گماخ ( عبرانی ، جمع، גמחים، گماخیم ،گیمیلوت کھسادیم یعنی "اعمال مہربانی" کا مخفف ہے- یہ ایک یہودی مفت قرضہ کا مد ہے جس کی تورات کا حکم قرض دینا اور ہم مذہب سے سود لینے کی ممانعت تصدیق کرتا ہے- بینک کے قرض کے برعکس ، گماخی قرضہ ، قرض حسنہ یعنی بغیر سود اور اکثر ادائیگی کے آسان شرائط پر دیا جاتا ہے-

گماخ لوگ یہودی برادری میں کام کرتے ہیں۔ روایتی گماخی نظریہ— پیسے قرض دینے کی مد — کسی بھی ضرورت کے لیے مختصر یا طویل مدتی بنیاد پر قرض فراہم کرتا ہے، بشمول ہنگامی قرض، طبی اخراجات، شادی کے اخراجات، وغیرہ۔ تاہم، بہت سے افراد نے گھریلو اشیاء، لباس، کتابیں، سامان، خدمات اور مشورہ تک اس گماخ کا تصور وسیع کیا ہے۔ گماخ اجتماعی بنیاد پر (جیسے برادری ، قبیلہ ، طبقہ وغیرہ کے کھاتے یعنی فنڈ کے خزانچیوں کی جانب سے) اور داخلی (جیسے کاروباری اداروں، تنظیموں، اسکول اور خاندانوں کی جانب سے) چلائے جاتے ہیں- اپنا گماخ قائم کرنے یا کسی کے گماخ میں حصہ ڈالنے کی مثال ربی اسرائیل میئر کاگن (چاؤٹز کھائیم) کی جانب سے مقبول کیا گیا ، جس نے اس پر عمل کرنے کے روحانی فوائد پر بہت سے ہلاخائی سوالات کے جوابات اپنی تاریخی کتاب، احاؤط چیسد ("شفیق مہربانی ") میں لکھے۔

بائبلی ماخذترميم

پیسے کے قرض دہندہ گماخ دراصل بائبلی حکم بجا لاتے ہیں یعنی "تم میرے لوگوں کو پیسہ کا قرض دوگے" ( کتاب خروج 22:24) اور بائبل کے حکم امتناعی کے مطابق، "آپ اسے سود کے لیے اپنا پیسے نہیں دیں گے اور نہ ہی آپ بڑھانے کے لیے اپنا کھانا اس کو دے سکتے ہیں" ( کتاب احبار25:37)۔

ایسے گماخ جو پیسے کے علاوہ دیگرقرضہ فراہم کرتے ہیں، جیسے لباس، کتابیں اور سامان وغیرہ، بائبل کے عام رحم کر نے کے حکم میں آتے ہیں، "اپنے پڑوسی سے ایسے ہی محبت کرو جیسے خود سے کرتے ہو" (کتاب احبار 18: 19)۔[1]

جدید تاریخترميم

انگریزی بولنے والے ممالک میں گماخ یہودی یا عبرانی مفت قرضی انجمن کے نام سے جانی جاتی ہے، یہ مشرقی یورپ سے آئے یہودی تارکین وطن کی قائم کردہ اولین اداروں میں سے تھا ۔ زیادہ تر گماخیم 1880ء اور 1914ء کے درمیان یہود کے علاقوں میں قائم ہوئے ، اگرچہ بعض 1940ء کے آخر میں قائم کئےگئے۔[2][3] امریکا کی سب سے قدیم گماخ نیو یارک کی عبرانی مفتقرضی انجمن ، 11 لوگوں کی بچت کی رقوم سے 1892ء میں قائم کی گئی ۔ انہوں نے ابتدائی طور پر 95$ جمع کیے، جسے انہوں نے 5$ اور 10$ کے اضافی سود پرقرض دیا۔ یہ انجمن اب بھی موجود ہے۔

20 صدی تک امریکا میں تقریباً 500 گماخ تھے۔ ان کی مقبولیت کا ایک سبب یہ تھا کہ بینککم آمدنی والے یہود کو قرض نہیں دیتے تھے۔ لیکن تنخواہ کی شرح 99 فیصد سے زائد ہے،لیکن بعد گماخ کے کاروبار پھیلتے بینکوں نے یہ احساس کیا کہ یہودی قرضداروں سے اچھا کاروبار ہوسکتا ہے اور 1940ء کے دہائی میں انہیں قرض دینے لگے۔[4]

2008ء -2009ء کے عالمی مالیاتی بحران میں گماخیم نے کچھ شہر میں پھر سے زور پکڑا۔ ملواکی، جہاں صدی کےاختتام میں گماخ تھا، پھر سے ایک نیا مفت قرضی انجمن بنانے کے عمل میں ہے۔[4]

قرضوں کی اقسامترميم

گماخ مختصر یا طویل مدتی بنیاد پر رقم قرض دینے کے لیے زیادہ مشہور ہیں۔

قرض کا حجم قرض دہندہ کے وسائل پر منحصر ہے۔ خانگی گماخ 100$ یا زیادہ قرض دینے کی پیشکش کر سکتا ہے، جبکہ ایک شادی والا گماخ کئی ہزار ڈالر کا قرض دےسکتا ہے۔ عام طور پر ، گماخ کے آسان قابل ادائیگی کی شرائط بھی پیش کرتے ہیں، جو مقروض کو طویل عرصے تک قرض ادا کرنے کے قابل بناتے ہیں، "رحم کرنے کے حکم میں " ایک یروشلمی خاندان $ 750 تک کا قرضہ 150$ ماہانہ کی اقساط پر پیش کرتا ہے ۔ یونہی ایک شادی گماخ $ 3000 کا قرضہ $ 100 ماہانہ کی ادائیگی پر پیش کرتا ہے۔ مفت قرضی اسرائیلی مجلس (آئی ایف ایل اے) دنیا میں قرض حسنہ دینے والی سب سے بڑی تنظیم ہے، یہ اسرائیلی لوگوں کو چھوٹے کاروبار (www.freeloan.org.il) کے لیے 20،000 سے لیکر 9000 شیقل تمام تر اسرائیل میں کہیں بھی قرضہ فراہم کرتی ہے۔

اگرچہ غریب اور مقروض افراد اکثر گماخ کے صارفین ہوتے ہیں، لیکن یہ قرض کے لیے شرط نہیں۔ گماخ طلبہ، ملازمین یا کسی بھی فرد کی قرض کی ضرورت میں پورا کرتے ہیں۔ مالی گماخ دیگر کے علاوہ یشوا ، کنیسہ اور کام کی جگہوں کا ایک عام حصہ ہے۔ گماخ کا تصور گھریلو اشیاء، لباس، کتابیں، سامان، خدمات اور مشاورت کے مفت قرض تک پھیل گیا ۔ ذیل میں 2002ء کے یروشلیم ٹیلی فون ابجدی فہرست میں پائے گئے گماخ کی خدمات کا ایک نمونہ ہے۔

ماتم کے لیے کرسیاں اور دیگر ضروریات؛ سمچہ(عید) کے لیے کھانا ؛ ضرورت مند کے لیے کھانا؛ ہسپتال کے زائرین کے لیے کھانا؛ سامان منتقلی؛ استعمال کردہ کپڑے؛ انگریزی اور امریکی ڈاک ٹکٹ؛ بحیرہ مردار کی مٹی؛ سلائی کے نمونے؛ مہمانوں کی میزبانی؛ ہسپتالوں کے قریب مہمانوں کی میزبانی، ضعیفوں کی نقل و حمل؛ شادی کی ضروریات؛ شادی کے کپڑے؛ صحت کی خوراک اور وٹامن؛ تالیت ؛ ٹیلی فون کارڈ؛ موبائل فونز؛ نوٹری پبلک؛ چولہے؛آلات ؛ ضیافت کے برتن؛ میزیں اور کرسیاں؛ کھیل پلنگڑی؛ پنکھے؛ لاؤڈسپیکرز؛ بچوں کا سامان؛ سوٹ کیس؛ یہودی آیات کے قتبے؛ گدے؛ تقسیم ؛ کمپیوٹر؛ جلائے گئے مردوں کی راکھ کے مرتبان؛ لپیٹنے کے قابل بستر؛ مائکروویو؛ بال کٹوانے کا سامان؛سانس کی دوالینے کا آلہ شمامہ(بھپالہ )؛ سلائی مشین؛ کیمرے؛ کمبل؛(شعاع انداز ) پروجیکٹر؛ فریج اور فریزر؛ کھلونے؛ شیشے؛ موم بتیاں؛ تعویز ؛ سیڑھی؛ برتن ؛ ہاتھ سے لکھی تورات ؛ کتابیں؛ ؛ فلم؛ سبت کے لیے گرم پلیٹیں؛ سبت کی موم بتیاں؛ فرنیچر؛ ویکیوم کلینر؛ کام کے اوزار وغیرہ[5]

نیوؤ یعقوب کے گماخی ٹیلی فون فہرست میں پلمبر اور ایک گٹارسٹ شامل ہیں جو ٹیلی فون پر مفت مشورہ پیش کرتے ہیں۔ ساوتھ فیلڈ، ایم آئی (ڈیٹرویٹ) میں بچوں کی اشیاء جیسے اسٹولرز، اعلی کرسیاں اور کھلونے کے لیے ایک گماخ ہے[6] ۔ شکاگو وہ پہلا شہر تھا جہاں یہودی تعلیم کے اساتذہ کے تعلیمی مواد اور وسائل کے لیے گماخ قائم کیا گیا۔[7]

ادائیگیترميم

قرض کی ادائیگی کو یقینی بنانے کے لیے، گماخ عام طور پر قرض لینے والے سے دو ضمانت دہندگان کی فراہمی کا سوال کرتے ہیں تاکہ وہ معاہدہ قرض کے دستاویز پر بطور دستخط کنندہ شریک ہوں ۔ ( ہلاخاہ میں یہ ارئیوت کے نام سے جانا جاتا ہے ۔ ) اگر مقروض وقت پر ادئیگی نہ کرسکیں تو، گماخ کے مالک ان ضمانت دہندگان سےتقاضا کرسکتے ہیں، یہ دعوی شرعی عدالت (یہودی ربیائی عدالت) میں اٹھایا جائے گا۔

لباس، سامان یا دوسرے چیزوں کو بطور قرض لینے والے کے متعلق قوانین بھی ہیں۔ خراب چیزیں کو تبدیل یا واپس کر دیا جاتا ہے۔ اگرچہ یہودی کے لیے ضروری ہے کہ وہ ضرورتمندوں کو قرض دے، وہ کسی ایسے شخص کو قرض دینے کا پابند نہیں ہے جو مسلسل گمشدہ چیزوں سے کھو دے یا نقصان پہنچاتا ہو۔

مزید دیکھیےترميم

  • 613 مٹویوٹ
  • نیو یارک کے عبرانی مفت لوان سوسائٹی
  • عبرانی مفت لوان سوسائٹی آف گرٹریٹر فلاڈیلفیا
  • اسرائیلی مفت قرض ایسوسی ایشن
  • عبرانی مفت قرضوں کی بین الاقوامی تنظیم
  • یڈ سارہ
  • صکوک

حوالہ جاتترميم

  1. "The Halachos Of Lending Money". Torah.org. 2007. 08 جون 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 14 اپریل 2011. 
  2. Holmes، Kristen E. (12 March 2009). "Interest-free, steeped in tradition". The Philadelphia Inquirer. اخذ شدہ بتاریخ 14 اپریل 2011. 
  3. "Jewish Free Loan". Jewish Free Loan. 2011. اخذ شدہ بتاریخ 14 اپریل 2011. 
  4. ^ ا ب Waldman، Amy (22 June 2009). "Free Loan Association plans to open in Milwaukee". Wisconsin Jewish Chronicle. 07 فروری 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 14 اپریل 2011. 
  5. "The Halachos Of Lending Money". Torah.org. 2007. 08 جون 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 14 اپریل 2011. 
  6. "You searched for gemachim • Detroit Jewish Directory - Southfield, Oak Park, West Bloomfield". Detroit Jewish Directory - Southfield, Oak Park, West Bloomfield (بزبان انگریزی). اخذ شدہ بتاریخ 02 مئی 2017. 

بیرونی روابطترميم