عبدالرحمٰن بن محمد اخضری

سیدی عبدالرحمٰن بن محمد الصغیر ابن محمد بن سیدی، امیر الاخضری البیصکریؒ اخضری العمری بن سید کے نام سے جانے جاتے ہیں۔ الجزائر کے شہر بیصکرا میں 1512ء میں پیدا ہوئے اور 1575ء میں بیصکرا، الجزائر میں انتقال کر گئے۔ایک الجزائری شاعر، ماہر فلکیات اور مالکی فقیہ تھے۔

عبد الرحمن اخضری
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1512[1][2][3]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات سنہ 1575 (62–63 سال)[1][2][3]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بیسکرا  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب اسلام
عملی زندگی
لقب اخضري
پیشہ عالم دين , اديب , كاتب , شاعر
پیشہ ورانہ زبان عربی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجۂ شہرت اخضری
سيدي عبد الرحمن بن محمد اخضری
دیگر نامابن الاخضری
ذاتی
پیدائش1515
وفات1575
مذہباسلام سنی
آبائی شہربیصکرا (الجیریا)
نسب نامہیمن کا پرچم اخضری کا خاندان
دیگر نامابن الاخضری
شغل
بانئ
  • سیدی عمرو ابن الاخضری (680s)
  • سیدی عبدالرحمٰن الاخضری (1515)
مرتبہ
پیشہ

کامترميم

آپ انتہائی مقبول درسی نظم السلم المراونق فی علم المنطق کے مصنف تھے۔ 144 سطروں پر مشتمل یہ نظم، جو الابری کی کتاب الاساغجی کی ایک تصدیق ہے۔ارسطو منطق کے اصولوں کا خاکہ پیش کرتی ہے اور یہ بتاتی ہے کہ یہ اسلامی عقیدہ (عقیدہ) اور فقہ (فقہ) کی حمایت کے لیے منطق کو کس طرح استعمال کیا جا سکتا ہے۔اس کام کا مطالعہ پوری مسلم دنیا میں منطق پر ایک پرائمری طور پر کیا جاتا ہے۔ [4] اور اسے اکثر الخدری کی اپنی نثری تفسیر کے ساتھ ملا کر پڑھا جاتا ہے۔ آپ نے ایک اور تصنیف "الجواہر المکنون" یا "الجواہر المکنونہ فی المعنی والبیان والبدیع" بھی لکھی ہے۔

سیرتترميم

شیخ سیدی عبدالرحمان بن محمد الآخضری الجزائر میں پیدا ہوئے، اس کے علاوہ یمن کے علاقے میں عرب قبیلہ بنو الخدری (عربی: بنو الأخضري) کے ایک عرب الجزائری خاندان شیرفین (عظیم اولاد) میں ایک اکاؤنٹ ہے۔ الجزائر میں 680 کی دہائی سے موجود ہے، جسے الجزائر اور لیبیا میں کبلات الاکدریہ (عربی: قبيلة الأخضرية) کے نام سے جانا جاتا ہے۔[5][6][7][8]

تصانیفترميم

  • مختصر الاخضری عبادات کا طریقہ امامِ مالک رحمہ اللہ تعالٰی کے مذہب کے مطابق[9]
  • اس نے تین فنون میں چھپے ہوئے جوہر کو منظم کیا: شعبدہ بازی، بیان اور بدی کی سائنس میں
  • پوشیدہ زیورات کے محفوظ کور کا زیور۔
  • فرضی فرائض اور ریاضی میں الدرہ البائضہ کا نظام۔
  • بہترین فنون اور چیزوں میں الدرہ البیضاء نظام۔
  • منطق میں سیڑھی کے نظام۔
  • مذکورہ بالا شاندار سیڑھی کی وضاحت۔
  • فلکیات میں الوس سسٹم
  • منثور ابن اجرم نے اجورم کے نظام پر الدر البحیہ مرتب کی
  • اظہر نے فلکیات کی سائنس میں مطالبات کو دائروں اور سیاروں کی شکل میں ترتیب دیا۔
  • حضرت خالد بن سنان کی تعریف میں ایک نظم

تصوف میں قدس اور لامازم کی شاعری

وفاتترميم

شیخ عبدالرحمٰن الخدری کی وفات قصال نامی گاؤں میں ہوئی اور ان کی تاریخ وفات کے بارے میں اختلاف ہے، بعض کہتے ہیں کہ ان کی وفات (953ھ / 1546ء) میں ہوئی اور بعض کہتے ہیں (983ھ / 1575ء) پہلے قول کے مطابق وہ تینتیس سال زندہ رہے اور غالباً اکثر حوالہ جات کے مطابق ان کا ترجمہ شیخ سبز نے کیا ہے۔[10]

مزید دیکھوترميم

حوالہ جاتترميم

  1. ^ ا ب http://thesaurus.cerl.org/record/cnp01152066 — اخذ شدہ بتاریخ: 2 اگست 2018
  2. ^ ا ب بی این ایف - آئی ڈی: https://catalogue.bnf.fr/ark:/12148/cb144848812 — بنام: ʿAbd al-Raḥmān ibn Muḥammad al- Aẖḍarī — مصنف: فرانس کا قومی کتب خانہ — عنوان : اوپن ڈیٹا پلیٹ فارم — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  3. ^ ا ب General Diamond Catalogue ID: https://opac.diamond-ils.org/agent/2651 — بنام: ʿAbd al-Raḥmān ibn Muḥammad al-Aḫḍarī
  4. "Inheritors Ijaza" (PDF). 17 ستمبر 2012 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 20 اپریل 2012. 
  5. التاريخ الثقافي لأبي القاسم سعد الله
  6. منشورات الجمعة الثقافية لمسجد زاوية قجال
  7. مجلة منبر قجال
  8. مجلة الأنوار المحمدية - مجلة دورية دينية تصدرها - الزاوية البلقايدية الهبرية - العدد السابع عشر -رمضان 1438 هـ -جوان 2017م
  9. "مختصر الاخضری اردو ترجمہ - مالکی مذہب برِصغیر". malikimadhab.org. 
  10. عبـد الرحمـن الأخضـري العالـم الصـوفي الـذي تفـوق في عصـره الكاتب والباحث الجزائري بوزيـاني الـدراجي. دار النشر: مؤسسة «Bled Edition» بدعـم مـن وزارة الثقافـة الجزائريـة

بیرونی روابطترميم