صوبہ پنج شیر

(پنج شیر سے رجوع مکرر)

صوبہ پنجشیر افغانستان کا ایک صوبہ ہے۔

افغانستان میں صوبہ پنچ شیر

طالبان نے 4 ستمبر 2021 کی شام مزاحمتی فورس کو شکست دے کر پنجشیر فتح کرلیا امراللہ سالے اور احمد مسعود فرار

پنج شیر(فارسی: پنجشیر) افغانستان کا ایک صوبہ ہے۔ افغانستان کے جغرافیہ میں مشہور وادی پنج شیر بھی یہاں واقع ہے۔ 13 اپریل 2004ء کو افغانستان کے صوبہ پروان سے علاحدہ کرے کے پنج شیر کو صوبہ بنایا گیا۔ اس صوبہ کی آبادی تقریباً 139100 افراد پر مشتمل ہے اور اس کا رقبہ 3610 مربع کلو میٹر ہے۔ اس صوبہ کا صدر مقام بازرک کا شہر ہے۔
امریکی قیادت میں یہاں نیٹو کی افواج بھی تعینات ہیں جو افغانستان کی بحالی کا کام سر انجام دے رہی ہیں۔
اس صوبہ میں سب سے زیادہ تاجک قبائل آباد ہیں جبکہ ہزارہ، پشتون، پاشی اور نورستانی یہاں اقلیت میں ہیں۔

اضلاعترميم

صوبہ پنج شیر میں مندرجہ زیل اضلاع شامل ہیں،

صوبہ پنج شیر کے اضلاع
ضلع صدر مقام آبادی رقبہ[1] تبصرہ
انابہ ضلع پنج شیرسے 2005ء میں علاحدہ کر ضلع بنایا گیا
بازرک ضلع پنج شیرسے 2005ء میں علاحدہ کر ضلع بنایا گیا
ضلع درعہ ضلع پنج شیرسے 2005ء میں علاحدہ کر ضلع بنایا گیا
کھنج ضلع پنج شیرسے 2005ء میں علاحدہ کر ضلع بنایا گیا
پاریان ضلع پنج شیرسے 2005ء میں علاحدہ کر ضلع بنایا گیا
روکھا ضلع پنج شیرسے 2005ء میں علاحدہ کر ضلع بنایا گیا
شوتل ضلع پنج شیرسے 2005ء میں علاحدہ کر ضلع بنایا گیا

مزید دیکھیےترميم

دریائے پنج شیر

حوالہ جاتترميم

بیرونی روابطترميم

نیول پوسٹ گریجویٹ کالج، صوبہ پنج شیر