مرکزی مینیو کھولیں
کھیرے اپنے پودے پر لگے ہوئے

کھیرا ایک مفید سبزی ہے۔ اس کے پودے کے خاندان کا حیاتیاتی نام Cucumis sativus ہے۔ اس کی کئی اقسام ہیں۔ جن کا رنگ عموماً سبز ہوتا ہے۔ اس کا آبائی وطن ہندوستان ہے۔ یہ مغربی ایشیا میں بھی تین ہزار سال سے زیادہ عرصہ سے کاشت کیا جا رہا ہے۔ فرانس تک یہ نویں صدی اور برطانیہ تک چودھویں صدی عیسوی تک پہنچا۔ کھیرے میں کیلشیم، فولاد، زنک، میگنیشیم، وٹامنز سی، بی 1، بی 2، بی 3، بی 5، بی 6 اور فولک ایسڈ موجود ہوتا ہے۔

فوائدترميم

ہاضمہ درست کرنے کے ساتھ ساتھ سانس کی ناگوار بو دور کرنے کے لیے کھیرا مفید ثابت ہوتا ہے۔ چہرے کی تازگی اور شادابی کے لیے کھیرے کا رس چہرے پر لگایا جاتا ہے جس سے جلد میں قدرتی کچھاؤ آتا ہے اور لکیروں میں کمی واقع ہوتی ہے، چوری کی جلد کا ڈھلکنا دور ہو سکتا ہے جو تازگی کا باعث بنتا ہے۔ ماہرین کے مطابق کھیرے کے چھلکے میں قیمتیں وٹامن نمکیات ہوتے ہیں اس لیے استعمال کرنا چاہیے۔ میجر جگری گرمی سے تحفظ کے لیے کھیرے کا ایک گلاس جوس مفید بتایا جاتا ہے۔ کھیرے کے مستقل استعمال سے پٹھوں، عضلات اور جسم کے کھنچاؤ کے خلاف قوت مدافعت میں اضافہ ہوتا ہے۔

پیداوارترميم

چوٹی کے دس کھیرا پیداکار 2010
ملک پیداوار (ٹن)
  چین 40,709,556
  ایران 1,811,630
  ترکی 1,739,190
  روس 1,161,870
  ریاستہائے متحدہ 883,360
  یوکرین 860,100
  ہسپانیہ 682,900
  مصر 631,408
  جاپان 587,800
  انڈونیشیا 547,141
 دنیا 57,559,836
ماخذ: ادارہ برائے خوراک و زراعت[1]

نگار خانہترميم

حوالہ جاتترميم

  1. "Major Food And Agricultural Commodities And Producers – Countries By Commodity"۔ Fao.org۔ اخذ شدہ بتاریخ 2012-05-12۔