لیلی مجنوں (فلم، 1976ء)

1976ء کی ہندی فلم

لیلی مجنوں ہیک 1976ء کی بالی وڈ بھارتی ہندی رومانوی فلم جو ہرنام سنگھ راویل کی ہدایت کاری میں بنی اور اس میں رشی کپور، رنجیتا کور اور ڈینی ڈینزونگپا نے مرکزی کردار ادا کیے۔ فلم کی موسقیی مدن موہن اور جادیو نے ترتیب دی۔ فلم کی کہانی داستان لیلیٰ مجنوں پر مبنی ہے جو دو پیار کرنے والوں لیلی، شہزادی اور ایک عام آدمی مجنوں کے بارے ہے جو مل نہ سکے۔[1]

لیلی مجنوں
Laila Majnu 1976.jpg
فلم پوسٹر
ہدایت کارہرنام سنگھ راویل
پروڈیوسررام بی سی
سیرو درانی
تحریرابرار علوی
انجنا راویل
ہرنام سنگھ راویل
ماخوذ ازلیلیٰ مجنوں
ستارےرشی کپور
رنجیتا کور
ڈینی ڈینزونگپا
موسیقیمدن موہن
Jaidev
سنیماگرافیجی سنگھ
ایڈیٹرشیام راجپوت
تقسیم کارڈی لکس فلم
تاریخ نمائش
  • 11 نومبر 1976ء (1976ء-11-11) (بھارت)
دورانیہ
141 منٹ۔
ملکبھارت
مغربی جرمنی
سوویت اتحاد
زبانہندی

گیتترميم

فلم کی موسقیی مدن موہن نے ترتیب دی اور جادیو اور ساحر لدھیانوی نے بول لکھے۔

گیت گلوکار
"حسن حاضر ہے" لتا منگیشکر
"تیرے در پر آؤں گا" محمد رفیع
"ہو کے مایوس تیرے در سے" محمد رفیع، عزیو نازن، شنکر، امبر کمار اور چورس
"اس ریشمی پازیب کی جھنکار" محمد رفیع، لتا منگیشکر
"برباد محبت کی دعا" محمد رفیع
"اب اگر ہم سے خدائی بھی" محمد رفیع، لتا منگیشکر
"یہ دیوانے کی ضد ہے اپنی" محمد رفیع
"لکھ کر تیرا نام زمیں پر" محمد رفیع، لتا منگیشکر

فلم کے گانے ہٹ ہو گئے تھے۔ خاص طور پر "اس ریشمی پازیب کی جھنکار"، "تیرے در پہ آیا ہوں"، " برباد محبت کی دعا" اور "حسن حاضر ہے"۔ "حسن حاضر ہے" بیناکا گیتمالا سالانہ فہرست 1977ء میں بھی پہلا نمبر پر پہنچ گیا، جو مدن موہن کی ندرت ہے۔

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

  1. Anil Groverच (2005-07-29). "Forever velvet". The Telegraph. 19 اگست 2007 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 28 اپریل 2007. 

بیرونی روابطترميم