رقہ (عربی میں الرقۃ ۔ انگریزی میں Ar Raqqah یا Rakka ) یہ شمالیشام کا ایک ڈویژنل ہیڈکوارٹر ہے جو حلب سے 160 کلومیٹر دور دریائے فرات پر آباد ہے۔ اسے ہارون الرشید نے گرمائی دار الحکومت بنایا جس کی وجہ سے اسے مدینۃ الرشید کہا جاتا ہے تاتاریوں نے اسے تیرہویں صدی میں برباد کر دیا تھا[1]

رقہ شہر کے قریب ہی ایک مسجد ہے جسے جامع رصافہ کے نام سے جانا جاتا ہے۔ یہ اصل میں ایک عیسائی راہب کا عبادت خانہ تھا۔ اب صرف کھنڈرات رہ گئے ہیں۔ یہ وہی جگہ ہے جہاں امام مہدی اپنے لشکر کے ساتھ پہنچے گے اور فجر کی نماز کے وقت حضرت عیسٰی علیہ السلام اس کے مشرقی مینار پر نمودار ہونگے۔ یہیں سے اسلامی لشکر امام مہدی دجال کے لشکر کے تعاقب میں جائینگے اور "لد" شھر کے دروازے پر عیسٰی علیہ السلام دجال کو قتل کردینگے۔ امام مہدی علیہ السلام قرب قیامت میں مدینہ کے ہاشمی خاندان میں پیدا ہونگے اور امام حسن رضی اللہ تعالٰی عنہ کی اولاد سے ہونگے۔

نگار خانہترميم

حوالہ جاتترميم

  1. اٹلس فتوحات اسلامیہ ،احمد عادل کمال ،صفحہ 132،دارالسلام الریاض