مار گزیدگی یا سانپ کا کاٹنا (انگریزی: Snakebite) ایک ایسا زخم ہے جو سانپ کے کاٹنے سے پھیلتا ہے، خاض طور پر زہریلا سانپ سے[3]۔ کسی زہریلے سانپ کے کاٹنے کی ایک عام علامت یہ ہے کہ اس کے منہ کے دانتوں سے پنکچر زخم کا نشان ظاہر ہونا۔ کبھی کبھار اس کاٹنے سے زہر جسم میں پھیلنے لگتا ہے۔ اس کی وجہ سے لالی، پھولنا اور اس کاٹنے کے مقام پر بہت زیادہ درد کا ظاہر ہونا دیکھا جا سکتا ہے، جو ممکن ہے کہ ظاہر ہونے میں ایک گھنٹے تک کا وقت لگے۔ قے، نظر کی دھندلا ہونا، ہاتھ پاؤں میں حرکت کا کم سے کم تر ہونا اور پسینوں کا جاری ہونا دیکھا جا سکتا ہے۔ زیادہ تر کاٹنے کے واقعات ہاتھوں، بغلوں یا پاؤں پر دیکھے جا سکتے ہیں۔[4][5] کاٹنے کے فوری بعد خوف کا طاری ہونا دل کی دھڑکن کے تیز ہو جانے کی وجہ سے ہو سکتا ہے اور سر کے چکرانے کا بھی سبب ہو سکتا ہے۔[1][2] سانپ کا زہر مسلسل خون کو جاری کرنے، گردوں کی ناکارگی، شدید الرجی کا رد عمل، کاٹنے کے مقام کے خلیوں کا غیر کار گرد ہونا یا سانس لینے میں مشکل پیدا کر سکتا ہے۔ مار گزیدہ شخص ہاتھ پاؤں سے معذور ہو سکتا ہے۔ کس کے ساتھ کیا ہو سکتا ہے، یہ کاٹنے والے سانپ کی قسم، جسم کا حصہ جہاں کاٹا گیا، چھوڑے گئے زہر کی مقدار اور مار گزیدہ شخص کی صحت پر منحصر ہے۔[6] بچوں میں مسائل بالغوں کے مقابلے زیادہ سنگین ہوا کرتے ہیں۔ [7]

مارگزیدگی
Snake Bite injury.jpg
وینیزویلا کی ایک نو سالہ بچی کو ریٹل اسنیک کاٹنے کا زخمی
خصوصیتہنگامی طب
علاماتدو پنکچر زخم، لالی، پھولنا، شدید تکلیف
وجوہاتسانپ[1]
خطرہ عنصرخود کے ہاتھوں سے کیے جانے والے کام، (زراعت، جنگل میں کام، تعمیرات)[1][2]
تدارکحفاظتی پاپوش، سانپوں سے بھرے علاقوں سے بچنا
علاجزخم کے ارد گرد پانی اور صابن سے دھونا، تریاق
تشخیض مرضسانپ کی قسم پر منحصر
تعددہر سال پانچ ملین تک
اموات94,000–125,000 ہر سال

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

  1. ^ ا ب پ "Venomous Snakes". U.S. National Institute for Occupational Safety and Health. 24 February 2012. 29 اپریل 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 19 مئی 2015. 
  2. ^ ا ب
  3. "Definition of Snakebite". www.merriam-webster.com (بزبان انگریزی). اخذ شدہ بتاریخ 17 جون 2019. 
  4. Gold، Barry S.؛ Richard C. Dart؛ Robert A. Barish (1 April 2002). "Bites of venomous snakes". The New England Journal of Medicine. 347 (5): 347–56. PMID 12151473. doi:10.1056/NEJMra013477. 
  5. Daley، BJ؛ Torres، J (June 2014). "Venomous snakebites.". JEMS : A Journal of Emergency Medical Services. 39 (6): 58–62. PMID 25109149. 
  6. Marx، John A. (2010). Rosen's emergency medicine : concepts and clinical practice (ایڈیشن 7). Philadelphia: Mosby/Elsevier. صفحہ 746. ISBN 9780323054720. 21 مئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  7. Peden، M. M. (2008). World Report on Child Injury Prevention (بزبان انگریزی). عالمی ادارہ صحت. صفحہ 128. ISBN 9789241563574. 02 فروری 2017 میں اصل سے آرکائیو شدہ.