امیر حبیب اللہ خان

والئی افغانستان امیر عبدالرحمن کے بڑے بیٹے تھے۔ سمرقند میں پیدا ہوئے۔ ان کے عہد میں انگریزوں نے افغانستان کی خارجی اور داخلی امور میں کامل آزادی تسلیم کر لی۔ 1905ء میں ہندوستان کا سفر کیا۔ اور اسلامیہ کالج لاہور کا سنگ بنیاد رکھا، کالج کا حبیبیہ ہال ان کے نام سے منسوب ہے۔ ان کے زمانے میں افغانستان میں ڈاکٹری علاج شروع ہوا۔ مغربی طرز کے مدرسے کھولے گئے اور پن بجلی گھر قائم ہوا۔ جلال آباد کے قریب شکار گاہ میں قتل ہوئے۔ 1901 سے لے کر 1919 تک افغانستان پر حکومت کی۔

امیر حبیب اللہ خان
Habibullah.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 3 جون 1872  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تاشقند  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 20 فروری 1919 (47 سال)[1][2][3]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
افغانستان  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مدفن کابل  ویکی ڈیٹا پر (P119) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات قتل  ویکی ڈیٹا پر (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Afghanistan (2002–2004).svg افغانستان  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد نسل
والد امیر عبدالرحمن خان  ویکی ڈیٹا پر (P22) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بہن/بھائی
دیگر معلومات
پیشہ سیاست دان  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات
Galó de l'Orde del Bany (UK).svg جی سی بی
UK Order St-Michael St-George ribbon.svg نائیٹ گرینڈ کراس آف دی آرڈر آف سینٹ مائیکل اینڈ سینٹ جورج  ویکی ڈیٹا پر (P166) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
حبیب اللہ آپنے گھوڑے پر سوار۔

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

  1. دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Habibullah-Khan — بنام: Habibullah Khan — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  2. Proleksis enciklopedija ID: https://proleksis.lzmk.hr/25041 — بنام: Habibullah Khan — عنوان : Proleksis enciklopedija
  3. Hrvatska enciklopedija ID: https://www.enciklopedija.hr/Natuknica.aspx?ID=23992 — بنام: Habibullah Khan — عنوان : Hrvatska enciklopedijaISBN 978-953-6036-31-8