قدح ایسا برتن جس سے دو آدمی سیر ہو جائیں اس کی جمع اقداح ہے

فقہی اصطلاحترميم

فقہی اصطلاح میں قدح صاع کا جزء ہے اور دو قدح ایک صاع کے برابر ہوتے ہیں اور پانچ مد کے مساوی ہے

قدح حدیث میںترميم

ام المومنین عائشہ صدیقہ سے روایت ہے کہ انہوں نے فرمایا میں اور نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) دونوں ایک ہی برتن (قدح) سے، جس کو فرق کہا جاتا تھا، غسل کرتے تھے۔[1]

شرعی احکامترميم

قدح کے وہی احکام ہیں جو صاع کے ہیں بعض فقہا اس کا تذکرہ نصابوں کے تعیین میں کرتے ہیں جیسے شربینی کھیتی کے نصاب میں لکھا ہے سبکی کے قول کے مطابق 560 قدح ہے اور قمولی کے مطابق 600 قدح ہے صاع تقریباً دو قدح کا ہوتا ہے [2]

حوالہ جاتترميم

  1. صحیح بخاری:جلد اول:حدیث نمبر 251
  2. موسوعہ فقہیہ ،جلد38 صفحہ 322، وزارت اوقاف کویت، اسلامک فقہ اکیڈمی انڈیا