مولوی لطف علی سرائیکی کے بہت بڑے شاعر ہیں

ولادتترميم

مولوی لطف علی بہادر پور(چار میل شمال) ملتان میں 1715ء میں پیدا ہوئےان کے والد کا نام غیاث الدین ہے۔اور ذات نچڑہ ہے تاریخ پیدائش میں کجھ اختلاف ہے

تعلیمترميم

مولوی لطف علی نے عربی فارسی کی تعلیم ملتان میں حاصل کی کچھ عرصہ نواب بہاول خان ثانی کے دربار سے منسلک رہے اس وجہ سے ان کے نام کے ساتھ ملتانی اور بہاولپوری لگتا ہے

تصنیفاتترميم

  • قدسی نامہ
  • قصیدہ مخدوم جہانیاں، جہاں گشت،
  • دوہڑے
  • سیفل نامہ مشہور ہیں

وفاتترميم

مولوی لطف علی 1796ءمیں فوت ہوئے ان کا مزار ضلع رحیم یار خان میں ہے۔[1]

حوالہ جاتترميم

  1. سرائیکی ادب کی مختصر تاریخ، ڈاکٹر سجاد حیدر پرویز، سرائیکی پبلیکیشنز مظفر گڑھ