صیتہ بنت فہد الدامر

صیتہ بنت فہد الدامر ( عربی: صيتة بنت فهد الدامر ; 25 جون 1922 ء- 25 دسمبر 2012ء) آل سعود کی رکن تھیں اور خالد بن عبدالعزیز آل سعود کی شریک حیات میں سے ایک تھیں۔ شہزادی صیتہ بانی مملکت شاہ عبدالعزیز کے 39 ویں بیٹے شہزادہ جلوی بن سعود بن عبدالعزیز کی بیٹی تھیں۔ شہزادی صیتہ کے چار بھائی اور ان سمیت چار بہنیں تھیں۔ شہزادی صیتہ بنت جلوی کی شادی شہزادہ خالد بن مشعل بن عبدالعزیز آل سعود سے ہوئی تھی ان سے شہزادی شیخہ پیدا ہوئی۔صیتہ بنت فہد البدیہ میں مقیم عجمان قبیلے کی رکن تھیں اور عبداللہ بن جلوی کی بیوی وسمیہ الدمیر کی بھانجی تھیں۔ان کے والدین فہد بن عبداللہ الدامیر اور رئیسہ شہیتان الدھین العجمی تھے۔ ان کے دو بھائی اور پانچ بہنیں تھیں۔ ان کا بھائی عبداللہ بن فہد عجمان قبیلے کی یہودی بستی کا سردار تھا۔صیتہ بنت فہد کا انتقال 25 دسمبر 2012 ءکو ریاض میں ہوا۔ نماز جنازہ 26 دسمبر 2012ء کو ریاض کی امام ترکی بن عبداللہ مسجد میں عبدالعزیز الشیخ کی امامت میں نماز عصر کے بعد ادا کی گئی جس میں ولی عہد شہزادہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود سمیت اعلیٰ سعودی حکام نے شرکت ک

صیتہ بنت فہد الدامر
معلومات شخصیت
تاریخ پیدائش 25 جون 1922  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 25 دسمبر 2012 (90 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ریاض  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Saudi Arabia.svg سعودی عرب  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شریک حیات خالد بن عبد العزیز  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد فیصل بن خالد بن عبد الغزیز آل سعود،  موضی بنت خالد آل سعود  ویکی ڈیٹا پر (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
خاندان آل سعود  ویکی ڈیٹا پر (P53) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

ابتدائی زندگیترميم

صیتہ بنت فہد البدیہ میں مقیم عجمان قبیلے کی رکن تھیں اور عبداللہ بن جلوی کی بیوی وسمیہ الدمیر کی بھانجی تھیں۔ [1] ان کے والدین فہد بن عبداللہ الدامیر اور رئیسہ شہیتان الدھین العجمی تھے۔ ان کے دو بھائی اور پانچ بہنیں تھیں۔ [2] ان کا بھائی عبداللہ بن فہد عجمان قبیلے کی یہودی بستی کا سردار تھا۔

ذاتی زندگیترميم

صیتہ بنت فہد نے شاہ خالد سے شادی کی۔ [3] ان کے سات بچے تھے: جوہرہ، نوف، موضی، حسین، البندری، مشاعل اور شہزادہ فیصل۔ [4] ان کی بیٹی، معدی بنت خالد، 2013ء اور 2016ء کے درمیان میں مشاورتی اسمبلی کی رکن رہی۔ [5]

موتترميم

صیتہ بنت فہد کا انتقال 25 دسمبر 2012 ءکو ریاض میں ہوا۔ نماز جنازہ 26 دسمبر 2012ء کو ریاض کی امام ترکی بن عبداللہ مسجد میں عبدالعزیز الشیخ کی امامت میں نماز عصر کے بعد ادا کی گئی جس میں ولی عہد شہزادہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود سمیت اعلیٰ سعودی حکام نے شرکت کی۔

حوالہ جاتترميم

  1. "Wasmiyah al Damir Biography". Datarabia. اخذ شدہ بتاریخ 30 دسمبر 2012. 
  2. Jennifer S. Uglow، ویکی نویس (1999). The Northeastern Dictionary of Women's Biography. Boston, MA: Northeastern University Press. ISBN 978-1-55553-421-9. 
  3. Joseph A. Kechichian (2014). 'Iffat Al Thunayan: an Arabian Queen. Brighton: Sussex Academic Press. صفحہ 79. 
  4. "Princess Moudi bint Khalid". Who's Who Arab Women. 18 اکتوبر 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 11 اگست 2013.