ریحانہ بنت زید (عربی: ريحانة بنت زيد بن عمرو‎) بنو قریظہ قبیلہ کی ایک یہودی خاتون تھیں۔ بعض روایات کے مطابق آپ حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی بارہویں زوجہ مطہرہ تھیں لیکن اس کے بارے میں اختلاف ہے، بعض حضرات نے ان کو حرم (کنیز) قرار دیا ہے، لیکن بعض دوسری روایتوں میں ہے کہ ریحانہ جو ایک یہودی خاندان کی خاتون تھیں جنگی اسیر ہو کر آئی تھیں چنانچہ آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم نے ان کو آزاد کیا اور ( 627ء ) میں ان سے نکاح کر لیا اور بعد ازاں طلاق دے دی۔[1]

ریحانہ بنت زید
معلومات شخصیت
پیدائش 1 ہزاریہ  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
حجاز  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات سنہ 631 (30–31 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مدینہ منورہ  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مدفن جنت البقیع  ویکی ڈیٹا پر (P119) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شریک حیات محمد بن عبداللہ (629–631)  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مؤمنین کی والدہ
ام المؤمنین
امہات المؤمنین - (ازواج مطہرات)

امہات المومنین

انتقال

آپ جوانی کی حالت میں رحلت فرما گئیں۔ آپ سن ( 630ء ) میں حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کے حیات مبارکہ میں ہی انتقال کر گئیں۔ آپ کو جنت البقیع میں دفن کیا گیا۔[2]

حوالہ جات

  1. طبقات ابن سعد عن الواقدي 8/130
  2. al-Halabi، Nur al-Din. Sirat-i-Halbiyyah. Uttar Pradesh: Idarah Qasmiyyah Deoband. vol 2, part 12, pg. 90.  Translated by Muhammad Aslam Qasmi.

حوالہ جات