صابری برادران

پاکستانی موسیقی گروہ

صابری برادران ایک پاکستانی موسیقی گروہ (بینڈ) تھا جو صوفیانہ کلام اور قوالی گاتا تھا، صابری برادران کا سلسلہ چشتیہ سے گہرا تعلق تھا۔ بینڈ ابتدائی طور پر غلام فرید صابری اور ان کے چھوٹے بھائی مقبول احمد صابری نے قائم کیا، جن کی قوالی کے دوران میں وقفہ وقفہ سے "اللہ" کی زور دار آوازز شناخت بن گئی تھی۔ ان دونوں بھائیوں کے بعد بینڈ کی قیادت غلام فرید کے بیٹے امجد فرید صابری کے حصے میں آئی۔ 22 جون 2016ء، امجد فرید صابری کو کراچی میں قتل کر دیا گیا۔

صابری برادران
دائیں سے بائیں
اوپر: غلام فرید صابری، مقبول احمد صابری
نیچے: کمال صابری ، محمود صابری
ذاتی معلومات
تعلقکلیان، مشرقی پنجاب
اصنافقوالی
سالہائے فعالیت1956–2016
ریکارڈ لیبل
ارکان
محمود غزنوی صابری
(1975 – تاحال)
ماضی کے ارکان
غلام فرید صابری (1930–94)
کمال صابری (وفات 2001)
مقبول احمد صابری (1945–2011)
امجد فرید صابری (1970 -2016)

اصلی ارکانترميم

صابری برادران جو اصل میں

  • غلام فرید صابری (پ۔ 1930 کالیانہ، مشرقی پنجاب – ف۔ 5 اپریل 1994 کراچی; ہارمونیم اور تمہید)،
  • مقبول احمد صابری (پ۔ 12 اکتوبر 1945 کالیانہ – ف۔ 21 ستمبر 2011 iجنوبی افریقا میں;[1] (مرکزی آواز، ہارومونیم)،
  • کمال صابری (ف 2001; آواز، سوارمندل)
  • محمود غزنوی صابری (پ۔ 1949 کراچی میں; آواز، بونگو ڈرم، طنبوری)،
  • فضل اسلام (کورس)،
  • عطمت فرید صابری (کورس)،
  • ثروت فرید صابری (کورس)،
  • جاوید کمال صابری (کورس)،
  • عمر دراز (کورس)،
  • عبد العزیز (کورس)،
  • مسیحی الدین (کورس، طنبوری)،
  • عبد الکریم (ڈھولک)،
  • محمد انور (نال، طبلہ)۔

ابتدائی زندگیترميم

صابری برادران نے اپنے والد عنایت حسین صابری سے موسیقی سیکھی۔ انہوں نے اپنے بیٹوں کو قوالی اور ہندوستانی کلاسیکی موسیقی کی تربیت دی۔ غلام فرید کی عوامی کارکردگی 1946ء میں کلیانہ (اب ہریانہ، ہندوستان) میں شاہی مبارک شاہ کے سالانہ عرس میں گائی تھی۔ یہ خاندان 1947ء میں تقسیم ہند کے بعد کلیانہ سے کراچی، پاکستان منتقل ہوگیا تھا۔ غلام فرید صابری، کمال احمد صابری اور مقبول احمد صابری نے استاد فتح الدین خان، استاد رمضان خان اور استاد لفتِ حسین بریلی شریف سے موسیقی کے بارے میں معلومات حاصل کی۔

پیشہ وارانہ زندگیترميم

ابتدائی کیریئرترميم

صابری برادران نے ابتدائی طور پر اپنے کیریئر کا آغاز صوفی زیارتوں اور نجی محفلوں میں انجام دے کر کیا، ان کی پہلی ریکارڈنگ 1958ء میں ای ایم آئی پاکستان نے جاری کی تھی جس کا عنوان میرا کوئی نہیں ہے تیرا سوا تھا، نغموں کو 1965ء میں پاکستانی فلم عشق حبیب میں بھی شامل گیا۔

1970ء کی دہائیترميم

1970ء کی دہائی میں صابری برادران کے عروج کو دیکھا گیا۔ وہ واحد قوالی جماعت ہے جو پاکستان ٹیلی وژن کارپوریشن میں "فرسٹ کلاس" کی حیثیت رکھتی ہے۔

1970ء میں حکومت پاکستان نے انہیں شاہی شادی کے لئے بطور نمائندہ نیپال بھیجا۔ انہوں نے اپنی مقبول ترین غزل، بھر دو جھولی میری یا محمد، تاجدار حرم، او شرابی چھوڈ دے پینا، خواجہ کی دیوانی، اور سر لا مکان سی طلب ہوئی، جاری کی۔[2]

1980ء کی دہائیترميم

جون 1981 میں، انہوں نے ایمسٹرڈیم کے رائل ٹروپیکل انسٹی ٹیوٹ میں پرفارم کیا جو البم تسلیم میں جاری کیا گیا تھا۔[3]

1982ء میں، صابری برادران اپنی مشہور قوالی تاجدار حرم کے ساتھ فلم سہارے میں نظر آئے۔ اسی سال انہوں نے کراچی ایئرپورٹ کے قریب الشفا ہوسٹل کی تعمیر کے لئے مڈوے ہوٹل میں پرفارم کیا۔ 1983ء میں، انہوں نے تاجکو گروپ کے زیر اہتمام، آغا خان کی سنہری جوبلی کی یاد میں البم نذر شاہ کریم ریکارڈ کیا۔ اس البم کی آمدنی آغا خان اسپتال، کراچی کو عطیہ کی گئی تھی۔[4] 3 اگست 1985ء کو، شیراٹن ہوٹل، کراچی میں ایک احمقانہ پروگرام منعقد ہوا اس پروگرام سے بنگلہ دیش سیلاب فنڈ کے لئے 141،500 روپے جمع کیے گئے۔

ریکارڈ نامہترميم

کنسرٹ فلمیںترميم

  • انگلینڈ میں براہ راست – حصّہ 1
  • انگلینڈ میں براہ راست – حصّہ 2
  • انگلینڈ میں براہ راست – حصّہ 3
  • انگلینڈ میں براہ راست – حصّہ 4
  • اللہ دتا ہال، برمنگم براہ راست حصّہ 1
  • اللہ دتا ہال، برمنگم براہ راست حصّہ 2
  • قوالی صابری برادران (عبداللہ شاہ غازی کے زیارت پر براہ راست) [5]

البمترميم

  • 1976ء دیوانی خواجہ کی دیوانی / او شرابی چھوڈ دے پینا (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1979ء پاکستان کی موسیقی – قوالی – براہ راست کنسرٹ میں ( 1979ء)
  • 1979ء صابری برادران قوال' (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1979ء شکوہ جواب شکوہ (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1980ء صابری برادران کی عظیم ترین قوالی (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1980ء صابری برادران کنسرٹ میں – والیم۔1–3 (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1980ء صابری برادران براہ راست کنسرٹ والیم −16 (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1980ء صابری برادران – محفل پروگرامی والیم −17 (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1982ء جھوٹ کے پاؤں نہیں ہوتے (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1982ء صابری برادران – غلام فرید اور مقبول صابری کی مقبول قوالیاں(ای ایم آئی پاکستان)
  • 1982ء مقبول احمد صابری – اردو غزل
  • 1983ء صابری برادران کی نئی قوالیاں (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1983ء نظر شاہ کرم آغا خان کی سلور جوبلی کے لیے قوالی،
  • 1984ء جوگن داتا دی (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1985ء صابری برادرز کی مقبول قوالیاں (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1985ء مقبول احمد صابری – آوراگی (سی بی ایس)
  • 1986ء یا محمد نگاہ کرم (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1987ء سر بہار " امیر خسرو " (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1988ء شان اولیا (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1988ء براہ راست اللہ دتہ ہال میں (یوکے دورہ)
  • 1990ء صابری برادران 1990ء کی نئی قوالیاں (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1990ء قوالی کی موسیقی، یونیسکو)
  • 1990ء یا حبیب
  • 1993ء قوالی ماسٹر ورکس (پرانہا)
  • 1993ء پیار کے مور، والیم۔ 1(اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1994ء شہنشاہ قوالی کی یاد میں – والیم۔1–2 (ای ایم آئی پاکستان)
  • یاروں کسی قتل سے کبھی (ای ایم آئی پاکستان)
  • 1994ء سویرے سویرے (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1994ء لا الہ کی بولی بول (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1994ء Milta Hai Kya Namaz Mein – براہ راست برطانیہ میں (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1996ء جامی (پرانہا)
  • 1996ء یا مصطفہ
  • 1996ء اے میرے ہم نشیں (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1996ء خواجہ کی دیوانی – براہ راست یورپ میں 1981ء (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1996ء تاجدار حرم (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1997ء نازاں ہے جس پہ حسن (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1997ء میکدہ – براہ راست کنسرٹ میں (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1997ء بالاغول علا بیکمالہی (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 1998ء حاضر ہیں (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2001ء یا رحمت لیلعالمین (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2003ء بندیا لگاؤ کبھی (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2003ء جھولے جھولے جی محمد (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2003ء دیانی براہ راست ماسکو میں
  • 2005ء جتنا دیا سرکارے مجھ کو (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2005ء مانکتا ہے کر مان کا (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2007ء اجمیر کو جانا ہے (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2007ء یا رحمت لیلعالمین (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2007ء پوشیدہ پوشیدہ – براہ راست کنسرٹ برطانیہ میں (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2007ء پیا گھر آیا (اورینٹل سٹار ایجنسیس)
  • 2009ء شکوہ جواب شکوہ (اورینٹل سٹار ایجنسیس)

اعزازاتترميم

حوالہ جاتترميم

  1. "The Nation – Obituary". 22 ستمبر 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 04 جولا‎ئی 2016. 
  2. "Crazy diamonds – V – Blogs". Dawn.Com. 7 March 2013. اخذ شدہ بتاریخ 23 جون 2016. 
  3. "KIT Publication: Tasleem". Kit.nl. 13 نومبر 2013 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 13 نومبر 2013. 
  4. "Archived copy". 28 اکتوبر 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 28 اکتوبر 2014. 
  5. "Qawali-The-Sabri-Brothers – Cast، Crew، Director and Awards – NYTimes.com". Movies.nytimes.com. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 13 نومبر 2013. 
  6. Obituary and Pride of Performance Award info for مقبول احمد صابری on دی ایکسپریس ٹریبیون newspaper، Published 24 Sep 2011، Retrieved 11 اپریل 2016
  7. "Who's Who: Music in Pakistan – Sheikh، M. A. - Google Books". Books.google.com. 2012-04-26. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 23 جون 2016.