قرون وسطیٰ کی ایک یورپی مسیحی سلطنت جو 800ء میں پوپ لیو سوم کی جانب سے شارلمین کی تاج پوشی کے ساتھ قائم ہوئی۔ اس سلطنت کا خاتمہ 1806ء میں نپولین کے ہاتھوں ہوا۔

مقدس رومی سلطنت
Holy Roman Empire

Imperium Romanum Sacrum
962–1806
Flag of Holy Roman Empire
شاہی بینر
چوکڑی عقاب of Holy Roman Empire
چوکڑی عقاب
مقدس رومی سلطنت 1600
مقدس رومی سلطنت 1600
عام زبانیںلاطینی, جرمن, اطالوی, چیک, ڈچ, فرانسیسی, سلوین, سوربیائی, پولش
مذہب
رومن کیتھولک; لوتھریت
حکومتدینی حکومت, انتخابی بادشاہت
بطریق اعظم 
• 955-964
پوپ جان دوازدهم (اول)
• 1513-1521
پوپ لیو دھم (آخری پوپ جس نے شہنشاہ مقرر کیا)
شہنشاہ 
• 962–973
اوٹو اول (اول)
• 1792–1806
فرانسس دوم (آخر)
مقننہشاہی دائت
تاریخی دورقرون وسطی
ابتدائی جدید دور
• اوٹو اول رومیوں کا تاجپوشی شہنشاہ
2 فروری 962
• کانراڈ دوم برکنڈی کا حاکم تسلیم
2 فروری 1033
• آگسبرگ امن
25 ستمبر 1555
• ویسٹفیلیا امن
24 اکتوبر 1648
• فرانسس دوم دستبردار
6 اگست 1806
آیزو 3166 رمز[[آیزو 3166-2:|]]
ماقبل
مابعد
وسطی فرانسیا
مشرقی فرانسیا
قدیم سویس اتحاد
جمہوریہ ڈچ
راین اتحاد
آسٹریائی سلطنت
فرانسیسی سلطنت اول
مملکت اطالیہ (نیپولین)
مملکت پرشیا
ریاستہائے متحدہ بیلجیم
لیختینستائن
مشرقی فریسا کاؤنٹی
موجودہ حصہFlag of Germany.svg جرمنی
Flag of Austria.svg آسٹریا
Flag of Belgium (civil).svg بلجئیم
Flag of the Czech Republic.svg چیک جمہوریہ

Flag of Liechtenstein.svg لیختینستائن
Flag of Luxembourg.svg لکسمبرگ
Flag of Monaco.svg موناکو
Flag of the Netherlands.svg نیدرلینڈز


Flag of San Marino.svg سان مارینو
Flag of Slovenia.svg سلووینیا
Flag of Switzerland.svg سویٹزرلینڈ
Flag of France.svg فرانس
Flag of Italy.svg اطالیہ
Flag of Poland.svg پولینڈ

شارلمین کے انتقال کے بعد فرانسیسی سلطنت تین حصوں میں تقسیم ہو گئی جس کے ایک حصے مشرقی فرانکیا کے بادشاہ خود کو مقدس رومی شاہ کہلواتے تھے۔

یہ خطاب سب سے پہلے فریڈرک باربروسا نے اپنے لیے منتخب کیا جو 1152ء سے 1190ء تک تخت پر متمکن رہا۔

یہ سلطنت 1618ء سے 1648ء تک جاری جنگ تیس سالہ سے شدید متاثر ہوئی اور سلطنت کی تقریبا 30 فیصد آبادی اس جنگ میں کام آگئی۔

رومی سلطنت کے زوال کے بعد 800 عیسوی میں اس کے احیا کی کوشش کی گئی۔ جب کارولینجین (Carolingian) خاندان کا حکمراں شارلیمن (Charlemagne) ہوا تو پوپ نے اس کی تاج پوشی کی۔ اس کے بعد وہ ہولی رومن ایمپرر کہلایا۔ یورپ کے سیاسی اتار چڑھائو میں یہ ادارہ قائم رہا اور وولیٹر نے طنزاً اس کے بارے میں کہا کہ یہ نہ تو ہولی ہے، نہ رومن ہے اور نہ ایمپرر۔ بالآخر نپولین نے 1806 عیسوی میں اس کا خاتمہ کیا۔[1]

مزید دیکھیےترميم

حوالہ جاتترميم

  1. http://jehanpakistan.pk/column-blog-detail/رومی-سلطنت-کی-ٹوٹ-پھوٹ