ابو سعد السمعانی مشہور عرب مسلمان سوانح نگار اور مورخ تھے۔

ابو سعد سمعانی
(عربی میں: عبد الكريم بن مُحمَّد بن منصور بن عبد الله التميمي السمعاني المروزي الشافعي ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
معلومات شخصیت
پیدائش 9 فروری 1113ء  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مرو  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 26 دسمبر 1166ء (53 سال)[1]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مرو[2]  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
استاذ ابن عساکر  ویکی ڈیٹا پر (P1066) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ مورخ،  ادیب،  فقیہ،  محدث  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان فارسی،  عربی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شعبۂ عمل تاریخ،  علم الانساب،  علم زبان،  فقہ،  علم حدیث  ویکی ڈیٹا پر (P101) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

مکمل نام ترمیم

أبو سعد عبد الكريم بن ابی بكر محمد بن ابو المظفر منصور بن عبد اللہ التميمي السمعاني المروزی الشافعی ہے

ولادت ترمیم

9 فروری 1113ء کو مرو میں پیدا ہوئے تھے

القاب ترمیم

تاج الاسلام اور قوام الدین ان کے القابات تھے

تصنیفات ترمیم

  • الأخطار في ركوب البحار۔
  • أدب الإملا والاستملا۔
  • الأمالي۔
  • الأنساب۔
  • تاريخ مرو۔
  • دخول الحمام۔
  • فضل الشام۔
  • قواطع الأدلة في أصول الفقة
  • مقام العلماء بين يدي الأمراء۔
  • الأدب في استعمال الحسب۔
  • سلوة الأحباب ورحمة الأصحاب۔
  • التحبير في المعجم الكبير۔
  • الصدق في الصداقة۔

وفات ترمیم

حافظ ابو سعد سمعانی26 دسمبر 1166ء بمطابق 562ھ میں وفات پائی اور مرو میں دفن ہیں۔[3] [4]

حوالہ جات ترمیم

  1. Encyclopaedia of Islam اور Encyclopédie de l’Islam
  2. Encyclopaedia of Islam اور Encyclopédie de l’Islam
  3. ابن الأثير كتاب اللباب 1/14
  4. الذهبي كتاب السير 20/456