طبیعیات میں، فارغہ یا گیس (جمع: فارغین) (انگریزی: Gas) مادہ کی وہ حالت ہے جس میں مادہ کی کوئی خاص شکل نہیں ہوتی اور اُس کے ذرّے یعنی جوہر، سالمات، آئنات یا برقیے کچھ حد تک آزادانہ حرکت کرتے ہیں مثلاً ہوا۔
فارغہ جس برتن میں بند ہو اس کی شکل اختیار کر لیتی ہے۔ ٹھوس اور مائع کے بر خلاف فارغہ با آسانی پھیل اور سکڑ سکتی ہے۔ ٹھنڈا کرنے پر مناسب دباو پر فارغہ مائع اور ٹھوس حالت میں تبدیل کی جا سکتی ہے۔

فارغہ حالت میں ذرّے (جوہر، سالمات، آئنات یا برقیے) آزادانہ حرکت کرتے ہوئے ایک دوسرے سے بھی ٹکراتے ہیں اور برتن کی دیواروں سے بھی۔

وجہ تسمیہترميم

فارغہ کو وضع کرنے میں انگریزی لفظ gas کی اصل الکلمہ (etymology) کو اساس بنایا گیا ہے۔ لغات کے مطابق gas کا لفظ یونانی کے khaos سے ماخوذ ہے جس کے معنی empty کے ہوتے ہیں؛ اب gas کا لفظ سائنس میں آج کل ان بنیادی معنوں کے ساتھ ساتھ وہ تمام معنی بھی رکھتا ہے جو properties of gas کے نام سے جانے جاتے ہیں، گویا کسی بھی لفظ کے معنی اس کے استعمال سے حاصل ہوتے ہیں۔ فرغ کی اساس سے فارغ کا لفظ بنتا ہے جس کے معنی empty, absolved, void, hollow کے ہوتے ہیں؛ اسی فارغ سے اسم فارغہ اخذ کیا گیا ہے۔ فارغ اور فراغ محض فرصت کے معنوں میں ہی نہیں آتا بلکہ اس سے khaos یا empty کا وہی مفہوم عربی میں مستعمل ہے جو انگریزی میں ہے۔ جیسے:

  1. empty space = الموقع الفارغ = خالی جگہ
  2. empty box = الصندوق الفارغ = خالی صندوق

چونکہ انگریزی کے لفظ gas کے لیے دیگر ممنکنہ متبادلات اپنا اختصاص قائم نہیں رکھ پاتے؛ جیسے بخار (بخارات) vapor سے اور غبار mist سے نزدیک ہے نا کہ فارغہ سے۔ پھر یہ کہ چونکہ فارغہ ایک بکثرت استعمال ہونے والا لفظ ہے اور اس کا متبادل انگریزی کی طرح مختصر اور ادائگی میں سہل ہونا چاہیے۔

فارغہ کے قوانینترميم

کسی بھی فارغہ کی دی ہوئی مخصوص مقدارمیں اس فارغہ کے درجہ حرارت، حجم اور دباؤ کے آپس کے تعلق کو فارغہ کے قوانین کہا جاتا ہے۔ بنیادی طورپر 3 قانون اہمیت کے حامل ہیں جو یہ ہیں:

مزید دیکھیےترميم