حنظلہ بن اسعد شبامی

سانحہ کربلا کے مقتول حسینی سپاہی

حَنظَلہ بن اَسعَد شبامی واقعہ کربلا کے شہیدوں میں سے ہیں اور 10 محرم 61ھ کو امام عالی مقام کی طرف سے یزیدی فوج کے ساتھ لڑے۔ آپ کا نام زیارت ناحیہ مقدسہ میں آتا ہے۔

حنظلہ بن اسعد شبامی
معلومات شخصیت
عملی زندگی
پیشہ فوجی  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
لڑائیاں اور جنگیں سانحۂ کربلا  ویکی ڈیٹا پر (P607) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

حنظله ان میں سے ایک تھے جن کو حسین بن علی نے دشمن فوج کے سالار ابن سعد کے پاس بات چیت کے لیے بھیجا تھا .[1] حنظله کوفہ کے رہنے والے اور قبیلہ بنو ہمدان کی شاخ شبام کے فرد تھے۔ حنظله کوفہ کے شیعوں میں سے تھے اور معلم قرآن تھے۔ حسین بن علی کی کربلا آمد پر آپ امام کے ساتھ کربلا میں آن ملے۔ عاشورہ دے روز آپ کربلا کے میدان میں امام حسین کی تیروں اور نیزوں تے محافظت کرتے رہے اور گاہے گاہے کوفیوں کو انتباہ کرتے ۔

ماخذترميم

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

سانچہ:شیعہ اماموں کے شاگرد