اسلام روس میں دوسرا سب سے زیادہ وسیع پیمانے پر اقرار مذہب ہے۔ اسلام کو روس کے روایتی مذاہب سے ایک سمجھا جاتا ہے جو روسی تاریخی ورثے کا قانونی طور پر ایک حصہ ہے۔[3] روسی رائے عامہ ریسرچ سینٹر (Russian Public Opinion Research Center) کی طرف سے کیے گئے ایک سروے کے مطابق تقریباْ 6 فیصد افراد خود کو مسلمان سمجھتے ہیں۔[4] رائٹرز کے مطابق مسلم روس کی آبادی کے ساتویں (14 فیصد) نمبر پر ہیں۔[5]مسلمان بحیرہ اسود اور بحیرہ قزوین کے درمیان رہنے والے شمالی قفقاز کی قومیتوں کی تشکیل کرتے ہیں۔ جن میں ادیگی، بالکار چیچن، انگش، کباردی، کراچائے اور داغستانی اقوام شامل ہیں۔ اس کے علاوہ وولگا طاس کے وسط میں تاتار اور باشکیر کی آبادی میں اکثریت مسلمان ہیں۔

روس میں اسلام
معلومات ملک
نام ملک Flag of Russia.svg روس
کل آبادی 141,377,752
ملک میں اسلام
مسلمان آبادی 14,137,775
تا 19,792,885
فیصد 10٪ تا 14٪[1][2]

نگار خانہترميم

حوالہ جاتترميم

  1. CIA - The World Factbook - Russia
  2. Russia
  3. Bell, I (2002). Eastern Europe, Russia and Central Asia. ISBN 978-1-85743-137-7. اخذ شدہ بتاریخ 27 دسمبر 2007. 
  4. "Опубликована подробная сравнительная статистика религиозности в России и Польше". religare.ru. 6 June 2007. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 27 دسمبر 2007.  (روسی میں)
  5. "Analysis: Airport bomb may aggravate Russian ethnic tensions". Reuters. 2011-01-26. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 05 فروری 2014.