مرکزی مینیو کھولیں
جے پرکاش نرائن
(ہندی میں: जयप्रकाश नारायण ویکی ڈیٹا پر مقامی زبان میں نام (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Jayaprakash Narayan 1980 stamp of India bw.jpg 

معلومات شخصیت
پیدائش 11 اکتوبر 1902[1][2][3][4][5]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بلیا  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 8 اکتوبر 1979 (77 سال)[1][2][3][4][5]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پٹنہ  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of India.svg بھارت[6]
British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جماعت انڈین نیشنل کانگریس
جنتا پارٹی  ویکی ڈیٹا پر سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
مادر علمی یونیورسٹی آف وسکونسن–میڈیسن
اوہائیو اسٹیٹ یونیورسٹی
جامعہ کیلیفورنیا، برکلے
یونیورسٹی آف آئیووا
جامعہ پٹنہ  ویکی ڈیٹا پر تعلیم از (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ سیاست دان[6]، سماجی کارکن  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان ہندی[7]  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات

بھارتی سیاست دان۔ پٹنہ صوبہ بہار میں پیدا ہوئے۔ وس کونسن یونیورسٹی امریکا سے ماسٹر آف آرٹس کی ڈگری لی۔ 1929ء میں وطن واپس آئے اور آزادی کی تحریکوں میں حصہ لینا شروع کیا۔ شروع میں مارکسی نظریات کے حامی تھے۔ اور گاندھی جی کے فلسفہ عدم تشدد کے سخت مخالف۔ لیکن مسٹر نہرو کی ترغیب پر کانگرس میں شامل ہو گئے۔ اور 1936ء میں پارٹی کے جنرل سیکرٹری مقرر ہوئے۔ متعدد بار قید وبند کی صعوبتیں جھلیں۔ 1948ء میں کانگریس سے مستعفی ہو گئے اور انڈین سوشلسٹ پارٹی کی تشکیل کی۔ جس کے وہ بانی سیکرٹری منتخب ہوئے۔ سوشلسٹ پارٹی پھوٹ کا شکار ہوئی تو بد دل ہو کر آچاریہ دونوبا بھاوے کی بھودان تحریک میں شامل ہو گئے اور 1957ء میں عملی سیاست سے علیحدگی اختیار کر لی۔ 1974ء میں دوبارہ سیاست میں داخل ہوئے اور مسز اندرا گاندھی کے خلاف متحد سیاسی محاذ ’’ جنتا پارٹی‘‘ کی قیادت کی۔ مارچ 1977ء کے انتخابات میں مسز گاندھی کی کانگرس کی شکست کا سب سے بڑا سبب مسٹر نرائن کی شخصیت تھی۔

حوالہ جاتترميم

  1. ^ ا ب http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb12021471q — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  2. ^ ا ب دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Jaya-Prakash-Narayan — بنام: Jayaprakash Narayan — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  3. ^ ا ب ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w6n0458w — بنام: Jayaprakash Narayan — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  4. ^ ا ب Munzinger person ID: https://www.munzinger.de/search/go/document.jsp?id=00000005736 — بنام: Jayaprakash Narayan — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  5. ^ ا ب Brockhaus Enzyklopädie online ID: https://brockhaus.de/ecs/enzy/article/narayan-jaya-prakash — بنام: Jaya Prakash Narayan
  6. ^ ا ب https://eci.gov.in/files/category/97-general-election-2014/
  7. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb12021471q — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ