دھوم تھری 2013 کی ایک بھارتی ایکشن فلم تھی جس کے ہدایت کار وجے کرشنا اچاریا جبکہ پروڈیوسر ادیتیا چوپڑا تھے۔[6][7]یہ دھوم فلموں کی تیسری قسط تھی جس میں عامر خان ایک منفی کردار ادا کر رہے تھے جبکہ دیگر اداکاروں میں کرینہ کیف، ابھیشیک بچن اورادے چوپڑا بطور علی اکبر کے شامل تھے۔ یہ جب بنائی گئی تھی تو 175 کروڑ بھارتی روپوں،[5] کے خرچ سے سب سے مہنگی فلم تھی [8] بعد میں یہ ریکارڈ بھاؤ بلی نے توڑ دی۔ اسے 20 دسمبر 2013 کو ریلیز کیا گیا۔[9] marking [10] [11][12]

دھوم 3
Dhoom 3
ہدایت کارVijay Krishna Acharya
پروڈیوسرادتیے چوپڑا
منظر نویسVijay Krishna Acharya
کہانیادتیے چوپڑا
Vijay Krishna Acharya[1]
ستارےعامر خان
ابھیشیک بچن
کٹرینا کیف
ادے چوپڑا
Siddharth Nigam
جیکی شروف
موسیقیگانے:
پریتم
Background score:
Julius Packiam
سنیماگرافیSudeep Chatterjee
ایڈیٹرRitesh Soni
پروڈکشن
کمپنی
تاریخ اجراء
  • 20 دسمبر 2013ء (2013ء-12-20)
دورانیہ
172 منٹ[2][3][4]
ملکبھارت
زبانہندی زبان
بجٹ1.75 billion (برابر ہیں Bad rounding hereFormatting error: invalid input when rounding or امریکی $Bad rounding hereFormatting error: invalid input when rounding میں 2018)[5]
باکس آفس2.6 billion (برابر ہیں Bad rounding hereFormatting error: invalid input when rounding or امریکی $Bad rounding hereFormatting error: invalid input when rounding میں 2018)[5]

حوالہ جاتترميم

  1. "Dhoom:3 – The Hunt is Over!". Movie Weaver. 21 August 2012. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  2. "DHOOM: 3 DECODED". Karishma Upadhyay. Calcutta, India: t2. 15 December 2013. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  3. ^ ا ب پ "Dhoom 3". Box Office India. 27 جولا‎ئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  4. "Dhoom 3 was not written with Aamir Khan in mind: Vijay Krishna Acharya". Hindustan Times. 
  5. "Dhoom 3 Cast & Crew". Bollywood Hungama. 
  6. "Highest Budget Movies All Time". Box Office India. 27 جولا‎ئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  7. "Yash Raj Films". Yash Raj Films. اخذ شدہ بتاریخ 01 نومبر 2013. 
  8. "'Dhoom 3' to release in Dolby Atmos". The New Indian Express. Indo-Asian News Service. 3 October 2013. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  9. "'Dhoom:3' to release in Dolby Atmos". Zee News. Indo-Asian News Service. 3 October 2013. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ.