALED: Nargis Fakhri gears up for a horror film next – Bollywood Hungama" 
  94. "After Anushka Sharma, Nargis Fakhri To Star in a Horror Flick!"۔ February 16, 2018 
  95. "Nargis Fakhri to play an Afghan girl in Sanjay Dutt starrer Torbaaz"۔ December 11, 2017 
  96. Bollywood Hungama (December 11, 2017)۔ "Nargis Fakhri bags Sanjay Dutt-starrer Torbaaz – Bollywood Hungama" 
  97. Dazzling News (November 30, 2017)۔ "Nargis Fakhri And Uday Chopra Are Getting Married, Say Rumors. Are They True?"۔ NDTV 
  98. Dazzling News (November 17, 2017)۔ "How Uday Chopra broke up with Nargis Fakhri and their relationship timeline!"۔ 09 اگست 2021 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 04 دسمبر 2020 
  99. India TV News (June 6, 2018)۔ "Moving over Uday Chopra, Nargis Fakhri confirms relationship with Matt Alonzo!" 
  100. "Nargis Fakhri confirms relationship with beau Matt Alonzo"۔ Mumbai Mirror۔ May 1, 2018 
  101. ^ ا ب "Nargis Fakhri turns official singer with this Punjabi song!"۔ June 19, 2017 
  102. "Nargis Fakhri makes a sizzling singing debut with Punjabi singer Parichay in song 'Habitaan Vigaad Di', watch video"۔ June 26, 2017 
  103. ^ ا ب Indiablooms۔ "Snoop Dogg returns to India with Dr Zeus and Nargis Fakhri – Indiablooms – First Portal on Digital News Management" 
  104. "Asian Music Chart Top 40 | Official Charts Company"۔ www.officialcharts.com 
  105. https://www.youtube.com/watch?v=2xRG42cgyAQ
  106. https://www.youtube.com/watch?v=ww2lWzwbnIg
  107. ^ ا ب "Nargis Fakhri | Latest Celebrity Awards"۔ Bollywood Hungama۔ اخذ شدہ بتاریخ November 13, 2014 
  108. ^ ا ب Ankush Bahuguna۔ "Nargis Fakhri"۔ MensXP.com۔ اخذ شدہ بتاریخ November 13, 2014 
  109. "Nominations for 4th Big STAR Entertainment Awards"۔ Bollywood Hungama۔ December 12, 2013۔ اخذ شدہ بتاریخ November 13, 2014 
  110. "Nominations for Stardust Awards 2014"۔ Bollywood Hungama۔ December 8, 2014۔ اخذ شدہ بتاریخ December 8, 2014 
  111. "Life OK NOW Awards 31st May 2014 – Winners and Event's Snapshot – TellyReviews"۔ TellyReviews 
  112. moumita bhattacharjee۔ "Nargis Fakhri wins Most Motivational Celeb on Social Media: BollywoodLife Awards 2015"۔ February 17, 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ December 11, 2015 
  113. Ankita Mehta۔ "Filmfare Glamour and Style Awards 2015 Winners List: Aishwarya-Abhishek, Shah Rukh-Kajol, Sidharth and Kareena Sweep Honours [PHOTOS]" 
  114. Crystal Bell (March 8, 2016)۔ "Here Are Your 2016 MTV Movie Awards Nominees"۔ MTV News۔ 07 جون 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ April 11, 2016 
  115. Amrita Tanna (July 21, 2017)۔ "Big ZEE Entertainment Awards: Nominations list" 
  116. ^ ا ب "Nargis Fakhri | Latest Celebrity Awards"۔ Bollywood Hungama۔ اخذ شدہ بتاریخ November 13, 2014 
  117. ^ ا ب Ankush Bahuguna۔ "Nargis Fakhri"۔ MensXP.com۔ اخذ شدہ بتاریخ November 13, 2014 
  118. "Nominations for 4th Big STAR Entertainment Awards"۔ Bollywood Hungama۔ December 12, 2013۔ اخذ شدہ بتاریخ November 13, 2014 
  119. "Nominations for Stardust Awards 2014"۔ Bollywood Hungama۔ December 8, 2014۔ اخذ شدہ بتاریخ December 8, 2014 
  120. "Life OK NOW Awards 31st May 2014 – Winners and Event's Snapshot – TellyReviews"۔ TellyReviews 
  121. moumita bhattacharjee۔ "Nargis Fakhri wins Most Motivational Celeb on Social Media: BollywoodLife Awards 2015"۔ February 17, 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ December 11, 2015 
  122. Ankita Mehta۔ "Filmfare Glamour and Style Awards 2015 Winners List: Aishwarya-Abhishek, Shah Rukh-Kajol, Sidharth and Kareena Sweep Honours [PHOTOS]" 
  123. Crystal Bell (March 8, 2016)۔ "Here Are Your 2016 MTV Movie Awards Nominees"۔ MTV News۔ 07 جون 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ April 11, 2016 
  124. Amrita Tanna (July 21, 2017)۔ "Big ZEE Entertainment Awards: Nominations list" 

بیرونی روابط

ترمیم