یاسمین حمید (پیدائش 18 مارچ 1951) ایک پاکستانی اردو شاعرہ ، مترجم اور ایک ماہر تعلیم ہیں۔ [1]

یاسمین حمید
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1951 (عمر 69–70 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
مادر علمی جامعہ پنجاب  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ شاعرہ،  مصنفہ  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
نوکریاں لاہور یونیورسٹی آف مینجمنٹ سائنسز  ویکی ڈیٹا پر (P108) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

کیریئرترميم

یاسمین حمید ایک تجربہ کار ماہر تعلیم، مترجم اور شاعرہ ہیں۔ ان کے پاس ادب ، فن اور تعلیم کے شعبوں میں 25 سال سے زیادہ کا تجربہ ہے۔ وہ لاہور یونیورسٹی آف مینجمنٹ سائنسز میں سوشل سائنسز ڈیپارٹمنٹ میں 'رائٹر ان ریزیڈنس' کی حیثیت سے کام کر رہی ہیں۔ [2] یاسمین حمید کی اردو میں پانچ کتابیں شائع ہو چکی ہے اور ان کی ادبی شراکت ان کی شاعری کی پانچ کتابیں ہی ہیں۔ یہ کتابیں پانچ مختلف سالوں 1988 ، 1991 ، 1996 ، 2001 اور 2007 میں اردو میں شائع ہوئی تھیں۔ معاصر اردو شاعری کا انگریزی میں ترجمہ کرکے انہوں نے انگریزی ادب میں حصہ لیا ہے۔

یاسمین اکادمی ادبیات پاکستان کے پرچم تلے شائع ہونے والے پاکستانی ادب کے شمارے کی (انگریزی میں) ایڈیٹر رہ چکی ہیں۔ انہوں نے حکومت پاکستان کے زیر اہتمام منعقد ہونے والے ثقافتی / فیشن شو کے لئے انگریزی میں اسکرپٹ تحریر کیں۔ اس کے علاوہ انہوں نے کرکٹ کے فیسٹیول میں بھی اپنی خدمات پیش کیں اور انہوں نے 1995 میں لندن اور 1996 میں واشنگٹن میں اور 1996 میں پاکستان میں ورلڈ کپ کرکٹ کلچرل فیسٹیول میں اپنی خدمات پیش کیں۔ اس کے علاوہ پاکستان کے اخبار روزنامہ ڈان میں "کتب اور مصنفین" کے نام سے ماہانہ کالم بھی لکھتی رہیں۔

یاسمین حمید ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی ، لاہور میں لاہور الما اسکول کی مالک ہے ۔ مزید برآں ، اس نے پاکستان ٹیلی ویژن پر متعدد نامور پاکستانی ادبی شخصیات کا انٹرویو لیا ہے اور قومی اور بین الاقوامی سطح پر شعری سمپوزیا میں وسیع پیمانے پر حصہ لیا ہے۔ [3][4]

تعلیمترميم

ایم ایس سی: غذائیات
پنجاب یونیورسٹی– لاہور (1972)
بی ایس سی۔ :ہوم اکنامکس- ہوم اکنامکس کالج
پنجاب یونیورسٹی – لاہور(1970)

تخلیقاتترميم

یاسمین حمید نے شاعری کی پانچ کتابیں اردو میں شائع کیں:

عنوان سال شائع ہوا صفحات
پاس آئینہ 1988 160
حصار بے در و دیوار 1991 160
آدھا دن اور آدھی رات 1996 237
فنا بھی ایک سراب 2001 216
دوسری زندگی (نظمیں ، 1988–2001) 2007 700

ادبی ایوارڈزترميم

غیر مطبوعہ کتبترميم

ان کا یہ کام قابل اشاعت ہے،. منتظر طباعت ہے،

  • معاصر پاکستان کا کلام (انگریزی)
  • پانچویں شعری مجموعہ (اردو) جس کا عنوان ہے بے سامر جوڑہون کی خواہیش۔

حوالہ جاتترميم

  1. "INTERVIEW: یاسمین حمید (Books And Authors)". ڈان (newspaper). 18 اگست 2012. اخذ شدہ بتاریخ 12 اگست 2019. 
  2. "INTERVIEW: Yasmeen Hameed (Books And Authors)". Dawn (newspaper). 18 اگست 2012. اخذ شدہ بتاریخ 12 اگست 2019. 
  3. Amel Ghani (21 نومبر 2015). "Faiz festival: Master critic eulogises immortal poet". اخذ شدہ بتاریخ 12 اگست 2019. 
  4. 10th Karachi Literature Festival concludes on a high note Daily Times (newspaper)، Published 4 مارچ 2019, Retrieved 12 اگست 2019

بیرونی روابطترميم