شام کی فتح کے بعد سلیم نے مصر کی طرف کوچ کی تیاری کی-ادھر مصری فوجین بھی طومان بے کی سرکردگی میں قاھرہ سے تھوڑے فاصلہ پر ردانیہ میں خیمــہ زن تھیں وہیں 22 جنوری 1517ء کو مقابلہ ہوا-اس معرکہ میں بھی توپخانوں کی وجہ س میدان ترکو کے نام رہا۔ اس طرح قاھرہ بھی ترکو کے ہاتھوں میں آگیا۔

Midori Extension.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کر کے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔