فرق عرب کے ایک پیمانہ کا نام ہے جس میں سولہ رطل یا بارہ مد یا تین صاع گندم سماتے ہیں، فرق مدینہ منورہ کا ایک پیمانہ تھا جس میں سولہ رطل یعنی آٹھ سیر چیز سماتی تھی[1]

فقہا کی اصطلاحترميم

فقہا کی اصطلاح میں 6 قسط یا 3 صاع کا پیمانہ ہے اور ایک صاع میں چار مد ہوتے ہیں اس طرح ایک فرق بارہ مد کا ہوتا ہے اور 16رطل کا ہے فقہ حنبلی میں اسے ساٹھ رطل کے برابر کہا ہے

شرعی استعمالترميم

فرق کا استعمال بھی وہی ہے جو صاع کا ہے البتہ فقہا اس کا تذکرہ شہد کی زکوٰۃ میں استعمال کرتے ہیں جیسے محمد بن حسن نے کہا کہ شہد کا نصاب 5 فرق ہے اور ایک فرق 36 رطل کا ہے اس لیے کہ یہ انتہائی باٹ ہے جس سے اس کی مقدار بتائی جاتی ہے(الہدایہ مع فتح القدیر)[2]

حوالہ جاتترميم

  1. مرآۃ المناجیح شرح مشکوۃ المصابیح مفتی احمد یار خان نعیمی
  2. موسوعہ فقہیہ ،جلد38 صفحہ322، وزارت اوقاف کویت، اسلامک فقہ اکیڈمی انڈیا