قمر سرور

بھارتی اردو شاعرہ

قمر سرور(انگریزی: Qamar Suroor) بھارتی شاعرہ ہےـ آپ پیشہ سےطبیب ہیں [1] اور بی یو ایم ایس، ڈی-این-ایم اور جے-سی-پی-آر کی ڈگری رکھتی ہیں۔ 2017 میں قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان، نئی دہلی نے ادب اطفال کی کتابوں کے لیے بطور جج قمر منتخب کیا تھاـ آپ کا مجموعہ کلام اور ستارہ بن جا کے نام سے شائع ہوا ہےـ [2] آپ احمد نگر سے شائع ہونے والے ہفت روز اردو مخدوم کی مدیر بھی ہیں اور بزمِ خواتین، احمد نگر کی صدارت بھی آپ کے ذمہ ہےـ [3][4]

قمر سرور
معلومات شخصیت
تاریخ پیدائش 5 اگست 1975ء (عمر 44 سال)
شہریت Flag of India.svg بھارت  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
تعلیمی اسناد بیچلر آف ایسٹرن میڈیسن اینڈ سرجری،  ایم اے  ویکی ڈیٹا پر (P512) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ شاعرہ، طبیب
شعبۂ عمل اردو ادب،  طب  ویکی ڈیٹا پر (P101) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کارہائے نمایاں اور ستارہ بن جا  ویکی ڈیٹا پر (P800) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

پیدائش اور تعلیمترميم

قمر سرور 5 اگست 1975 کو پیدا ہوئی۔ آپ نے مالیگاؤں سے طب یونانی میں گریجویشن (انگریزی: BUMS) کیاـ ناگپور سے ڈی-این-ایم کی ڈگری حاصل کی اور احمد نگر سے اردو میں ایم-اے کیاـ

کارنامےترميم

احمد نگر، مہاراشٹر کے تمام اسکولوں میں اردو زبان کی ترویج و اشاعت کے سلسلے میں قمر کی خدمات قابل تحسین ہیں۔ آپ غیر مسلم برادری سے لے کر ریڈیو اور گلو کاروں کو اردو سکھاتی ہیں۔ 2017 میں قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان نئی دہلی نے آپ کو ادب اطفال کی کتابوں کے سلسلے میں آپ کو بطور جج انتخاب کیا تھاـ آپ نے شیواجی مہاراج پر لکھی گئی مراٹھی کتب کا اردو زبان میں ترجمہ کیا ہےـ ان ہی سے متعلق اردو کتب کا مراٹھی میں اور ہندی کتب کا اردو اور مراٹھی میں بھی ترجمہ کیا ہےـ ۔ فاروق جائسی اور ڈاکٹر الیاس صدیقی جیسے لوگوں نے قمر کی خدمات پر رشک جتایا ہےـ [5] ڈاکٹر قمر سرور مشاعرہ کے پلیٹ فارم سے بھی اردو زبان کے تئیں اپنی خدمات ادا کرتی ہیں۔[6]

شاعری اور خیالاتترميم

سیاست کے حوالے سے قمر کا شعر، جو قمر کی شاعری کا عکس ہے۔[7]

اے سیاست تیرا معیار کتنا اونچا،

لب کی جنبش سے بھی احساس کو ڈر لگتا ہے۔

اہم مناصبترميم

قمر سرور کئی اہم مناصب پر رہ کر اردو زبان و ادب کی خدمات انجام دے رہی ہیں۔ آپ کے کچھ مناصب:[8]

  • قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان نے 2017 میں ادب اطفال کی کتابوں کے لیے بطور جج منتخب کیا تھاـ
  • مدیر، ہفتہ روز اردو مخدوم احمد نگر
  • صدر، بزمِ خواتین، احمد نگر
  • جوائنٹ سیکریٹری، احمد نگر ضلع اردو ساہتیہ پریشد
  • جوائنٹ سیکریٹری، غزل گروپ احمد نگر

شعری مجموعےترميم

  • 31اکتوبر 2019 کو حج ہاوس ، ممبئی میں منعقدہ نسائی ادب و سمت و رفتار، مشاعرہ اور سیمینار میں قمر سرور کے شعری مجموعہ اور ستارہ بن جا کا اجرا ہوا۔[6]

اعزازاتترميم

اردو زبان و ادب کی خدمات کے سلسلے میں قمر کئی ایک اعزازات سے نوازی گئی۔ کچھ درج ذیل ہیں: [8]

  • سماج رتن پرسکار ایوارڈ 2003
  • سماج سوایکا ایوارڈ 2005
  • سماج رتن ایوارڈ 2006 منجانب کولکاتا اردو اکادمی
  • مجروح ایوارڈ 2007
  • بھوشن پرشکار ایوارڈ 2009
  • ساوتری بائی پھلے ایوارڈ 2012
  • رفعت پرواز ایوارڈ 2017
  • پروین شاکر ایوارڈ 2017

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

  1. ڈاکٹر قمر سرور: تہذیب یافتہ ماحول میں نشو و نما پانے والی شاعرہ از خالد عرفان، 10 اکتوبر 2018
  2. روزنامہ سالار: اور ستارا بن جا....ایک تاثر از ملنسار اطہر احمد
  3. لفظوں کہ سجاوٹ کو ہنر بنانے والی شاعرہ، قمر سرور
  4. فاروق جائسی بلندیوں پہ پہونچ اور ستارہ بن جا
  5. مکتوب بنام قمر سرور از ڈاکٹر الیاس صدیقی، 13 جولائی 2016
  6. ^ ا ب "بین الاقوامی نسائی ادبی تنظیم بنات نے اپنا دوسرا یوم تاسیس ممبئی میں منایا، آل انڈیا سیمینار و مشاعرے کا انعقاد‬". Millat Times. 8 November 2019. اخذ شدہ بتاریخ 08 مارچ 2020. 
  7. ادب گاؤں، ممبئی
  8. ^ ا ب "Kawaaif". Awr Sitara Ban Ja.