انیل امبانی

انیل امبانی گروپ کے چیئرمین

انیل دھیرو بھائی امبانی (انگریزی: Anil Ambani) ایک بھارتی تاجر ہیں۔ وہ ریلائنس گروپ (جسے ریلائنس اے ڈی اے گروپ بھی کہا جاتا ہے) کے چیئرمین ہیں، جو جولائی 2006ء میں ریلائنس انڈسٹریز لمیٹڈ سے الگ پو کر بنائی گئی تھی۔ وہ ریلائنس کیپیٹل، [3] ریلائنس انفراسٹرکچر، [4] ریلائنس پاور اور ریلائنس کمیونیکیشن [5] سمیت کئی اسٹاک لسٹڈ کارپوریشنز کی قیادت کرتے ہیں۔ انیل امبانی جو کبھی دنیا کے چھٹے امیر ترین شخص تھے، فروری 2020ء میں مملکت متحدہ کی ایک عدالت کے سامنے اعلان کیا کہ اس کی خالص مالیت صفر ہے اور وہ دیوالیہ ہیں، حالانکہ اس دعوے کی سچائی پر سوال ہے۔ [6] انہوں نے راجیہ سبھا، بھارتی ایوان بالا میں اتر پردیش سے ایک آزاد سیاست دان کے طور پر 2004ء سے 2006ء کے درمیان میں خدمات انجام دیں۔ [7][8]

انیل امبانی
(انگریزی میں: Anil Ambani ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Anil Ambani Reliance.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 4 جون 1959 (63 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ممبئی  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of India.svg بھارت  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
زوجہ ٹینا امبانی  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد انمول امبانی،  جئے انشول امبانی  ویکی ڈیٹا پر (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والد دھیرو بھائی امبانی  ویکی ڈیٹا پر (P22) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بہن/بھائی
مکیش امبانی،  دیپتی سالگاؤکر[1]،  نینا کوٹھاری  ویکی ڈیٹا پر (P3373) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
مادر علمی واروک بزنس اسکول
وارتھون اسکول
ممبئی یونیورسٹی
کشن چند چیلارام کالج  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ کارجو،  چیف ایگزیکٹو آفیسر،  صدر نشین،  سیاست دان  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان ہندی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کل دولت 3400000000 امریکی ڈالر (2019)[2]  ویکی ڈیٹا پر (P2218) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحات  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

حوالہ جاتترميم

  1. https://www.thehindubusinessline.com/companies/salgaocar-family-settles-six-year-feud/article23776860.ece — اخذ شدہ بتاریخ: 20 جولا‎ئی 2019
  2. https://www.forbes.com/profile/anil-ambani/
  3. "Reliance Capital". Reliance Capital. 17 اپریل 2014. اخذ شدہ بتاریخ 18 اپریل 2014. 
  4. "Reliance Infra". Reliance Infra. 17 اپریل 2014. اخذ شدہ بتاریخ 17 اپریل 2014. 
  5. "Reliance Communication". Reliance Communication. 17 اپریل 2014. 03 اپریل 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 17 اپریل 2014. 
  6. "Onetime Billionaire Says He's Now Worth Nothing". The Economic Times. 
  7. "Anil Ambani to stand for Rajya Sabha". دی اکنامک ٹائمز. 16 جون 2004. اخذ شدہ بتاریخ 21 جون 2020. 
  8. "Anil Ambani quits as Rajya Sabha MP amid office of profit row". Outlook. 25 مارچ 2006. اخذ شدہ بتاریخ 21 جون 2020.