انسائیکلوپیڈیا سندھیانا

انسائیکلوپیڈیا سندھیانا (سندھی: انسائيڪلوپيڊيا سنڌيانا)، جسے سندھی زبان کے با اختیار ادارے نے شائع کیا ہے، ایک عام معلوماتی دائرۃ المعارف ہے جو خصوصیت سے سندھ سے متعلق وسیع معلومات فراہم کرتا ہے۔[1] کل ملا کر پندرہ جلدوں کو شائع کرنے کا منصوبہ ہے۔[2] دس جلدیں تاحال شائع ہو چکی ہیں۔[3] متن کا 80 فی صد حصہ سندھ سے تعلق رکھتا ہے،[2] جبکہ باقی حصہ دنیا اور کائنات پر مشتمل اہم موضوعات کا احاطہ کرتا ہے۔[1]

انسائیکلوپیڈیا سندھیانا
سندھی لینگویج اتھارٹی مونوگرام.jpg
ملکپاکستان
زبانسندھی
صنفدائرۃ المعارف
ناشرسندھی زبان کا با اختیار ادارہ
صفحات8 جلدیں

تاریخترميم

انسائیکلوپیڈیا سندھیانا سندھی زبان کے با اختیار ادارے کا منصوبہ ہے۔ یہ منصوبہ ڈاکٹر غلام علی الانا کی صدارت میں شروع ہوا تھا مگر نامعلوم وجوہ کی بنا پر مسدود ہو گیا۔ ڈاکٹر فہمیدہ حسین کی صدارت میں اس منصوبے کا احیاء جولائی 2008ء میں ہوا۔ بدر ابڑو اس منصوبے کے پہلے پروجیکٹ ڈائریکٹر بنے تھے۔ بعد ازاں یہ عہدہ محمد عثمان میمن کو دیا گیا۔[1][4]

جلدیںترميم

اب تک دس جلدیں شائع ہوئی ہیں۔ پہلی جلد 2009ء میں شائع ہوئی، جب کہ تازہ تریں دسویں جلد کا اضافہ 2017ء میں ہوا۔[5] مجموعی طور پر یہ سندھی حروف تہجی کے ابتدائی 28 حروف پر مشتمل ہیں۔ (سندھی: ا-س)

جلد اولترميم

اس میں 3500 اندراجات ہیں اور یہ 650 صفحات میں پھیلی ہوئی ہے۔ اس جلد کو 2009ء میں شائع کیا گیا اور اس میں سندھی حروف تہجی کے پہلے تین حروف کا احاطہ کیا گیا ہے (سندھی: ا، ب، ٻ[4]

جلد دومترميم

دوسری جلد 728 صفحات میں پھیلی ہوئی ہے اور اس میں 2571 اندراجات ہیں۔ اس جلد میں سندھی زبان کے چھ حروف تہجی کا احاطہ کیا گیا ہے (سندھی: ڀ،ت،ٿ،ٽ،ٺ،ث)۔ اس جلد کو 2010ء میں شائع کیا گیا تھا۔[4]

جلد سومترميم

تیسری جلد میں 2533 اندراجات ہیں اور یہ 700 صفحات میں پھیلی ہوئی ہے۔ اس جلد کو 2011ء میں شائع کیا گیا تھا۔ اس جلد میں سندھی زبان کے دو حروف تہجی کا احاطہ کیا گیا ہے (سندھی: پ، ج[4]

جلد چہارمترميم

چوتھی جلد 608 صفحات میں پھیلی ہوئی ہے۔ اس میں 2033 اندراجات شامل ہیں۔ اس جلد کو 2012ء میں شائع کیا گیا تھا۔ اس جلد میں سندھی زبان کے سات حروف تہجی کا احاطہ کیا گیا ہے (سندھی: ڄ، جهه، ڃ، چ، ڇ، ح، خ[4]

جلد پنجمترميم

پانچویں جلد کی اشاعت 2012ء میں ہوئی۔ اس میں سندھی زبان کے چھ حروف تہجی کا احاطہ کیا گیا ہے (سندھی: د، ڌ، ڏ، ڊ، ڍ، ذ)۔ اس میں 1930 اندراجات شامل ہیں۔[4]

جلد ششمترميم

اس جلد کی اشاعت 2013ء میں ہوئی۔ اس میں سندھی زبان کے تین حروف تہجی کا احاطہ کیا گیا ہے (سندھی: ر، ڙ، ز[5]

جلد ہفتم و ہشتمترميم

یہ دونوں مجموعی طور پر سندھی زبان کے ایک ہی حرف (سندھی: س) کا احاطہ کرتے ہیں۔ کل ملا کر 2438 اندراجات کا ان دونوں میں احاطہ کیا گیا تھا۔ ان جلدوں کی اشاعت 2013ء میں ہوئی۔[5]

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

  1. ^ ا ب پ "Dawn News". www.dawn.com/. Dawn News. 24 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 20 مئی 2017.  الوسيط |title= و |عنوان= تكرر أكثر من مرة (معاونت)
  2. ^ ا ب "Encyclopedia Sindhiana". encyclopediasindhiana.org/. encyclopediasindhiana. 24 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ July 30, 2014.  الوسيط |title= و |عنوان= تكرر أكثر من مرة (معاونت)
  3. "The Nation". nation.com.pk/. The Nation. 24 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 20 مئی 2017.  الوسيط |title= و |عنوان= تكرر أكثر من مرة (معاونت)
  4. ^ ا ب پ ت ٹ ث "Encyclopedia Sinhiana Blog". encyclopediasindhiana.org/. Encyclopedia Sindhiana. 24 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ July 30, 2014.  الوسيط |title= و |عنوان= تكرر أكثر من مرة (معاونت)
  5. ^ ا ب پ "EncyclopediaSindhiana". sindhila.org. Sindhi Language Authority. 24 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ July 30, 2014.  الوسيط |title= و |عنوان= تكرر أكثر من مرة (معاونت)

بیرونی روابطترميم