"قانون طب" کے نسخوں کے درمیان فرق

1 بائٹ کا اضافہ ،  5 سال پہلے
clean up, replaced: زریعے ← ذریعہ, زریعہ ← ذریعہ, لیۓ ← لیے (3) using AWB
م (املا کی درستگی)
(clean up, replaced: زریعے ← ذریعہ, زریعہ ← ذریعہ, لیۓ ← لیے (3) using AWB)
Dioscorides <br> matter<br> meteria <br> meteria <br> medica <br>materia medica<br> materia medica}}
}}
* حکمت پر عمومی مضمون کے لیۓلیے [[طب یونانی]]۔
'''قانون طب''' یا principle of medicine سے مراد ان اصول و ضوابط یا باالفاظ دیگر قوانین کی ہوتی ہے کہ جن کی بنیادوں پر علم [[طب|طب (medicine)]] و [[طب یونانی|حکمت (yunani)]] کی عمارت تعمیر کی جاتی ہے۔ قانون طب سے متعالق اس موجودہ مضمون میں بالخصوص طب یونانی یا [[حکمت]] کا ذکر شامل ہے اور ساتھ ساتھ اسکا موازنہ [[طب]] یا میڈیسن سے کیا جاتا رہے گا تاکہ یہ اندازہ ہوجاۓ کے ان دونوں اقسام کے طب کا بنیادی ڈھانچہ کیا ہے۔ مزید یہ کو گو حکمت ہو یا میڈیسن دونوں ہی اقسامِ علمِ طب کے دائرۂ اثر میں صرف [[انسان]] ہی نہیں بلکہ تمام اقسام کی [[حیات]] (بالخصوص [[حیوان|حیوانات]]) آجاتے ہیں لیکن اس مقالے میں یہ دائرہ سمٹ کر صرف انسانی جسم اور اسکے [[مرض|امراض]] کی بحث تک محدود کیا گیا ہے۔
==انسانی جسم کی اساس==
حکمت میں انسان کے جسم کو [[حیات|زندگی (life)]] کی بقا کے لیۓلیے جن بنیادی اجزاء یا امور سے واسطہ ہوتا ہے انہیں مشترکہ طور پر اساس طبیعیہ کہا جاتا ہے اور گو موجودہ طب یا [[طب|میڈیسن]]، بنیادی طور پر انسانی جسم کو [[خلیہ|خلیات]] یا ان خلیات کو بنانے والے [[سالمہ|سالمات]] کی اساس پر قائم قرار دیتی ہے لیکن اگر بغور مطالعہ کیا جاۓ تو انسانی جسم کی اساس کے بنیادی اجزاء کے بارے میں طب اور میڈیسن میں کوئی ایسا اختلاف نہیں کہ یہ ایک دوسرے کی تنسیخ کرتے ہوں۔
===حکمت و میڈیسن===
* {{اس}} [[طب یونانی]] اور [[طب]]
===اعضاء===
* {{اس}} [[اعضاء (طب)]]
اعضاء، انسانی جسم کی ترکیب میں اخلاط کے بعد آتے ہیں یعنی حکمت کی نگاہ میں ارکان سے مزاج اور مزاج سے اخلاط بنتے ہیں اور پھر ان اخلاط سے اعضاء وجود پاتے ہیں۔ اور اگر اعضاء کے درجہ تک پہنچنے کے لیۓلیے اگر میڈیسن کی عینک استعمال کی جاۓ تو اسکے مطابق، خلیات سے نسیجات اور پھر نسیجات سے اعضاء وجود پاتے ہیں۔ دراصل اخلاط بھی حکمت کے نظریہ کے مطابق براہ راست اعضاء میں نہیں بدلا کرتے بلکہ ان اخلاط کی ترکیب سے ایک رطوبت تیار ہوا کرتی ہے اور یہ رطوبت جو کہ حکمت میں رطوبت ثانیہ کہلائی جاتی ہے پھر اعضاء کی ترکیب کرتی ہے۔
: اعضاء کی بنیادی طور پر دو اقسام ہوتی ہیں
# اعضاء رئیسہ
===قوتیں===
* {{اس}} [[قوتیں (طب)]]
قوتیں، اس توانائی کا متبادل تصور کی جاتی ہیں جو کہ جسم انسانی میں زندگی کی حرکات پیدا کیا کرتی ہیں۔ وہ قوتیں جو کہ جسم کی نشونما کرتی ہیں اسکی تعمیر کرتی ہیں انکو طبیعیہ قوتیں کہا جاتا ہے جنکا ماخذ حکماء نے جگر کو قرار دیا ہے۔ ایک اور قوت ، قوت حیوی ہوتی ہے، قوت حیوی کو میڈیسن میں vital force کا متبادل کہا جاسکتا ہے مگر فرق یہ ہوگا کہ میڈیسن میں قوت حیوی میں قوت حیوی، قوت طبیعیہ اور قوت نفسی، تینوں ہی شمار کی جاسکتی ہیں، حکمت میں قوت حیوی کو قلب میں پیدا شدہ تصور کیا جاتا ہے۔ تیسری قوت، قوت نفسی ہوتی ہے جسکو قوت نفسانیہ بھی کہا جاتا ہے اور اسکی پیدائش دماغ میں تصور کی جاتی ہے۔ قوت نفسی وہ قوت ہوتی ہے کہ جس کے زریعےذریعہ سے احساس اور حرکات کی صلاحیت پیدا ہوا کرتی ہے۔
===ارواح===
* {{اس}} [[ارواح (طب)]]
ارواح کا لفظ روح کی جمع ہے اور اطباۓ علم حکمت نے ارواح کا نام جسم انسانی میں حیات کو برقرار رکھنے والے ایسے اجزاء کو دیا ہے کہ جو [[خِلط|اخلاط]]{{زیر}} عمدہ کے بخارات سے پیدا ہوتے ہیں اور تمام جسم میں پہنچ کر زندگی قائم رکھنے کا زریعہذریعہ بنتے ہیں۔ [[حکمت]] میں ارواح کی پیدائش کے تین مقامات بیان ہوتے ہیں 1- [[دماغ]] 2- [[قلب]] 3 [[جگر]]۔
 
 
 
 
==مزید دیکھیۓ==
* [[طب یونانی]]
 
[[زمرہ:طب]]
[[زمرہ:قانون طب]]
[[زمرہ:طب یونانی]]
 
==مزید دیکھیۓ==
* [[طب یونانی]]