محمد مارماڈیوک پکتھال

محمد مارماڈیوک پکتھال (پیدائش: 7 اپریل 1875ء– وفات: 19 مئی 1936ء)) ایک مغربی عالم دین تھے جنہیں ان کے قرآن کے انگریزی ترجمے (1930ء) کے لیے یاد کیا جاتا ہے۔ وہ مسیحیت سے قبول اسلام کرچکے تھے۔ پکتھال ایک ناول نگار تھے جنہیں ڈی ایچ لارینس،ایچ جی ویلس اور ای ایم فاسٹر کی جانب سے تعظیمی نظروں سے دیکھا گیا تھا۔ وہ ایک صحافی، صدرمدرس، سیاسی اور مذہبی رہنما تھے۔ ان کا قبول اسلام ڈرامائی انداز میں ہوا تھا۔ 29 نومبر 1917ء میں انہیں "اسلام اور ترقی" کے موضوع پر مسلم لٹریری سوسائٹی کی جانب سے ناٹنگ ہل، مغربی لندن میں لیکچر دینا تھا۔ خطاب کے فوری بعد انہوں نے اپنے قبول اسلام کا اعلان کیا۔ وہ ورکنگ مسلم مشن کی خدمات بھی کر چکے ہیں جب کہ اس کے بانی خواجہ کمال الدین غیر حاضر رہے تھے۔[1]

محمد مارماڈیوک پکتھال
Marmaduke Pickthall Portrait.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 7 اپریل 1875(1875-04-07)
کیمبرج ٹیریس (Cambride Terrace)، لندن،انگلستان
وفات 19 مئی 1935(1935-50-19) (عمر  60 سال)
پورتھ منسٹر ہوٹل، سینٹ ایوز، کارن وال، انگلستان
مدفن بروک ووڈ قبرستان  ویکی ڈیٹا پر (P119) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of the United Kingdom.svg مملکت متحدہ
Flag of the United Kingdom.svg متحدہ مملکت برطانیہ عظمی و آئر لینڈ (–12 اپریل 1927)  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب سنی اسلام
عملی زندگی
پیشہ مترجم،  صحافی،  ناول نگار،  ماہر اسلامیات،  مصنف  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

خوف خدا / تقوٰیترميم

محمد مارماڈیوک پکتھال اللہ سے بہت خوف کھاتے تھے۔ جب وہ نماز کے لیے اٹھتے تو چہرہ سرخ ہوتا اور مکمل خشوع و خضوع سے نماز پڑھتے۔ کسی نے اس عجیب کیفیت کا سبب پوچھا جو وہ محسوس نہیں کرتے تو ان کا جواب تھا:

Because I am a Muslim by choice, you are by birth
چونکہ میں اپنی مرضی سے مسلمان ہوا ہوں اور آپ اپنی پیدائش سے ہیں

حوالہ جاتترميم

بیرونی روابطترميم