"تراویح" کے نسخوں کے درمیان فرق

29 بائٹ کا اضافہ ،  1 سال پہلے
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
کوئی خلاصۂ ترمیم نہیں
|longtype = [[اسلام]]ی
|significance =سنی مسلمان ہر سال رمضان المبارک کے مہینے میں اللہ کے لیے نماز تراویح ادا کرتے ہیں۔
|begins = [[عشاء|نماز عشاء]]
|ends = [[Dawnصبح صادق]]
|frequency = سالانہ
|observances = [[سنت نماز]]یں
|relatedto = [[Salahنماز]],، [[Naflنفل prayerنماز]],، [[Fiveارکان Pillars of Islamاسلام]]
}}
[[رمضان]] کے مہینے میں [[عشاء]] کی [[نماز]] کے بعد اور [[وتر]]وں،سے پہلے باجماعت ادا کی جاتی ہے۔ جو بیس [[رکعت]] پر مشتمل ہوتی ہے اور دو دو رکعت کرکے پڑھی جاتی ہے۔ ہر چار رکعت کے بعد وقف ہوتا ہے۔ جس میں تسبیح و تحلیل ہوتی ہے اور اسی کی وجہ سے اس کا نام تروایح ہوا۔ حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے رمضان شریف میں رات کی عبادت کو بڑی فضیلت دی ہے۔ حضرت عمر نے سب سے پہلی تروایح کے باجماعت اور اول رات میں پڑھنے کا حکم دیا اور اُس وقت سے اب تک یہ اسی طرح پڑھی جاتی ہے۔ اس نماز کی امامت بالعموم [[حافظ]] [[قرآن]] کرتے ہیں اور رمضان کے پورے مہینے میں ایک بار سنت ہے اور زیادہ مرتبہ [[قرآن]] شریف پورا ختم کیا جا سکتا ہے [[حنفی]] ، [[شافعی]] ، [[مالکی]] اور [[حنبلی]] حضرات بیس رکعت پڑھتے ہیں اور [[اہل حدیث]] آٹھ رکعت، تروایح کے بعد [[وتر]] بھی باجماعت پڑھے جاتے ہیں۔