غنائی شاعری کو شاعری میں ایک باقاعدہ صنف کا درجہ حاصل ہے جس میں شخصی جذبات یا کیفیات کو واحد متکلم میں بیان کیا جاتا ہے۔[1] یہ گانے کے بول تو نہیں ہوتے مگر اسی طرز پر ہوتے ہیں۔ ادبی نظریے میں اس کی اہمیت ارسطو سے شروع ہوئی ہے جس نے شاعری کو تین اقسام میں بانٹا تھا: غنائی، ڈرامائی اور رزمیہ۔

حوالہ جاتترميم

  1. Scott,Clive, Vers libre : the emergence of free verse in France, 1886–1914 Clarendon Press, Oxford آئی ایس بی این 9780198151593