مرکزی مینیو کھولیں

اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔ سویڈن شمالی یورپ کا ایک ملک ہے جس کے اطراف میں زیادہ تر سمندر ہے۔ مغرب میں ناروے اور شمال مشرق میں فن لینڈ ہے۔ یہ سمندر پر ایک لمبے پل کی مدد سے ڈنمارک سے بھی ملا ہوا ہے۔

تاريخترميم

شروع کے دور میں سویڈن کے بہت سے لوگ Odin اور Thor کو اپنا خدا مانتے تھے۔ ان خداؤں کی شکلیں ہمیں پتھروں پر بنی ہوئی ملتی ہیں۔ جس سے ہم اندازہ لگا سکتے ہیں کہ یہ خدا کس طرح کے ہوں گے۔ 1000ء میں سویڈن Sveland, Norrland اور Götaland کے علاقوں پر مشتمل تھا۔ جنوبی Götaland ڈنمارک کا حصہ تھا۔ جبکہ Härjedalen، Jämtland اورBohuslän ناروے کے حصے تھے۔ 1600ء میں کئی جنگیں ہونے کے بعد یہ علاقے سویڈن کے بادشاہ نے فتح کر لیے۔ 1398ء سے تقریباً 130 سال تک ڈنمارک، سویڈن اور ناروے کی ایک حکومت تھی۔ مارگریٹ پہلی ملکہ تھی جس نے ان تین ناردن ممالک پر حکومت کی۔ 1523ء میں سویڈن کا بادشاہ Gustav Vasa نے ڈنمارک سے اپنا ملک علاحدہ کر لیا۔ اس بادشاہ کو ملک کا سب سے بڑا بادشاہ مانا جاتا ہے۔ اس نے اپنے دور میں معاشی و فوجی نظام کو بہت بہتر کیا۔ اس بادشاہ کے نام پر کئی چیزوں کے نام رکھے گئے۔ Dalarna میں Vasaloppet بادشاہ کی یادگار مانی جاتی ہے۔ اسٹاک ہوم کے ایک بھری جہاز کا نام Vasa رکھا گیا۔ اس کے علاوہ کئی گلیوں، عمارات کا نام یہی رکھا گیا۔ 1600ء کے بعد کے زمانے کو سویڈن کا سنہری دور کہا جاتا ہے۔ اس دور میں سویڈن کے بادشاہوں نے فن لینڈ پر حکومت کی، جرمنی کے کچھ حصے اور Baltikum کے چند علاقے۔ ڈنمارک اور ناروے کے کئی علاقوں کو فتح کیا۔ کارل سویڈن کے بادشاہوں کا ایک عام نام تھا۔ کارل 12 جو 1700ء تک زندہ رہا۔ ان سب بادشاہوں میں سب سے مشہور تھا۔ اس نے اپنی زندگی میں زیادہ تر جنگیں لڑیں۔ جب وہ Fredriksten قلعے کو قبضے میں کرنے کی کوشش میں تھا تو اسی جنگ میں وہ مارا گیا۔ 1818ء سے 1844ء تک کارل یوہان ناروے اور سویڈن کا بادشاہ تھا۔ بادشاہ کارل 16, Gustaf جو ابھی سویڈن کا بادشاہ ہے۔ اس کا تعلق اسی بادشاہ سے ہے۔

اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔ اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔ اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔ اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔

اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔

  1.  اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔ اسکرپٹ چلانے کے لیے مختص کردہ وقت ختم ہو چکا ہے۔
  2. ^ ا ب پ مکمل کام یہاں دستیاب ہے: http://www.statistikdatabasen.scb.se/pxweb/sv/ssd/START__MI__MI0802/Areal2012/?rxid=c2a27974-4588-4b5c-bb7d-790f9ff05b46 — عنوان : Land- och vattenareal per den 1 januari efter region och arealtyp. År 2012 - 2019 — ناشر: Statistics Sweden
  3. Nyckeltal för Sverige — ناشر: Statistics Sweden
  4. ^ ا ب پ ت ٹ ث ج چ ح خ د ڈ ذ ر​ ڑ​ ز ژ http://data.uis.unesco.org/Index.aspx?DataSetCode=DEMO_DS
  5. https://europa.eu/european-union/about-eu/countries_en — اخذ شدہ بتاریخ: 4 مئی 2018 — ناشر: یورپی اتحاد
  6. https://www.interpol.int/Member-countries/World — اخذ شدہ بتاریخ: 7 دسمبر 2017 — ناشر: انٹرپول
  7. https://www.opcw.org/about-opcw/member-states/ — اخذ شدہ بتاریخ: 7 دسمبر 2017 — ناشر: تنظیم برائے ممانعت کیمیائی ہتھیار
  8. https://www.iho.int/srv1/index.php?option=com_wrapper&view=wrapper&Itemid=452&lang=en — اخذ شدہ بتاریخ: 8 دسمبر 2017 — ناشر: بین الاقوامی آب نگاری تنظیم
  9. http://www.unesco.org/eri/cp/ListeMS_Indicators.asp
  10. http://www.upu.int/en/the-upu/member-countries.html — اخذ شدہ بتاریخ: 4 مئی 2019
  11. https://www.itu.int/online/mm/scripts/gensel8 — اخذ شدہ بتاریخ: 4 مئی 2019
  12. ^ ا ب https://www.cia.gov/library/publications/the-world-factbook/geos/sw.html
  13. https://data.worldbank.org/indicator/NY.GDP.MKTP.CD?locations=SE — اخذ شدہ بتاریخ: 18 اکتوبر 2018 — ناشر: عالمی بنک
  14. https://data.worldbank.org/indicator/NY.GDP.PCAP.PP.CD — اخذ شدہ بتاریخ: 11 جون 2019 — ناشر: عالمی بنک
  15. ^ ا ب پ ت ٹ ث ج چ ح خ د ڈ ذ ر​ ڑ​ ز ژ س ش ص ض ط ظ ع غ ف ق ک گ ل​ م​ ن و ہ ھ ی ے اا اب ات اث اج اح اخ اد اذ ار از اس اش اص اض اط اظ اع اغ اف اق https://data.worldbank.org/indicator/NY.GDP.PCAP.CD — اخذ شدہ بتاریخ: 27 مئی 2019 — ناشر: عالمی بنک
  16. ^ ا ب پ ت ٹ ث ج چ ح خ د ڈ ذ ر​ ڑ​ ز ژ س ش ص ض ط ظ ع غ ف ق ک گ ل​ م​ ن و ہ ھ ی ے اا اب ات اث اج اح اخ اد اذ ار از اس اش اص اض اط اظ اع اغ اف اق https://data.worldbank.org/indicator/FI.RES.TOTL.CD — اخذ شدہ بتاریخ: 1 مئی 2019 — ناشر: عالمی بنک
  17. http://hdr.undp.org/en/countries/profiles/SWE
  18. http://data.worldbank.org/indicator/SL.UEM.TOTL.ZS
  19. http://chartsbin.com/view/edr